مزید 11شہری فوت | نئے 878 معاملات کا اضافہ، متاثرین 79ہزار کے پار، 25فورسز اہلکار بھی شامل

 سرینگر//اتوار کو25فورسز اہلکاروں، 30سفر کرنے والوں اور3کمسن بچوں سمیت مزید 878افراد کی رپورٹیں مثبت آئیں، جسکے ساتھ ہی مزید 11افراد فوت ہوگئے ۔اس طرح جہاں مہلوکین کی تعداد 1242 تک پہنچ گئی ، وہیں متاثرین کی مجموعی تعداد79106ہوگئی ہے ۔ مہلوکین میں سے 382جموں جبکہ 860کشمیر میں فوت ہوئے جبکہ متاثرین میں سے 31613جموں جبکہ 47493کشمیر سے تعلق رکھتے ہیں۔ تازہ 878میں سے 422کشمیر جبکہ 456جموں صوبے سے تعلق رکھتے ہیں۔ کشمیر کے 422میں 156سرینگر، 53بڈگام، 52بارہمولہ،  17 پلوامہ، 12کپوارہ، 30اننت ناگ،54بانڈی پورہ، 33 گاندربل،6 کولگام اور 9شوپیان سے تعلق رکھتے ہیں۔ جموں صوبے کے 456 میں252ضلع جموں، 35راجوری، 27ادھمپور، 14 ڈوڈہ، 21 کٹھوعہ، 17پونچھ، 22سانبہ، 8رام بن، 49کشتواڑ اور 11 ریاسی سے تعلق رکھتے ہیں۔ 

مزید 11اموات

 جموں و کشمیر میں پچھلے24گھنٹوں کے دوران کورونا وائرس سے مزید 11 متاثرین فوت ہوگئے جن میں سے 5کشمیر جبکہ 6جموں میں فوت ہوئے ہیں۔ کشمیر میں فوت ہونے والے 5متاثرین میں سے 2سرینگر، ایک بڈگام، ایک اننت ناگ اور ایک بانڈی پورہ سے تعلق رکھتا ہے۔ سرینگر میں تعینات محکمہ صحت کے ایک سینئر ڈاکٹر نے بتایا کہ آلوچی باغ سے تعلق رکھنے والی 65سالہ خاتون اور62راج باغ سے تعلق رکھنے والا 62سالہ شخص کورونا وائرس سے پیدا ہونے والے نمونیا سے صدر اسپتال سرینگر میں فوت ہوگئے‘‘۔ سینئر ڈاکٹر نے بتایا’’ گڈول اننت ناگ سے تعلق رکھنے والا 70سالہ معمر شخص کورونا وائرس سے فوت ہوگیا ‘‘۔بڈگام میں تعینات ایک سینئر ڈاکٹر نے بتایا ’’خانصاحب بڈگام سے تعلق رکھنے والا ایک 75سالہ معمر شخص صدر اسپتال سرینگر میں فوت ہوگیا ہے‘‘۔ بانڈی پورہ میں تعینات محکمہ صحت کے ایک سینر ڈاکٹر نے بتایا کہ لنکریشی پورہ سے تعلق رکھنے والا 55سالہ شخص کورونا وائرس سے پیدا ہونے والے نمونیا سے فوت ہوگیا ہے۔ جموں میں کورونا وائرس سے فوت ہونے والے 6افراد میں سے 3ضلع جموں،ایک راجوری، ایک ادھمپور اور ایک کٹھوعہ سے تعلق رکھتا ہے۔جی ایم سی جموں میں تعینات محکمہ صحت کے ایک سینئر ڈاکٹر نے بتایا ’’درگا نگر جموں سے تعلق رکھنے والا 80سالہ معمر شخص، سبہاش نگر سے تعلق رکھنے والا 71سالہ شخص اور مکھن پور بسنا سے تعلق رکھنے والا 76سالہ شخص کورونا وائرس سے پیدا ہونے والے نمونیا سے فوت ہوگئے‘‘۔سینئر ڈاکٹر نے بتایا کہ یہ تینوں متاثرین جی ایم سی جموں کے آئیسولیشن وارڈ میںفوت ہوگئے۔ 

 حکومتی بیان

حکومت کی طرف سے جاری کئے گئے روزانہ میڈیا بلیٹن میں بتایا گیا ہے کہ نوول کورونا وائرس کے79,106معاملات سامنے آئے ہیں جن میں سے15,460سرگرم معاملات ہیں ۔ اَب تک62,404اَفراد صحتیاب ہوئے ہیں ۔جموں وکشمیر میں کوروناوائرس سے مرنے والوں کی مجموعی تعداد1,242تک پہنچ گئی ،جن میں سے 860کا تعلق کشمیر صوبہ سے اور382کاتعلق جموں صوبہ سے ہیں۔اِس دوران اتوار کومزید1,053شفایاب ہوئے ہیںجن میںجموں صوبے کے525اور کشمیر صوبے کے 528اَفراد شامل ہیں ، جن کو جموں و کشمیر کے مختلف ہسپتالوں سے رُخصت کیا گیا۔بلیٹن میں مزید کہا گیا ہے کہ اَب تک 17,07,503ٹیسٹوں کے نتائج دستیاب ہوئے ہیں جن میں سے  04؍اکتوبر 2020 ء؁ ء کی شام تک 16,28,397نمونوں کی رِپورٹ منفی پائی گئی ہے ۔علاوہ ازیں اَب تک5,91,771افراد کو نگرانی میں رکھا گیا ہے جن کا سفر ی پس منظر ہے اور جو مشتبہ معاملات کے رابطے میں آئے ہیں۔ اِن میں22,258اَفراد کو ہوم قرنطین میں رکھا گیا ہے جس میں سرکار کی طرف سے چلائے جارہے قرنطین مراکز بھی شامل ہیں ۔15,460  اَفراد کوآئیسولیشن میں رکھا گیا ہے جبکہ48,301اَفراد کو گھروں میں نگرانی میں رکھا گیا ہے۔اِسی طرح بلیٹن کے مطاب5,04,510اَفرادنے 28روزہ نگرانی مدت پوری کی ہے۔
 
 
 

سرینگر20 اضلاع میں سر فہرست | 301جانیں گنوا چکے  |  15ہزار متاثر، 1908زیر علاج

پرویز احمد

 
سرینگر //جموں و کشمیر میں کورونا وائرس سے ہونے والی ہلاکتوں اور متاثرین کی تعداد میں سرینگرضلع جموں کشمیر کے20اضلاع میں سرفہرست ہے۔ 16مارچ سے لیکر 4اکتوبر تک سرینگر میں کورونا وائرس کی وجہ سے نہ صرف 301متاثرین اپنی جان گنواچکے ہیں بلکہ شہر میں15,533افراد وائرس سے متاثر ہوئے ہیں ۔ ان میں سے 14,416 مقامی سطح پر متاثر ہوئے جبکہ 1,117 بھارت کی مختلف ریاستوں اور کورونا وائرس سے متاثرہ ممالک مثلاً ایران ،چین، اٹلی، ملیشیا، بنگلہ دیش، پاکستان، فرانس اوردیگر ممالک سے واپس لوٹے ہیں۔ سرینگر شہر میں 13,324صحتیاب ہونے کے بعد گھروں کو واپس لوٹ گئے جبکہ 1908افراد ابھی بھی مختلف اسپتالوں میں زیر علاج ہیں۔ سرکاری اعداد و شمار کے مطابق سرینگر شہر  میں4ستمبر سے 4اکتوبر تک کورونا وائرس سے 70افراد فوت ہوگئے  جبکہ 16مارچ سے 4ستمبر تک 231افراد لقمہ اجل بن گئے۔