مودی حکومت کسانوں کے ساتھ ناانصافی کر رہی ہے:کانگریس

 نئی دہلی// کانگریس نے کہا ہے کہ تحریک چلانے پر مجبور کسان مرکزی حکومت سے انصاف مانگ رہے ہیں لیکن ان کے ساتھ ناانصافی ہو رہی ہے اور ان کے مطالبات پر حکومت خاموش ہے کانگریس ترجمان شمع محمد نے اتوار کے روز یہاں پریس کانفرنس کے دوران ایک سوال کے جواب میں کہا کہ کسان تحریک کے دوران اب تک 33 کسان دم توڑ چکے ہیں لیکن مودی حکومت ان کی بات سننے کو تیار نہیں ہے اور کسانوں کے مسائل کے حل کے لیے کوئی اقدام نہیں کر رہی ہے۔وزیراعظم نریندر مودی کسانوں کے مسائل پر خاموش ہیں اور ان کے مطالبات کو پورا کرنے کے بجائے انھیں ورغلانے کی کوشش کر رہے ہیں۔ وہ زرعی قوانین کو واپس لینے کے بجائے انھیں درست قرار دے رہے ہیں۔ترجمان نے کہا کہ وزیرداخلہ امت شاہ کو کسانوں کی بات سننی چاہیے تھی لیکن وہ مغربی بنگال میں الیکشن جیتنے کے پروگرام میں مصروف ہے۔ انھیں ا?ئندہ برس ہونے والے انتخابات کی فکر ہے اور کسانوں کے مسائل پر غوروخوض کرنے کے بجائے الیکشن جیتنے کی حکمت عملی تیار کرنے میں سرگرم ہے۔انہوں نے کہا وزیراعظم اور وزیر داخلہ کو فوت ہونے والے کسانوں کے اہل خانہ سے ملاقات کرکیانھیں تعزیت پیش کرنی چاہیے تھی لیکن وہ دونوں کسانوں کے ساتھ ناانصافی کر رہے ہیں۔
 
 

راہل گاندھی کا جان گنوانے والے کسانوں کو خراج عقیدت

 نئی دہلی// کانگریس کے سابق صدر راہل گاندھی نے دہلی میں کسانوں کے احتجاج کے دوران اپنی جانوں سے ہاتھ گنوانے والے کسانوں کو خراج عقیدت پیش کیا ہے ۔ گاندھی نے کہا ’’کسانوں کی جدوجہد اور قربانی یقیناً رنگ لائے گی! کسان بھائیوں اور بہنوں کو سلام اور خراج عقیدت۔‘‘انہوں نے ’کسان سنگھرش سمیتی‘ کے ’اکھل بھارتیہ مورچہ‘ کی جانب سے تیارایک پوسٹر بھی پوسٹ کیا ہے جس میں ’کسانوں کے احتجاج کے دورانلقمہ اجل بننے والے کسانوں کو خراج تحسین‘ لکھا گیا ہے۔ اس کے ساتھ ہی اُن کی تصاویر بھی پوسٹ کی گئی ہیں۔