موں خطے میں ڈینگوکیسوں میں اضافہ کاتشویشناک رجحان مسلسل جاری

 جموں شہر734 معاملات کیساتھ سرفہرست،کٹھوعہ229کے ساتھ دوسرے نمبرپر

 جموں//جموں خطہ میں ڈینگی کے 1247 کیس سامنے آئے ہیں جن میں زیادہ تر کیس یعنی 734 ضلع کے شہری رہائشی علاقوں سے ہیں۔محکمہ صحت کے ایک عہدیدار نے بتایا کہ ہر گزرتے دن کے ساتھ یہ اضافہ جاری ہے۔انہوںنے کہا کہ جموں میونسپل کارپوریشن بھی متاثرہ رہائشی علاقوں جیسے بھگوتی نگر، سروال، نیو پلاٹ، ریشم گھر کالونی وغیرہ میں سپرے کرنے کے لیے ان کے ساتھ مل کر کام کر رہی ہے۔ انہوں نے سرکاری ریکارڈ کا حوالہ دیتے ہوئے کہا"جموں ضلع میںہم نے ڈینگو کے تقریباً 734 کیس ریکارڈ کیے ہیں جو کہ خطے میں سب سے زیادہ ہیں۔ پورے خطے میں، ہمارے پاس 1247 کیس ہیں‘‘۔انہوں نے کہا کہ کیس زیادہ تر اضلاع سے آئے ہیں لیکن زیادہ تر کیس علاقے کے میدانی علاقوں سے آئے ہیں۔ان کا کہناتھا"ہمارے پاس کٹھوعہ میں ڈینگو کے 229، سانبا میں 98 کیس، اور ادھم پور میں ڈینگو کے 89 کیس ہیں‘‘۔انہوں نے مزیدکہا کہ ملیرولوجی ڈیپارٹمنٹ نے ڈینگو کے پھیلاؤ کو کنٹرول کرنے کے لیے ہدایات کے مطابق تمام کوششیں کی ہیں۔؎تاہم انہوں نے ڈینگو کے پھیلاؤ پر قابو پانے کے لیے عوام سے تعاون کی خواہش کی۔افسر نے کہا ’’جموں شہر کے مختلف ہسپتالوں خاص طور پر گورنمنٹ میڈیکل کالج اور ہسپتال بخشی نگر میں ڈینگوکے مریضوں کے لیے 155 سے زیادہ بستر خصوصی طور پر دستیاب کرائے گئے ہیں‘‘۔انہوں نے کہا کہ بہت سے معاملات میں خاندان ڈینگو سے متاثر ہوتے ہیں اور یہ لوگوں پر منحصر ہے کہ وہ صفائی کو مدنظر رکھتے ہوئے اپنے گھر یا باہر پانی جمع نہ ہونے دیں۔