مزید خبریں

جموں کا نیاہوائی اڈہ | مہاراجہ ہری سنگھ کے نام پر رکھا جائے : ڈاکٹر کرن سنگھ

یو این آئی
سرینگر//سینئر کانگریس لیڈر ڈاکٹر کرن سنگھ نے جموں وکشمیر کے لیفٹیننٹ گورنر منوج سنہا کے نام اپنے ایک مکتوب میں جموں ہوائی اڈے کی نئی ٹرمینل عمارت کا نام ان کے والد مہاراجہ ہری سنگھ کے نام پر رکھنے کو کہا ہے ۔کرن سنگھ جموں و کشمیر کے آخری راجہ مہاراجہ ہری سنگھ کے بیٹے اور سابق صدر ریاست ہیں۔موصوف کانگریس لیڈر نے لیفٹیننٹ گورنر کے نام مکتوب میں لکھا ہے’’جیسا کہ آپ جانتے ہیں کہ جموں ہوائی اڈے کو پہلے میرے والد مہاراجہ ہری سنگھ نے اپنے ذاتی جہاز کیلئے تعمیر کرایا تھا اور اس کو کئی برسوں تک استعمال بھی کیا تھا‘‘۔مکتوب میں مزید کہا گیا ہے’’اب اس ہوائی اڈے کو کافی وسعت دی گئی ہے اور ایک نئی ٹرمینل عمارت بھی تعمیر ہو رہی ہے ، میں سمجھتا ہوں کہ یہ مناسب ہوگا اگر اس کا نام ‘مہاراجہ ہری سنگھ ٹرمینل’ رکھا جائے ‘‘۔ڈاکٹر کرن سنگھ مکتوب میں مزید کہتے ہیں: ‘میں نے اس سلسلے میں شہری ہوا بازی کے وزیر جیوترا دتیہ سندھیا کو بھی لکھا ہے جنہوں نے کہا کہ اس گذارش پر سٹیٹ گورنمنٹ کی سفارش، جس کی تائید ریاستی قانون ساز اسمبلی میں منظور شدہ ایک قرارداد کے ذریعے کی گئی ہو، پر غور کیا جاسکتا ہے ’۔انہوں نے مکتوب میں کہا: ‘چونکہ اس وقت یہاں اسمبلی نہیں ہے تو شاید آپ اپنی طرف سے متعلقہ وزارت میں سفارش کر سکتے ہیں، مجھے امید ہے کہ جموں کے لوگ اس اقدام کی کافی سراہنا کریں گے ’۔قابل ذکر ہے کہ جموں وکشمیر حکومت نے 8 اکتوبر کو جموں ہوائی اڈے پر ایک نئی ٹرمینل عمارت تعمیر کرنے کے لئے ایئر پورٹ اتھارٹی آف انڈیا کو قریب نو سو کنال سرکاری اراضی مفت منتقل کرنے کو منظوری دے دی۔
 
 
 

اطراف و اکناف میں سیکورٹی بنکر

مقصدلوگوں کو خاموش کرنا :محبوبہ مفتی

یواین آئی
سرینگر// پی ڈی پی صدر اور سابق وزیر اعلیٰ محبوبہ مفتی کا الزام ہے کہ جموں و کشمیر کے لوگوں کو خاموش کرنے کے لئے روز سخت سے سخت قوانین لائے جا رہے ہیں۔انہوں نے کہا کہ سری نگر میں جگہ جگہ سیکورٹی بنکر لگانے کے بعد اب سیکورٹی فورسز کو کمیونٹی ہالوں میں دھکیل دیا گیا ہے ۔موصوفہ نے ان باتوں کا اظہار ہفتے کے روز اپنے ایک ٹویٹ میں کیا۔ انہوں نے یہ ٹویٹ سری نگر میں کئی کمیونٹی ہالوں میں سی آر پی ایف اہلکار ڈیرہ زن ہونے کے رد عمل میں کیا۔محبوبہ مفتی کا اپنے ٹویٹ میں کہنا تھا،’’سرینگر کے گوشہ وکنار میں سیکورٹی بنکر لگانے کے بعد اب سی آر پی ایف کو کمیونٹی ہالوں میں دھکیلا گیا ہے جو یہاں کے لوگوں کی واحد پرائیویٹ جگہ ہے‘‘۔ان کا ٹویٹ میں مزید کہنا تھا،’’ہر روز کالے قوانین لائے جا رہے ہیں جس کا واحد مقصد لوگوں کو خاموش کرنا ہے‘‘۔
 
 
 

انٹرنیٹ بندشیں

طلاب اور پیشہ وروں کو مشکلات :تاریگامی

سرینگر// کمیونسٹ پارٹی آف انڈیا مارکسسٹ رہنما یوسف تاریگامی نے سنیچرکوکہا کہ جموں کشمیر انتظامیہ کاسرینگر اور وادی کے متعدد علاقوں میں بار بار اکثر انٹرنیٹ بند کئے جانے سے 5 اگست 2019 کے تکلیف دہ یادیں تازہ ہوتی ہیں جب کشمیرمیں مواصلاتی بندشیں عائد کی گئیں جواٹھارہ ماہ بعد مکمل طور ہٹائی گئیں۔ایک بیان میں تاریگامی نے کہاان علاقوں میں مبینہ طور اکثردن بھر انٹرنیٹ سروس بند رکھی جاتی ہے اوررات دس بجے کے بعد جب اس کی کم سے کم ضرورت ہوتی ہے،بحال کی جاتی ہے۔اس سے طلاب بری طرح متاثر ہوتے ہیں جو انٹرنیٹ دن بھربندرہنے کی وجہ سے آن لائن تعلیم حاصل کرنے میں ناکام رہتے ہیں۔انہوںنے مزیدکہاکہ تاجر،ڈاکٹر،ذرائع ابلاغ سے وابستہ افراد اوردیگر پیشہ ور ان بندشوں سے بری طرح متاثر ہوتے ہیں۔2019کی مواصلاتی بندشوں نے اقتصادیات کی کمرتوڑی اوربیروزگاری میں اضافہ ہوااورکشمیرکی اقتصادیات کو کروڑوں روپے کاخسارہ ہواجبکہ ہزاروں لوگوں کوروزگارچھن گیا۔انٹرنیٹ پرتازہ بندشوں سے حالات مزید ابتر ہوں گے۔تاریگامی نے کہا کہ فورجی انٹرنیٹ پرپابندیاں حکومت کے اُن دعوئوں کے برعکس ہیں جن میں تمام شہریوں کیلئے ڈجٹل ٹیکنالوجی کے ذریعے برابر مواقع فراہم کرنے کادعوی کیاجاتا ہے۔ انہوں نے وادی بھرمیں انٹرنیٹ خدمات کومزیدتاخیر کے بغیربحال رکھنے کا مطالبہ کیا۔
 
 
 
 

کنٹریکٹ پرکام کررہے طبی ملازمین کی برطرفی بلاجواز

بلال فرقانی
سرینگر//سرکاری اسپتالوں میں 12 برسوں سے کنٹریکٹ پر تعینات طبی ملازمین کو برطرف کرکے نئے ملازمین کی تعیناتی پرمیڈیکل ایمپلائز فیڈریشن نے برہمی کا اظہار کیاہے۔ ایوان صحافت کشمیر میں ہفتہ کو پریس کانفرنس کے دوران میڈیکل ایمپلائز فیڈریشن نے کہا کہ ان ملازمین کو عرصہ دراز کے بعد محکمہ صحت سے فارغ کرکے نئے ملازمین کی تعیناتی کسی بھی صورت میں جائز نہیں ہے۔ میڈیکل ایمپلائز فیڈریشن کے صدر شبیر احمد لنگو نے کہا کہ محکمہ صحت میں کام کرنے والے تقریبا 1200 کنٹریکٹ ملازمین کو ان کی 12 سال کی سروس کے بعد فارغ کر دیا گیا ہے۔ انہوں نے کہا کہ وہ ملازمین کہاں جائیں گے جو پہلے ہی اتنے عرصے سے مختلف  جگہوںپر کام کر رہے ہیں؟ ۔انہوں نے کہا کہ میڈیکل ملازمین کو مستقل کرنے سے متعلق ہائی کورٹ کی جانب سے پہلے ہی متعدد ہدایات جاری کی گئی ہیں،’’لیکن المیہ یہ ہے کہ ہائی کورٹ کی جانب سے ان ملازمین کی مستقلی کی ہدایات پر بھی عمل درآمد نہیں ہو رہا ہیں۔
 
 

 مریضوں کو راحت ، 90 غیرمتعینہ معاملات کو منظوری

سرینگر//مریضوں کی ایک بڑی راحت دیتے ہوئے سٹیٹ ہیلتھ ایجنسی جے اینڈ کے نے آج 90غیر متعینہ معاملات جیسے پیس میکر امپلانٹیشن ، اینڈوویسکو لر ٹریٹمنٹ ، سی آر ٹی ڈی کو آیوشمان بھارت ، پردھان منتری جن آروگیہ یوجنا کے مستفید ہونے والوں کو منظور ی دی۔یہ فیصلہ چیف ایگزیکٹیو آفیسر سٹیٹ ہیلتھ ایجنسی کی میٹنگ میں لیا گیا۔میٹنگ میں اِس سکیم سے متعلق اَفسران ، ماہرین اور دیگر شراکت دار بھی موجود تھے۔اِن غیر متعینہ معاملات میں توسیع کا فیصلہ ایس ایچ اے کو مختلف سپیشلٹیز سے متعلق ایمپینلڈ ہیلتھ کیئر پرووائیڈروں سے یہ معاملہ موصول ہونے کے بعد لیا گیا۔جموں و کشمیر کے مریضوں کی بہتری کے لئے سکیم کے آپریشن میں مزید کارکردگی لانے کی خاطر ایس ایچ اے 409پیکیجوں کی نظرثانی شدہ شرح کے ساتھ نئے ہیلتھ بینیفٹ پیکجز 2.2 کا آغاز کرے گا۔سی ای او ایس ایچ اے نے تمام شراکت داروں کی جانب سے سرطان مریضوں کے علاج کے لئے نئے علاج / ادویات کو شامل کرنے کی تجاویز پر بھی زور دیا جو پہلے شامل نہیں کئے گئے تھے۔کمیٹی نے (ٹی ایم ایس) ٹرانزیکشن مینجمنٹ سسٹم میں سرجیکل میڈیکل پیکجوں کو جمع کرنے کی اجازت دینے کی بھی تجویز دی۔ 
 
 
 

حکومت کے اقدامات سے لوگوں کوتکالیف:عوامی نیشنل کانفرنس

سرینگر// عوامی نیشنل کانفرنس نے کہا ہے کہ دفعہ 370 کی منسوخی کے بعد حکومت نے کشمیر میں خلاف ورزیوں کے نئے ریکارڈ قائم کیے ہیں۔ ایک بیان میں پارٹی  ترجمان نے کہا کہ مقامی لوگوں کی سہولت کے لیے جو میرج ہال بنائے گئے تھے ،ان پر نیم فوجی فورسز کا قبضہ ہے جب کہ ہر چوراہے پر ایک چوکی ہے جس سے پیدل چلنے والوں کی نقل و حرکت مسدود ہو گئی ہے۔ انہوں نے کہا کہ یہ ضروری ہے کہ انفرادی حقوق کا مکمل احترام کیا جائے اور عوام کو سہولیات دینے کے لیے دوستانہ انداز اپنایا جائے۔ترجمان کا کہنا تھا،’’لوگ دب گئے ہیں۔ اظہار رائے کی آزادی نہیں ہے۔ نوجوانوں کو اپنی مرضی سے گرفتار کر کے بیرون  جیلوں میں رکھا جا رہا ہے۔‘‘ ترجمان نے کہا کہ موجودہ مرکزی حکومت کے اقدامات کی وجہ سے کشمیر کی صورتحال کافی خراب ہو چکی ہے۔انہوں نے کہا، ’’سیکورٹی فورسز کی بھاری تعیناتی اور سخت تکنیکوں کو استعمال کرتے ہوئے، حکومت کشمیر میں لوگوں کو تنہا کرنے میں مصروف ہے۔‘‘
 
 

کرناہ میں نوجوان کی لاش بر آمد 

کپوارہ// اشرف چراغ // کرناہ میں جمعہ کی شام دیر گئے ایک نوجوان کی لاش کو پر اسرار طور بر آمد کیا گیا ۔پولیس تھانہ کرناہ کو ایک اطلاع ملی کی حاجیترہ علاقہ میں ایک نوجوان کی لاش پڑی ہے جس کے بعد پولیس کی ایک ٹیم وہا ں پہنچ گئی اور لاش کو اپنی تحویل میں لے لیا جس کی شنا خت21سالہ شرافت نبی میر ولد غلام نبی میر ساکن بندرین حاجیترہ کرناہ کے بطور ہوئی ۔پولیس نے لاش کوپو سٹ مارٹم اور قانونی لوازمات پورا کرنے کے بعد لو احقین کے حوالہ کیا ۔
 
 

سوپور میںموٹرسائیکل کوحادثہ ،2زخمی

سوپور//غلام محمد// نوپورہ سوپورمیں موٹر سائیکل کو پیش آئے حادثے کے دوران دوافراد کوشدیدچوٹیں آئیں جن کی شناخت خورشیداحمدڈارساکن نوپور سوپور اور ظہور احمد ساکن نور باغ سوپور کے طور ہوئی۔ سرکاری عہدیدار کے مطابق موٹر سائیکل کو ایک ماروتی کار نے ٹکر ماری دی جس کی وجہ سے اس پر سوار دوجوان گرکرزخمی ہوئے،جنہیں سب ضلع اسپتال سوپورلایا گیا جہاں خورشیداحمدکومزیدعلاج کیلئے سرینگرمنتقل کیاگیا۔پولیس نے کیس درج کرکے مزیدتحقیقات شروع کی ہے۔
 
 
 
 
 
 
 
 
 

ڈائریکٹر دیہی ترقی نے گاندربل میں کام کاج کا جائزہ لیا

مختلف اسکیموں کے فوائد سے لوگوں کو آگاہ کرنے پر زور

ارشاد احمد
گاندربل// ڈائریکٹر دیہی ترقی محکمہ کشمیرطارق احمد زرگر نے سنیچر کو ضلع گاندربل کا دورہ کیا جہاں انہوں نے افسران کے ساتھ ایک اجلاس کے دوران محکمہ کی نگرانی میں ہورہے مختلف ترقیاتی پروجیکٹوں کا جائزہ لیا۔اجلاس میں ایڈیشنل ڈپٹی کمشنر گاندربل بلال مختار، اے سی پی، ایگزیکٹو انجینئر گاندربل،بلاک ڈیولپمنٹ افسران سمیت دیگر متعلقہ حکام نے شرکت کی۔اس موقع پر ناظم دیہی ترقی نے مختلف پروگراموں پر ہورہے کام کا جائزہ لیاجن میں منریگا، 14ایف سی سمیت دیگر ترقیاتی منصوبے شامل ہیں۔اجلاس کے دوران ایڈیشنل ڈپٹی کمشنر نے ناظم دیہی ترقی کو ضلع میں مختلف سکیموں کے تحت منظور شدہ ترقیاتی منصوبوں کی موجودہ صورتحال کے بارے میں مفصل رپورٹ پیش کی۔ضلع میں ڈی ڈی سی اوربی ڈی سی دفاتر کی تعمیر پر ہورہی پیش رفت کا جائزہ لیتے ہوئے ناظم دیہی ترقی نے ایڈیشنل ڈپٹی کمشنر کو ہدایت دی کہ وہ منظور شدہ ڈیزائن کے مطابق اور تمام ضابطہ اخلاق کی پابندی کرتے ہوئے ترجیحی بنیادوں پر کام کو تیز کریں۔انہوںنے گرام سبھاکے باقاعدہ انعقاد پر زور دیا اور پی آر آئیز کو ترقیاتی منصوبوں میں سرگرمی سے حصہ لینے کی تاکید کی۔ انہوں نے عوامی شکایات کو ترجیحی بنیادوں پر حل کرنے اور ان کے ازالے کے تحت دیہی ترقی اسکیموں کے رہنما خطوط اور فوائد کے بارے میں عام لوگوں کو آگاہ کرنے پر بھی زور دیا۔بعداذاں ناظم دیہی ترقی نے کام کی رفتار کو تیز کرنے پر زور دیا تاکہ مقررہ وقت کے اندر ہدف حاصل کیا جا سکے۔ انہوں نے بلاک ڈیولپمنٹ افسران اور دیگر متعلقہ عہدیداروں کو بھی ہدایت دی کہ وہ جاری کاموں کے معیار کی نگرانی کیلئے اپنے اپنے علاقوں میں دورہ کریں۔
 
 
 

دبستان ادب کا تعزیتی اجلاس

سرینگر//دبستان ادب رفیع آباد کی طرف سے ایک تعزیتی اجلاس میں غلام احمد ڈار کو خراج عقیدت ادا کیا گیا۔اجلاس میں سابق ڈائریکتر جنرل دوردرشن رفیق مسعودی،سابق صدر ادبی مرکز کمراز فاروق رفیع آبادی،صدر دبستان جی ایم دلگیر، خزانچی دبستان ادب غلام محمد میر، گلشن مقبول اور معروف فنکار غلام رسول آہنگرموجودتھے۔اجلاس کے دوران معروف کمپوزر بجھن سوپوری اور بشارت بخاری نے آن لائن تعزیت کا اظہار کیا۔اجلاس کے اختتام پر مرحومہ کے ایصال ثواب کیلئے دعا کی گئی ۔
 
 
 

مجلس عمل کے اہتمام سے سیرت کانفرنس

سرینگر//عوامی مجلس عمل کے زیر اہتمام سنیچر کو میرواعظ منزل سرینگر میں ایک سیرت کانفرنس کا انعقاد کیا گیاجس کی صدارت سینئر حریت لیڈر پروفیسر عبد الغنی بٹ نے انجام دی جبکہ مولانا شوکت حسین کینگ، مولانا مسرور عباس انصاری، ڈاکٹر سید سمیر صدیقی، غلام حسن غمگین ،  انجینئر محمد آفاق چشتی، شبیر احمد میر، شفاعت احمد وفائی، انجینئر ہلال وار اور مولانا ایم ایس رحمن شمس سمیت سرکردہ علماء اور ممتاز دانشوروں نے حضرت محمد مصطفی ؐ کی حیات طیبہ کے تابناک گوشوں پر روشنی ڈالی ۔ مقررین نے مجلس عمل کے سربراہ میرواعظ محمد عمر فاروق کی خانہ نظر بندی پر تشویش کا اظہار کیااورتمام محبوسین کی فوری رہائی کا مطالبہ کیا۔مقررین نے کہا کہ طاقت کے بل پر مسائل کو حل نہیں کیا جاسکتا بلکہ اگر واقعی حقیقی امن اور ترقی چاہئے تو تنازعہ کشمیر کو تمام فریقین کے درمیان پر امن مذاکرات سے حل کیا جانا چاہئے ۔
 
 
 

جامع مسجد ٹنگمرگ میں محفل مولود 

 ٹنگمرگ /مشتاق الحسن/مرکزی جامع مسجد ٹنگمرگ میں محفل مولود النبیؐ کی تقریب منعقد ہوئی جو صبح دس بجے شروع ہوکر نمازعصر کو اختتام پذیر ہوئی۔تقریب میں مولانا غلام محی الدین نقیب ،مولانا مبارک احمد ربانی ، مولانا اویس احمد قادری ،مولانا مظفر حسین قادری اور مولانا شوکت احمد میر نے شرکت کرکے پیغمبر آخر الزمان حضرت محمد مصطفیؐ کی سیرت پاک پر تفصیلی روشنی ڈالی ۔اس تقریب میں دوردراز علاقوں سے آئے ہوئے سینکڑوں افراد نے شرکت کی ۔
 
 

دبستان ادب کا تعزیتی اجلاس

سرینگر//دبستان ادب رفیع آباد کی طرف سے ایک تعزیتی اجلاس میں غلام احمد ڈار کو خراج عقیدت ادا کیا گیا۔اجلاس میں سابق ڈائریکتر جنرل دوردرشن رفیق مسعودی،سابق صدر ادبی مرکز کمراز فاروق رفیع آبادی،صدر دبستان جی ایم دلگیر، خزانچی دبستان ادب غلام محمد میر، گلشن مقبول اور معروف فنکار غلام رسول آہنگرموجودتھے۔اجلاس کے دوران معروف کمپوزر بجھن سوپوری اور بشارت بخاری نے آن لائن تعزیت کا اظہار کیا۔اجلاس کے اختتام پر مرحومہ کے ایصال ثواب کیلئے دعا کی گئی ۔
 
 
 

 مغل روڈ پر قبائلی آبادی کیلئے ٹرانزٹ رہائش گاہ 

سیکرٹری قبائلی امور کی پروجیکٹ کے کام میں سرعت لانے کی ہدایت

شوپیان//سیکرٹری قبائلی اَمور شاہد اِقبال چودھری نے وائلڈ لائف وارڈن کی طرف سے لال غلام برج کے قریب قبائلی آباد ی کے لئے تعمیر کردہ ٹرانزٹ رہائش گاہ کا دورہ کیا اور ضلع میں پڑنے والے شوپیان سے پیر کی گلی تک مغل ریڈ کے پورے علاقے کا معائنہ کیا۔دورے کے دوران سیکریٹری قبائلی اَمور کے ہمراہ ضلع ترقیاتی کمشنر شوپیان سچن کمار واشیا ، ڈویژنل فارسٹ آفیسر ( ڈی ایف او) وائلڈ لائف وارڈن اِنتظار سہیل اور دیگر اَفسران بھی تھے۔شاہد اِقبال چودھری نے متعلقہ ایگزیکٹیوٹنگ ایجنسیوں کو ہدایت دی کہ وہ پروجیکٹ کے کام میں سرعت لائیں اور منصوبے کو مقررہ مدت کے اندر مکمل کرنے کے لئے افرادی قوت اور مشینری کو تیار کریں۔ اُنہوں نے  دستیاب وسائل کے نتیجہ خیزاِستعمال کو یقینی بنانے پر زور دیا ۔ یہ علاقہ آنے والے ہفتوں میں ضلع کی قبائلی آبادی کے ترقیاتی منظر نامے کو بڑھانے کی طرف ایک اہم قدم ہوگا۔سیکرٹری قبائلی امور نے معائنہ کے دوران قبائلی آبادی کے لئے ٹرانزٹ ایکموڈیشن سائٹ کے تعمیراتی کام میں تیزی لانے ، تحفظی کاموں ، لال غلام بر کے قریب سائٹ مع مختلف مقامات پر گڑھوں کی مرمت کا جامع جائزہ لیا۔ڈی ایف او  وائلڈ لائف وارڈن نے قبائلی آبادی کے لئے ٹرانزٹ رہائش کے لیے جگہ کے تھرو انسپیکشن کے بعد ایڈمنسٹریٹو سیکریٹری اور ضلع ترقیاتی کمشنر کو مختلف سرگرمیوں کی پیش رفت سے آگاہ کیا۔ سیکرٹری موصوف اور ضلعی ترقیاتی کمشنر شوپیان نے قبائلی آبادی کے لئے ٹرانزٹ رہائش سائٹ کے معائینہ  کے دوران مغل روڈ کی سطح پر بھی اطمینان کا اظہار کیا اور اُنہوں نے کہا کہ مغل روڈ کی حالت میں نمایاں بہتری آئی ہے ۔سیکرٹری موصوف نے شوپیان ضلع میں آستانِ عالیہ پیر کی گلی پر حاضری دی اور اُنہوں نے وہاں کے زائرین سے اپیل کی کہ وہ پیر کی گلی کے نازک ماحولیاتی فنِ تعمیر کے تحفظ میں اَپنا رول ادا کریں اور متعلقہ اَفراد کو اس کی خوبصورتی اور دیدۂ ذیب کے لئے ایک جامع منصوبہ بنانے کی ہدایات بھی جاری کیں۔ یہ بات قابلِ ذکر ہے کہ پیر کی گلی وادی کشمیر اور پیر پنچال خطے کے درمیان مغل روڈ پر ایک تاریخی گیٹ وے ہے۔
 

نیشنل کانفرنس کا خواتین کو بااختیار بنانے میں اہم رول:ناصر اسلم

 خواتین کیلئے پنچایتوں اور ڈاکٹری سیٹوں میں کوٹا جیسے اقدامات نیشنل کانفرنس کی دین:شمیمہ فردوس

سرینگر//ایک بہتر معاشرے اور مہذب قوم کی تعمیر میں خواتین کا رول انتہائی اہم ہوتا ہے اور نیشنل کانفرنس میں بھی ہمیشہ خواتین کے رول کو کلیدی قرار دیا گیا ہے اور اس جماعت کی خواتین ونگ کو پارٹی کا ایک اہم ستون مانا جاتا ہے۔ان باتوں کا اظہار پارٹی کے صوبائی صدر ناصر اسلم وانی نے پارٹی ہیڈکوارٹر پر حلقہ انتخاب امیرا کدل کی خواتین ونگ کے عہدیداروں کے ایک اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔ اس موقع پر خواتین ونگ کی ریاستی صدر شمیمہ فردوس، صوبائی صدر انجینئر صبیہ قادری اور دیگر لیڈران بھی موجود تھے۔ ناصر اسلم نے کہا کہ نیشنل کانفرنس کے ’نیا کشمیر‘ پروگرام میں خواتین کی بااختیاری کو انتہائی اہمیت دی گئی ہے اور تاریخ گواہ ہے کہ جب جب نیشنل کانفرنس کی حکومتیں معرض وجود میں آئیں ،خواتین کو بااختیاربنانے کیلئے تاریخی اور انقلابی اقدامات کئے گئے۔ خواتین کیلئے پنچایتی راج میں 33فیصد ریزرویشن سے لیکر ڈاکٹری سیٹوں میں 50فیصد کوٹا جیسے اقدامات نیشنل کانفرنس کی ہی دین ہے۔انہوں نے خواتین ونگ کی عہدیداروں اور کارکنوں پر زور دیا کہ وہ نیشنل کانفرنس کا ’نیا کشمیر‘ اور اٹانومی مسودہ کے ساتھ ساتھ 35اے اور دفعہ370کی اہمیت اور افادیت گھر گھر پہنچائیں۔ پارٹی کی خواتین ونگ کی ریاستی صدر شمیمہ فردوس نے اپنے خطاب میں کہا کہ جموں وکشمیر میں اس وقت افسر شاہی کا ایسا نظام مسلط کیا گیا ہے جو یہاں کی جغرافیائی حالت، زبان، کلچر، زمینی صورتحال ، عوامی مزاج ،لوگوں کے احساسات و جذبات اور ضروریات سے مکمل طور پر نابلد ہے۔انہوں نے کہا کہ افسرشاہی کی نااہلی کا اندازہ اس بات سے لگایا جاسکتا ہے کہ انتہائی اہمیت کے حامل کمیونٹی ہالوں کو فورسز کی تحویل میں دیا گیا ۔ شہر کی گنجان آبادی والے علاقوں میں لوگوں کو ان کمیونٹی ہالوں سے بہت راحت ملتی تھی ۔ شمیمہ فردوس نے کہا کہ 1990میں بھی ایسے ہی سرکاری عمارتوں، سکولوں ، کالجو ں ، سنیما گھروں اور ہسپتالوں کو فورسزکی تحویل میں دیا گیا تھا ، جو بعد میں گنجان آبادیوں میں قتل و غارت کا باعث بنے۔ پارٹی کی صوبائی صدر انجینئر صبیہ قادری نے بھی خطاب کیا۔
 
 

 عرس ِغوث العظمؒ

ساگر نے انتظامات کا جائزہ لیا

سرینگر//نیشنل کانفرنس کے جنرل سیکریٹری علی محمد ساگر نے حضرت شیخ سید عبدالقادر جیلانیؒ کے عرس کے سلسلے میں خانیارمیں انتظامات کا جائزہ لیا اور مقامی لوگوں کے ساتھ خصوصاً بقعہ عالیہ کے سجادہ نشین سید خالد گیلانی اور دیگر منتظمین کے ساتھ بات کی۔ انہوںنے انتظامیہ خصوصاً صوبائی کمشنر کشمیر اور ڈپٹی کمشنر سرینگر سے اپیل کی کہ ایام عرس کے دوران زائرین کو ہر سطح پر راحت پہچانے کے لئے معقول اور مناسب انتظامات دستیاب رکے جائیں۔انہوں نے پینے کے پانی ، بغیر خلل بجلی ، صحت وصفائی اور ٹرانسپورٹ کی دستیابی پر زور دیا۔ اس موقع پر ساگر نے مقامی لوگوں کے مسائل ومشکلات کی بھی جانکاری حاصل کی اور ان کا سدباب کرانے کی یقین دہانی بھی کرائی۔ لوگوں نے انہیں کمیونٹی ہالوں کو فورسز اہلکاروں کی تحویل میں دینے پر اپنے خدشات کا اظہار کیا اور کہا کہ اس اقدام سے لوگوں میں کافی تشویش میں مبتلا کردیا ہے ۔ ساگر نے کمیونٹی ہالوں سے فورسز کا انخلاء عمل میں لانے کا مطالبہ کیا۔ انہوں نے کہا کہ ان کمیونٹی ہالوں کا قیام لوگوں کو سہولیات بہم پہنچانے کیلئے کیا گیا تھا اور لوگوں کو ان کمیونٹی ہالوں سے کافی راحت ملتی تھی ۔
 
 
 

 ڈپٹی کمشنر کپوارہ نے ضلع کے کئی علاقوں میں ترقیاتی کامو ں کا جائزہ لیا 

اشرف چراغ 
کپوارہ//ضلع ترقیاتی کمشنر کپوارہ امام الدین نے ضلع کے متعدد علاقوں کا دورہ کر کے ترقیاتی کامو ں کا جائزہ لیا ۔ہفتہ کے روز انہو ں نے قادر آباد ہری ،ترہگام اور سب ضلع اسپتال کا دورہ کیا اور وہا ں زیر تعمیر ترقیاتی کامو ں کا جائزہ لیا ۔انہوںنے گلگام اور ترہگام کا دورہ کیا اور وہا ں ایم پی ایل اے ڈی ایس کے تحت زیر تعمیر ترقیاتی کاموں کی پیش رفت کا جائزہ لیا ۔انہو ں نے ترہگام میں بار کے زیر تعمیر کمرو ں کا بھی جائزہ لیا اور متعلقہ تعمیری ایجنسی کو ہدایت دی کہ وہ فوری طور ان کمرو ں کو مکمل کریں ۔ترقیاتی کمشنر نے بر نواری میں آئی سی ڈی ایس دفتر میں جاکر پروگرام آفیسر کا چار ج ایڈیشنل ضلع ترقیاتی کمشنر کپوارہ الطاف احمد خان کو سونپ دیا اور امید ظاہر کی کہ مذکورہ دفتر ان کی سر براہی میں اچھے طریقے سے کام کرے گا ۔انہو ں نے اپنے دورے کی واپسی پر سب ضلع اسپتال کپوارہ کا دورہ کیا اور وہا ں او پی ڈی اورآئی پی ڈی کا  معائنہ کیا جہا ں انہو ں نے مریضوں اور ڈاکٹرو ں سے بات چیت کی ۔انہوں نے ڈاکٹرو ں کو ہدایت دی کہ وہ اپنا کام بخوبی انجام دیں اور کسی مریض کو کسی بھی مشکلات کا سامنا نہ کرنا پڑے جبکہ انہو ں نے اسپتال میں زیر تعمیرڈرگ سنٹر پر جاری کام کا بھی جائزہ لیا اور متعلقہ ایجنسی سے کہا کہ وہ تیز ی سے کام کو مکمل کریں تاکہ مریضوں کو سہولیات دستیاب ہو ں۔