مڈڈے میل کیلئے تعینات خانساماںکی کام چھوڑ ہڑتال جاری

 پونچھ//مڈ ڈے میل کے تحت مختلف سکولوں میں بطور خانساماں اپنی خدمات انجام دینے والے ملازمین کی جانب سے دوسرے روز بھی زنانہ پارک پونچھ میں احتجاجی دھرنا اور کام چھوڑ ہڑتال جاری رہی۔اس دوران بھارتیہ جنتا پارٹی کے ریاستی سکریٹری سنیل گپتا اور دیگر لیڈران ملازمین کی حمایت کرتے ہوئے ریاستی انتظامیہ سے اپیل کی کہ ان کو مستقل کرنے کیساتھ ساتھ ان کو دئیے جارہے مشاہرے میں بھی اضافہ کیا جائے۔ اس احتجاج کے دوران مظاہرین نے ریاستی  انتظامیہ سے برہمی کا اظہار کرتے ہوئے نعری بازی کی ۔ مقررین نے کہا کہ ستراں برسوںسے زیادہ عرصہ سے مختلف اسکولوں میں کام کرنے والے ان ملازمین کے ساتھ محکمہ تعلیم نا انصافی کر کر رہا ہے۔انہوں نے ریاستی گورنر ستیہ پال ملک سے ملازموں کو مستقل کرنے اور ان کی تنخواہوں میں اضافہ کرنے کا مطالبہ کیا ہے۔ سنیل گپتا نے کہا کہ  17سالوں سے یہ ملازم محکمہ تعلیم میں مڈ ڈے میل اسکیم کے تحت بچوں کیلئے کھانا پکانے کا کام کر رہی ہیں جن کی ماہانہ تنخواہ صرف ایک ہزار روپئے ہے انہوں نے کہا کہ یہ تنخواہ بہت کم ہے۔ انہوں نے ریاستی گورنر سے اپیل کرتے ہوئے کہا کہ یہ ملازم جو مطالبات کر رہے ہیں وہ بالکل جائز ہیں ان کو پروا کیا جائے۔اس دوران مظاہرین نے بھی کہا کہ وہ لوگ صبح دس بجے سے شام چار بجے تک اسکول میں ڈیوٹی کرتے ہیں، اس کے علاوہ بچوں کے جوٹھے برتن دھوتے ہیں محنت اور لگن سے کام کرتے ہیں لیکن اعلیٰ حکام آج تک ان کے لئے کوئی بھی پالیسی بنانے میں ناکام رہے ہیں۔انہوں نے کہا کہ اس مہنگائی کے دور میں ایک ہزار روپئے پر ان کا گزارہ نہیں ہوتا جبکہ ریاستی انتظامیہ کو چاہئے کہ وہ ان ملازمین کو دی جانے والی تنخواہ میں اضافہ کریں۔انہوں نے کہا کہ زمینی سطح پر چھوٹے ملازمین کی فلاحو بہبود کی جانب نہ پہلی سرکاروں نے کوئی توجہ دی ہے اور نہ ہی گورنر انتظامیہ نے۔انہوں نے انتباہ دیا کہ جب تک ان ملازمین کی مستقلی کیساتھ ساتھ ان کی تنخواہوں میں اضافہ نہیں کیا جاتا وہ اپنا احتجاج  جاری رکھیں گے۔ اس موقع پر سوما دیوی، سوشیلا دیوی، مجیدہ بی، نیلم دیوی، تعظیم اختر، خورشید بیگم نے خطاب کیا۔