منڈی کالج و مڈل سکول راجپور ہ کی عمارت کا معاملہ

 منڈی//ڈپٹی کمشنر پونچھ نے منڈی کا دورہ کر کے ڈگری کالج منڈی اور مڈل سکول راجپورہ کے معاملے کا جائزہ لیا۔غور طلب ہے کہ کالج کی عمارت نہ ہونے کی وجہ سے کالج کا تدریسی عمل سال 2019 سے مڈل سکول راجپورہ میں چلایا جا رہا ہے تاہم کووڈ بندشوںکے بعد تعلیمی عمل مکمل بحال ہونے کے بعد کالج و سکول کے بچوں کو تدریسی عمل متاثر ہو نے کا خدشہ پیدا ہو گیا ہے ۔ گزشتہ دنوں معاملہ اس وقت سنگین ہو گیا تھا جب مڈل سکول راجپورہ کے طلباء دو سے زائد برس کے بعد اپنے سکول میں تعلیم حاصل کرنے کیلئے آئے تھے اور وہاں پرڈگری کالج منڈی کے طلباء تعلیم حاصل کر رہے ہیں جس کو لے کر مڈل سکول راجپورہ کے طلباء کو پٹوار خانہ راجپورہ میں انتظامیہ کی جانب سے تدریسی عمل جاری رکھنے کو کہاگیا اور بعد ازاں مڈل سکول میں تعلیم حاصل کر رہے بچوں کے والدین نے ذرائع ابلاغ کے ذریعہ اس معاملے کو ضلع ترقیاتی کمشنر پونچھ کے نوٹس میں لایا ۔اسی سلسلے میں ضلع ترقیاتی کمشنر پونچھ اندر جیت نے طلبا اور والدین کو یقین دہانی کرائی کہ ایک ہفتے کے اندر معاملے کو سلجھایا جائے گا۔ دریں اثنا راجپوہ کے لوگوں نے اس حوالے سے کہا کہ منڈی میں تین برس قبل ڈگری کالج کا تعین سرکار کی جانب سے تو کیا گیا تھا مگر ابھی تک سرکار ڈگری کالج کے لئے عمارت کو تعمیر نہیں کیا جس کی وجہ سے مڈل سکول راجپورہ میں کالج کے طلباء کی تدریس ہو رہی تھی۔ ان کا کہنا تھا کہ اب جبکہ دو سے زائد برسوں کے بعد ایک مرتبہ پھر سے سکولوں میں تدریسی عمل شروع ہو گیا ہے سرکار کو چاہیے کہ وہ کالج کو کسی دوسری جگہ منتقل کریں۔ عوام کا کہنا تھا کہ ضلع ترقیاتی کمشنر پونچھ نے انہیں یقین دہانی کروائی کے ایک ہفتہ کے اندر اس معاملے کو حل کر لیا جائے گا۔ضلع ترقیاتی کمشنر پونچھ نے کشمیر عظمیٰ کو بتایا کہ صورتحال کا جائزہ لینے کیلئے انہوں نے علاقہ کا دورہ کیا تھا جبکہ کالج کی عمارت تعمیر ہونے تک تدریسی عمل سکول میںہی جاری رکھا جائے گا جبکہ اس دوران کوئی متبادل تلاش کرنے کی کوششیں بھی جاری رکھی جائیں گی ۔