مغل شاہراہ کی بحالی کیساتھ ہی پیر گلی سیاحوں کی توجہ کا مرکز

مینڈھر //مغل شاہراہ کی بحالی کیساتھ ہی روزانہ سیاحوں کیساتھ ساتھ پیر گلی زیارت پر عقیدت مندوں کی ایک بڑی تعداد پہنچتی ہے ۔اس وقت سرحدی ضلع راجوری اور پونچھ کے متعدد علاقوں سے روزانہ سیاحوں کی ایک بڑی تعداد پیر گلی پہنچ رہی ہے تاہم مذکورہ سیاحتی مقام پر انتظامیہ کی جانب سے کوئی بنیادی سہولیات فراہم نہیں کی گئی ہیں جس کی وجہ سے سیاحوں و زیارت پر حاضری دینے والے عقیدت مندوں کو سہولیات میسر ہی نہیں ہو پارہی ہیں ۔سیاحوں پر محکمہ سیاحت پر الزام عائد کرتے ہوئے کہاکہ خطہ پیر پنچال کے اکثر سیاحتی مقامات پر بنیادی سہولیات ہی فراہم نہیں کی جارہی ہیں ۔انہوں نے کہاکہ محکمہ سیاحتی مقاما ت کی تعمیر و ترقی کیلئے سنجیدہ نہیں ہے جس کی وجہ سے سیاحوں شدید مشکلات درپیش رہتی ہے ۔خرشید نامی ایک شخص نے بتایا کہ مغل شاہراہ کو تعمیر ہوئے کافی عرصہ بیت گیا ہے لیکن ابھی تک پیر گلی جیسے سیاحتی مقام کی تعمیر وترقی کے سلسلہ میں کوئی قدم نہیں اٹھایا گیا ہے ۔سیاحوں نے جموں وکشمیر انتظامیہ سے مانگ کرتے ہوئے کہاکہ پیر گلی جیسے سیاحتی مقام پر سیاحوں و زیارت پر آنے والے عقیدت مندوں کیلئے بنیادی سہولیات فراہم کی جائیں ۔