منشیات کیخلاف زیرو ٹالرنس لیفٹیننٹ گورنر کا محکمہ داخلہ کی کارکردگی کا جائزہ

 سرکاری اور غیرسرکاری عمارتوں میں فائر سیفٹی آلات نصب کرنے کی ہدایات

سرینگر//لیفٹیننٹ گورنر منوج سنہا نے محکمہ داخلہ کے کام کاج کا جائزہ لینے کے لیے ایک اعلی سطحی میٹنگ کی صدارت کی۔ان کو سیکورٹی گرڈ، پولیس ڈیٹا سینٹر کے قیام، فرانزک صلاحیتوں کی جدید کاری اور سیکیورٹی سے متعلق اخراجات (SRE) کے تحت دیگر منصوبوں کے بارے میں بریفنگ دی گئی۔لیفٹیننٹ گورنر نے عہدیداروں کو ہدایت دی کہ وہ سرکاری عمارتوں میں فائر سیفٹی آلات کی تنصیب اور آپریشنل کارکردگی کو یقینی بنائیں۔اجلاس میں منشیات سے نجات کے مراکز کو فعال کرنے اور منشیات کی لعنت سے نمٹنے کے اقدامات پر بھی غور کیا گیا۔لیفٹیننٹ گورنر نے کہا”ہم نے منشیات سے پاک جموں و کشمیر بنانے کے لیے منشیات کے خلاف زیرو ٹالرنس کی پالیسی اپنائی ہے۔

 

پولیس، سول انتظامیہ اور لوگوں کو اس لعنت کو ختم کرنے کے لیے مل کر کام کرنا چاہیے‘‘۔لیفٹیننٹ گورنر نے پولیس اور متعلقہ اداروں کو مضبوط بنانے سے متعلق امور پر تبادلہ خیال کیا۔ انہوں نے محکمہ کی جانب سے نئے فوجداری قوانین کے نفاذ کے لیے اٹھائے گئے اقدامات پر بھی تبادلہ خیال کیا جو کہ یکم جولائی 2024 سے نافذ العمل ہوں گے۔لیفٹیننٹ گورنر نے جیل کے موثر انتظام پر زور دیا اور پی ایم ڈی پی کے تحت منصوبوں کی پیش رفت کا بھی جائزہ لیا۔میٹنگ میں لیفٹیننٹ گورنر کے مشیر راجیو رائے بھٹناگر، چیف سکریٹری، ڈی جی پی، محکمہ داخلہ کے پرنسپل سکریٹریاورلیفٹیننٹ گورنر کے پرنسپل سکریٹری اور دیگر سینئر افسران نے شرکت کی۔