مغربی ہواوں کااثر| اگلے 3 ماہ جموں کشمیر میں ٹھنڈ میں اضافہ ہوگا

حصار// آئندہ تین مہینوں میں شمالی ہندوستان میں کم سے کم درجہ حرارت معمول سے کم رہنے کی توقع ہے۔محکمہ موسمیات کے مطابق  دسمبر 2020 سے فروری 2021 تک  اگلے تین مہینوں میں کشمیر ، لداخ ، اتراکھنڈ میں 11 سے 15 مرتبہ مغربی ہلچل ہوگی۔مغربی ہوائوں کے اثر کے دوران برف باری ہوگی۔ اس سے میدانی علاقوں پر بھی اثر پڑے گا۔ چودھری چرن سنگھ ہریانہ زرعی یونیورسٹی، حصارکے محکمہ موسمیات کے مطابق  شمال مشرقی ریاستوں پنجاب ، ہریانہ ، راجستھان ، یوپی ، بہار ، جھارکھنڈ ، چھتیس گڑھ ، مغربی بنگال ، اڈیشہ میں کم سے کم درجہ حرارت معمول سے کم رہنے کی توقع ہے۔دن کا زیادہ سے زیادہ درجہ حرارت معمول سے ڈیڑھ ڈگری زیادہ رہنے کا امکان ہے۔ میدانی علاقوں میں راجستھان میں سب سے زیادہ ٹھنڈ  ہونے کے امکانات ہیں۔ سال 2019 کے نومبر میں ہریانہ کا نارنول علاقہ سب سے زیادہ سرد تھا۔ اس مرتبہ پھر اس کے دوبارہ سردترین ہونے کا امکان ہے۔ماہرین موسمیات کا کہنا ہے کہ سردی مزید بڑھ سکتی ہے کیونکہ پہاڑوں سے ہوا میدانی علاقوں کی طرف چل رہی ہے۔ اگلے تین دنوں تک  اس  دوران  وقفے وقفے سے جزوی بادل اور شمال مغربی ہوائیں چلنے کی وجہ سے رات کے درجہ حرارت میں کمی اور صبح کے وقت ہلکی ہلکی  دھند کے  امکانات ہیں۔