مزید خبریں

منکوٹ میں ماڈل سکول قائم کر نے کا مطالبہ 

جاوید اقبال 
مینڈھر //محکمہ ایجوکیشن کی جانب سے مینڈھر سب ڈویژں میں تعمیر ہونے والے ماڈل سکول کی منتقلی کے بعد منکو ٹ کی عوام نے مطالبہ کرتے ہوئے کہاکہ سکول کو سرحدی تحصیل منکوٹ میں تعمیر کیا جائے تاکہ سرحدی علاقوں کے بچوں کو معیاری تعلیم مہیا کروائی جاسکے ۔ضلع ترقیاتی کونسل رکن منکوٹ چوہدری عمران ظفر اور بلاک ڈیو لپمنٹ کونسل چیئر مین امان اللہ چوہدری و دیگران نے مینڈھر میں ایک پریس کانفرنس کے دوران محکمہ ایجوکیشن اور جموں وکشمیر انتظامیہ سے مانگ کرتے ہوئے کہاکہ سکول کو پہاڑی پر تعمیر کرنے کے بجائے سرحدی تحصیل منکوٹ یا کسی مرکزی جگہ پر تعمیر کیا جائے تاکہ سب ڈویژن کیساتھ ساتھ سرحدی علاقوں کے بچوں کو معیاری تعلیم مل سکے ۔انہوں نے الزام عائد کرتے ہوئے کہاکہ ماڈل سکول کو بھیرہ سے ایک سیاسی دبائو تلے منتقل کر کے کالابن لے جایا گیا ہے جبکہ محکمہ ایجوکیشن کے اعلیٰ آفیسران کو چاہئے کہ وہ سیاسی دبائو میں آکر بچوں کے مستقبل کیلئے اس نوعیت کے فیصلے نہ کرئے ۔انہوں نے مانگ کرتے ہوئے کہاکہ سکول کو ایک مرکزی جگہ یا منکوٹ سرحدی تحصیل میں تعمیر کیا جائے ۔اس موقعہ پر پنچایتی اراکین کی ایک بڑی تعداد بھی موجود تھی ۔
 
 
 
 

کوٹرنکہ میںاور لوڈنگ و اضافی کرایہ سے مسافر پریشان 

اسسٹنٹ ریجنل ٹرانسپورٹ آفیسر راجوری پر لاپرواہی کا الزام 

محمد بشارت
کوٹرنکہ //سب ڈویژن کوٹرنکہ میں کووڈ کی آڑ میں مسافروں کو شدید ہراساں کیا جارہا ہے لیکن ٹریفک حکام اور اسسٹنٹ ریجنل ٹرانسپورٹ آفیسر راجوری کی جانب سے کوئی کارروائی ہی نہیں کی جارہی ہے ۔مقامی لوگوں نے محکمہ و مقامی انتظامیہ کو تنقید کا نشانہ بناتے ہوئے کہاکہ کووڈ کی آڑ میں ٹرانسپورٹروں بالخصوص ٹیمپو ڈرائیوروں کی جانب سے مسافروں کو لوٹنے کا سلسلہ شروع کر دیا گیا ہے جبکہ اضافی کرایہ وصول کرنے کے سلسلہ میں آواز بلند کرنے پر ان کو شدید ہراساں بھی کیا جاتا ہے لیکن مقامی انتظامیہ اور متعلقہ محکمہ سے رجوع کرنے کے باوجود بھی کوئی کارروائی نہیں کی جارہی ہے ۔مسافروں نے بتایا کہ کوٹرنکہ سے راجوری جانے والی ٹیمپوں میں 15سواریاں لوڈ کی جاتی ہیں جبکہ ہر ایک سواری سے 150روپے کرایہ وصول کیا جاتا ہے ۔غور طلب ہے کہ کوٹرنکہ سے راجوری کا سفر محض 40کلو میٹر ہے لیکن متعلقہ محکمہ کی جانب سے نہ تو اضافی کرایہ وصول کرنے والوں کیخلاف کوئی کارروائی کی جاتی ہے اور نہ ہی زمینی سطح پر قاعدہ کے تحت کرائے کی وصولی کے عمل کا لاگو کیا جارہا ہے ۔مسافروں نے اسسٹنٹ ریجنل ٹرانسپورٹ آفیسر راجوری اور ٹریفک پولیس پر الزام عائد کرتے ہوئے کہاکہ غریب عوام کو کوئی سہولیت نہیں دی جارہی ہے جبکہ مذکورہ محکمہ کے ملازمین بھی ڈرائیوروں کی ہی زبان بولتے ہیں ۔انہوں نے ضلع ترقیاتی کمشنر راجوری سے اپیل کرتے ہوئے کہاکہ اسسٹنٹ ریجنل ٹرانسپورٹ آفیسر راجوری کے متحرک کر کے ان کو اضافی کرایہ سے بچایاجائے تاکہ ان کی پریشانی کم ہو سکے ۔
 
 
 

خبر کا اثر   

کوٹرنکہ میں پل کی مرمتی کیلئے ٹینڈر کا اجراء 

محمد بشارت 
کوٹرنکہ //سب ڈویژن کوٹرنکہ کی پنچایت حلقہ لوہر کیول میں دو تحصیلوں کے درمیان تباہ شدی پل کی روز نامہ کشمیر عظمیٰ میں خبر شائع ہونے کے کچھ ہی دن بعد متعلقہ حکام کی جانب سے مرمتی کیلئے ٹینڈر کا اجراء کر دیا ہے ۔غور طلب ہے کہ بلاک بدھل نیو میں تعمیر کردہ کنگوٹا پل کی دیواریں گزشتہ دنوں ہوئی شدید بارش کی وجہ سے منہدم ہو گئی تھی اور ایک وسیع علاقہ کی عوام کو دریا پار کرنے میں مشکلات پیش آرہی تھی جبکہ اس سلسلہ میں کشمیر عظمیٰ میں ایک تفصیلی خبر شائع کی گئی تھی جس کے بعد متعلقہ محکمہ نے ٹینڈنگ عمل شروع کر دیا ہے ۔مقامی لوگوں نے ادارہ کا شکریہ ادا کرتے ہوئے کہاکہ اخبارکی مدد سے عوامی مشکل کو حکام تک پہنچایا گیا ۔انہوں نے امید ظاہر کرتے ہوئے کہاکہ اس پل کو جلدازجلد مکمل کر کے عام لوگ کا راستہ بحال کیا جائے گا ۔
 
 
 
 

 متعدد علاقوں میں جنگلی جانوروںکی دہشت

محمد بشارت 
کوٹرنکہ //بلاک بدھل کے متعدد دیہات میں اس وقت جنگلی جانور بستیوں کی جانب کوچ کر گئے ہیں جس کی وجہ سے مکینوں میں خوف و ہراس پایا جارہا ہے ۔مقامی لوگوں نے بتایا کہ بدھل کے گھبر ،گلیر اور دھار ساکری علاقوں میں جنگلی ریچھوں کیساتھ ساتھ چیتے بھی بستیوں میں آگئے ہیں جس کی وجہ سے مال مویشیوں کیساتھ ساتھ عام لوگوں کیلئے خطرہ پیدا ہو گیا ہے ۔مکینوں نے بتایا کہ ان علاقوں میں اس وقت مکئی کی فصل تیار ہو گئی ہے جبکہ جنگلی جانور سورج غروب ہونے کیساتھ ہی بستیوں میں آجاتے ہیں ۔غور طلب ہے کہ اس سے قبل بھی مذکورہ علاقوں جنگلی جانوروں کے حملوں میں کچھ افراد زخمی ہو چکے ہیں ۔عام لوگوں نے وائلڈ لائف محکمہ سے اپیل کرتے ہوے کہاکہ وہ ان جانوروں کو بستیوں سے نکالنے میں اپنا رول ادا کرئے تاکہ عام لوگوں کو بچایا جاسکے ۔
 
 
 
 

لاہ میں محکمہ پشو پالن کابیداری کیمپ 

تھنہ منڈی //تھنہ منڈی کے لاہ علاقہ میں محکمہ پشو پالن کی جانب سے مویشیوں کی افزائش نسل اور مختلف بیماریوں سے بچاؤ کیلئے ایک بیداری کیمپ کا انعقاد کیا گیا جس میں لوگوں کو ویٹرنری ڈیپارٹمنٹ ، ڈیری اور پولٹری یونٹس میں نئی تکنیکوں کے بارے میں اہم جانکاری دی گئی۔ اس موقع پر ڈاکٹر امتیاز انجم ویٹرنری اسسٹنٹ سرجن تھنہ منڈی اور ڈاکٹر زبیر علی ویٹرنری اسسٹنٹ سرجن شاہدرہ شریف نے کشمیر عظمیٰ کوبتایاکہ دیہی اور پہاڑی علاقوں میں عوام کی اکثریت کا روز گارمویشیوں سے وابستہ ہے جبکہ محکمہ مویشیوں کی مستقل نگہداشت رکھنے میں کسانوں کی مدد کیلئے ہر وقت تیار رہتا ہے ۔انہوں نے بتایا کہ بیداری کیمپ کے دوران مویشیوں کی مختلف بیماروں کے سلسلہ میں عوام کو جانکاری فراہم کرنے کیساتھ ساتھ ادویات بھی تقسیم کی گئیں ۔
 
 
 
 

منشیات کیخلاف پولیس کا کریک ڈاون جاری

تھنہ منڈی میں چرس سمیت 1شخص گرفتار 

عظمیٰ یاسمین
تھنہ منڈی //تھنہ منڈی میں جموں وکشمیر پولیس نے ایک کارروائی کے دوران ایک شخص کو چرس سمیت گرفتار کرلیا ۔واضح رہے کہ منشیات فروشوں اور جرائم پیشہ افراد کے خلاف پولیس کا کریک ڈاون جاری رکھی ہوئی ہے ۔ایس ایچ او تھنہ منڈی انسپکٹر فرید احمد چوہدری کی سربراہی میں پولیس پارٹی نے اس بدعت کے خلاف ایک منظم مہم کے تحت منیال گلی علاقے میں مصدقہ اطلاع کی بنا پر ایک ناکے کے دوران ایک شخص کو تقریباً 2 کلو 300 گرام چرس سمیت گرفتار کر لیا جس کی پہچان منور حسین ولد نور حسین سکنہ چوہدری ناڑ راجوری کے طور پر ہوئی ہے۔ پولیس حکام نے تلاشی کے دوران ٹاٹا موبائل گاڑی زیر نمبر JK11F/0644  میں سوار ملزم کی تحویل سے مذکورہ چرس برآمد کرنے کا دعویٰ کیا ہے ۔ اس سلسلے میں ، این ڈی پی ایس ایکٹ کے زیر تحت ایک معاملہ درج کر کے مزید تحقیقات شروع کر دی گئی ہیں ۔
 
 
 

دھندک ۔مڑہوٹ سڑک پر تارکول بچھانے کا افتتاح 

بختیار کاظمی
سرنکوٹ//محکمہ تعمیر ات عامہ کی جانب سے سرنکوٹ کے دھندک تا مڑہوٹ رابطہ سڑک پر تار کول بچھانے کا عمل شروع کر دیا گیا ہے ۔مقامی لوگوں نے بتایا کہ ایک لمبی جدو جہد کے بعد انتظامیہ کی جانب سے رابطہ سڑک کی تعمیر کا عمل شروع کیا گیا ہے ۔انہوں نے بتایا کہ گزشتہ کئی عرصہ سے سڑک کی تعمیر کو مکمل کرنے کیلئے اعلیٰ حکام کیساتھ ساتھ مقامی آفیسران کیساتھ رابطہ کیا جارہا تھا جبکہ اب محکمہ کی جانب سے رابطہ سڑک کے پہلے ایک کلو میٹر علاقہ میں تار کول بچھانے کا عمل شروع کر دیا ہے ۔ محکمہ کے اے ای ای امتیاز میر نے لوگوں کی بروقت شکایت کو سنتے ہوئے سڑک کی مرمت کا ٹینڈر کر دیا جس کے بعد اب سڑک کام شروع ہے۔ انھوں نے محکمہ کے آفیسران کی ستائش کرتے ہوئے کہا کہ لوگوں کی مشکل کو حل کرنے کیلئے عملی بنیاد پر کام شروع کیا گیا ہے ۔مکینوں نے مانگ کرتے ہوئے کہاکہ رابطہ سڑک پر تارکول بچھانے کیساتھ ساتھ نالیوں کی تعمیر بھی کی جائے تاکہ ملحقہ علاقوں میں لوگوں کی زمینیں متاثر نہ ہوں ۔
 
 
 
 

منڈی کو مغل شاہراہ سے جوڑنے والی سڑک کئی سالوں سے تشنہ تکمیل

حسین محتشم
پونچھ//محکمہ تعمیرات عامہ کے زیر اہتمام منڈی کو بائیلہ فتح پور پھاگلہ کو مغل شاہراہ کے ساتھ ملانے والی سڑک کا کام گزشتہ کئی سالوں سے تشنہ تکمیل ہے جبکہ عوامی مشکل کے باوجود بھی متعلقہ تعمیر اتی ایجنسی کی جانب سے سڑک کو مکمل نہیں کیاجارہا ہے ۔دونوں جانب سے سڑک کی زمین کٹائی قریب قریب مکمل ہو چکی ہے لیکن عرصہ دراز سے سڑک گاڑیوں کی آمدورفت کے لئے تیار نہیں ہے۔مقامی لوگوں نے برہمی کا اظہار کرتے ہوِے کہا کہ کئی دہائیاں گزر جانے کے بعد بھی تعمیر مکمل نہیں ہوئی ہیں اور منڈی تا فتح پور سیڑھی خواجہ تک بھی سڑک کی حالت خستہ حال ہوچکی ہے جس کی وجہ سے عوام پریشان ہیں۔ سرپنچ حلقہ پنچایت منڈی بائیلہ مبشر حسین بانڈے نے کہا کہ سڑک پر جگہ جگہ بڑے بڑے کھڈے پڑے ہوے ہیں جن کی وجہ سے کئی بار حادثات بھی رونما ہوئے ہیں لیکن محکمہ پی ڈبلیو ڈی اور انتظامیہ کو کوئی پرواہ نہیں۔ انیوں نے کہا کہ اس خستہ حال سڑک پر کبھی بھی کوئی بڑا حادثہ پیش آسکتا ہے ۔انہوں نے ضلع ترقیاتی کمشنر سے اس مسئلہ کو سنجیدگی سے لینے کی اپیل کی۔ انہوں نے سخت تشویش کا اظہار کرتے کہا کہ ضلع پونچھ کے تمام تر دیہی علاقاجات کا یہی حال ہے۔پنچایتی اراکین و علاقہ مکینوں نے جموں وکشمیر انتظامیہ سے مانگ کرتے ہوئے کہاکہ رابطہ سڑک کو جلدازجلد مکمل کرنے کیلئے متعلقہ حکام کو ہدایت جاری کی جائیں ۔
 
 
 
 

پونچھ میں ٹریفک حکام کی کارروائی 

۔20سے زائد گاڑیوں کے چالان کئے گئے 

حسین محتشم
پونچھ// ٹریفک پولیس پونچھ نے ڈی ٹی آئی پونچھ شوکت امین کی قیادت میں مختلف مقامات پر ناکے لگا کر ٹریفک قوانین کی خلاف ورزی کرنے والوں کے خلاف کارروائی کی۔ اس دوران 20 سے زائد گاڑیوں کے چالان کاٹے گئے اور بغیرسیٹ بیلٹ ، بغیر ہیلمنٹ ، بغیر ڈرائیونگ لائسنس چلنے والوں سے جرمانہ وصولا گیا۔ ڈی ٹی آئی پونچھ نے ڈرائیو اور عام لوگوں کو کووڈ ایس او پیز پر عمل کرنے کی تلقین کی۔انہوں نے ڈرائیوروں کو آگاہ کیا کہ وہ حکومت کی طرف سے دی گئی ہدایات پر عمل کریں اور اوور لوڈنگ ،اضافی کرایہ کیساتھ ساتھ غلط پارکنگ بھی نہ کی جائے ۔ٹریفک حکام نے انتباہ دیتے ہوئے کہاکہ قوانین کیخلاف ورزی کرنے والوں کیخلاف سخت کارروائی عمل میں لائی جائے گی ۔
 
 
 

پونچھ میں کان کنی کے سلسلہ میں عوامی اجلاس 

حسین محتشم
پونچھ// اضافی ضلع ترقیاتی کمشنر پونچھ ڈاکٹر بشارت حسین نے منرل (ریور بیڈ میٹریل)  بلاک نمبر 04 ، ایریا ، 8.86 ہیکٹر کیلئے عوامی سماعت کا انعقاد کیا۔اس دوران دریائے سرن ڈاؤن اسٹریم شیر کشمیر پل اور دیگر مقامات پر ہورہی کان کنی پر تبادلہ خیال کیا گیا۔ ڈویژنل آفیسر آلودگی کنٹرول کمیٹی پونچھ م مکیش سنگھ بالی ، ریجنل ڈائریکٹر جے کے پی سی سی جموں کے نمائندے انوپم کول ، ڈسٹرکٹ منرل آفیسر اور آلودگی کنٹرول کمیٹی کے دیگر عہدیدار موجود تھے۔ متاثرہ علاقوں کے لوگوں نے مجوزہ کان کنی منصوبے سے متعلق مختلف مسائل اورخدشات اٹھائے۔اس موقع پر موجود آفیسران نے عوام کی جانب سے اٹھائے گئے تمام مسائل کو سنا اور انہیں جلد حل کرنے کی یقین دہانی کرائی۔ عوامی سماعت کی کارروائی کے دوران ویڈیو گرافی /فوٹو گرافی کی گئی ہے۔ راجیش کمار ماحولیاتی کنسلٹنٹ نے مجوزہ پروجیکٹ کا تفصیلی نقطہ نظر پیش کیا اور عوام میں ضروری آگاہی اور غیر قانونی کان کنی کے نقصانات کے بارے میں موجد لوگوں کو بتایا۔اضافی ضلع ترقیاتی کمشنر پونچھ ڈاکٹر بشارت حسین انقلابی نے اپنے خطاب میں مقامی لوگوں اور پی آر آئی کے ممبروں کو مائنر معدنیات کے مجوزہ منصوبے کے بارے میں تفصیل سے آگاہ کیا ، اور اس دوران عوام کی طرف سے اٹھائے گئے مطالبات کو پورا کرنے کا یقین دلایا۔
 
 
 

منجا کو ٹ میں رابطہ سڑکیں برسوں سے نامکمل 

نالیاں نہ ہونے سے زرعی زمینیں بنجر ہو نا شروع

پرویز خان 
منجا کوٹ//تحصیل منجا کوٹ کے مختلف دیہات میں رابطہ سڑکیں کئی برسوں سے مکمل نہیں ہو سکی جس کی وجہ سے جہاںمکینوں کو دوران آمد ورفت شدید مشکلات کا سا مناکرناپڑرہا ہے وہائیں کئی ہیکٹر زرعی زمینیں بارشوں کا پانی داخل ہونے کی وجہ سے بنجر ہو تی جارہی ہیں ۔مقامی لوگوں نے الزام عائد کرتے ہوئے کہاکہ کئی محکموں کی جانب سے تعمیرات کو مکمل ہی نہیں کیاجارہا ہے جس کی وجہ سے جہاں سڑکوں کے قریب آباد لوگوں کی زارعی اراضی کو نقصان پہنچ رہا ہے وہائیں رہائشی مکانات بھی تباہ ہو رہے ہیں ۔انہوں نے کہاکہ کئی ٹرانسپورٹروں نے قرض لے کر گاڑیاں لی ہوئی ہیں لیکن رابطہ سڑکوں کی خراب حالت کی وجہ سے مذکورہ گاڑیاں بھی تباہ ہو رہی ہیں ۔مکینوں نے بتایا کہ دھیری رلیوٹ تا کوٹلی کالابن سڑک کیساتھ ساتھ بھمبر گلی تا منگل ناڑ رابطہ سڑک گزشتہ کئی عرصہ سے زیر تعمیر ہیںلیکن ان کو مکمل کرنے میں کوئی دلچسپی ہی نہیں لی جارہی ہے ۔مکینوں نے بتایا کہ کئی سڑکوں کی تعمیر کے سلسلہ میں صرف زمینوں کی کٹائی کرنے کے بعد ان کو چھوڑ دیا گیا ہے جبکہ نالیوں کی عدم موجودگی میں بارشوں کا پانی لوگوں کی زرعی زمینوں و چراگاہوں میں داخل ہو جاتا ہے جبکہ کئی ایک جگہوں پر رہائشی مکانات بھی متاثر ہورہے ہیں ۔انہوں نے مانگ کرتے ہوئے کہاکہ رابطہ سڑکوں کو جلدازجلد مکمل کر کے عوام کی مشکل کو حل کیا جائے ۔ 
 
 
 
 
 
 
 
 
 
 
 

پیر بڈیسر میں طبی سہولیات دستیاب نہیں | لوگوں مریضوں کو دیگر علاقوں میں منتقل کرنے پر مجبور 

رمیش کیسر 
نوشہرہ //سب ڈویژن نوشہرہ کے سرحدی علاقہ پیر بڈیسر میں ابھی تک کوئی بھی طبی مرکزی قائم نہیں کیا جاسکا جس کی وجہ سے لوگ مریضوں کو چھوٹی بیماریوں کیلئے بھی دیگر علاقوں میں قائم کر دہ طبی مراکز و ہسپتالوں میں منتقل کرنے پر مجبور ہیں ۔مقامی لوگوں نے بتایا کہ علاقہ حد متارکہ کے قریب ہونے کی وجہ سے عام لوگ پہلے سے ہی ہر طرح کی بنیادی سہولیات سے محروم ہیں لیکن محکمہ صحت کی عدم دلچسپی کی وجہ سے پیر بڈیسر علاقہ میں ابھی تک کوئی صحت سنٹر قائم ہی نہیں کیاجاسکا جبکہ مشکل وقت میں بھی مریضوں کو کئی کلو میٹر کی دور پر منتقل کرنا پرتا ہے ۔انہوں نے بتایا کہ حاملہ خواتین کو نوشہرہ ،راجوری و دیگر ہسپتالوں میں منتقل کرنا پڑتا ہے جبکہ کسی بھی ایمرجنسی میں مریضوں یا زخمیوں کو علاج معالجہ کیلئے کئی کلو میٹر دور لے جایا جاتا ہے جو کہ ایک مشکل عمل بھی ہے ۔انہوں نے کہاکہ محکمہ صحت ،سیاسی نمائندوں وانتظامیہ کے اعلیٰ آفیسران سے متعدد مرتبہ رجوع کرنے کے بعد بھی علاقہ کو نظر انداز کیاجارہا ہے ۔محمد شریف ،شہباز خان ،شبیر خان ،محمد قاسم و دیگران نے جموں وکشمیر کے لیفٹیننٹ گورنر سے مانگ کرتے ہوئے کہاکہ مذکورہ علاقہ میں صحت نظام مہیا کرنے کیلئے سب سنٹر کا قیام عمل میں لایا جائے ۔