مزید خبریں

 پی ڈی پی لیڈر، ٹریڈ یولیڈر سمیت کئی کارکن بی جے پی میں شامل 

 جموں//پی ڈی پی لیڈر اور ایک سرکردہ ٹریڈ یونین لیڈر سمیت دو درجن سے زیادہ کارکنوں نے منگل کو یہاں بی جے پی میں شمولیت اختیار کی۔پارٹی کے ایک ترجمان نے بتایاکہ پی ڈی پی کے سینئر لیڈر سریش گپتا، ٹریڈ یونینسٹ پریم چند شرما اور 23 دیگر سماجی کارکنوں کا پارٹی ہیڈکوارٹر میں جموں و کشمیر بی جے پی کے صدر رویندر رینا اور سابق نائب وزیر اعلیٰ نرمل سنگھ نے پارٹی میں خیرمقدم کیا۔انہوں نے کہا کہ نئے داخل ہونے والوں میں ریٹائرڈ سرکاری اور پولیس اہلکار شامل ہیں۔رینا نے اس موقع پر کہا، "بی جے پی بے لوث کوششوں کے ساتھ ملک اور سماج کی خدمت کرنے کا بہترین پلیٹ فارم ہے اور اسی وجہ سے ہر شعبے کے نمایاں چہرے بی جے پی میں مستقل بنیادوں پر شامل ہو رہے ہیں۔"انہوں نے کہا کہ وزیر اعظم نریندر مودی کی قیادت میں، قوم نے بے مثال ترقی دیکھی ہے اور ہر ہندوستانی میں ایک نئی مہم کو جنم دیا ہے تاکہ ملک کو دنیا میں بہترین مقام بنایا جا سکے۔رینا نے کہا کہ بی جے پی کا پختہ خیال ہے کہ نئے آنے والے بغیر کسی تعصب کے علاقے میں ترقی کے لیے اپنی پوری کوشش کریں گے، جبکہ وہ علاقے میں پارٹی کی سرگرمیوں کو بڑھانے کے لیے کام کریں گے۔
 

چوری کا معاملہ حل، 80 ہزار روپے مالیت کی مسروقہ ادویات برآمد

جموں//جموں پولیس نے چوری کاایک معاملہ حل کرتے ہوئے 80ہزار روپے مالیت کی چوری شدہ ادویات برآمد کرنے کا دعویٰ کیا ہے۔پولیس بیان کے مطابق پولیس تھانہ سٹی میں شکایت کنندہ سورج کمارولد اوم پرکاش ساکن کوٹ مورہ بڈھانی تحصیل بھلوال ضلع۔ جموں نے ایک تحریری شکایت درج کرائی اور بتایا کہ 22نومبر کو کچھ نامعلوم چوروں نے ان کی دکان کے ایس فارما ہول سیل فارماسیوٹیکل ڈسٹری بیوٹر کی دکان نمبر 7 آر این پورہ جموں میں گھس کر 80,000 روپے کی ادویات چوری کر لیں۔اس پر مقدمہ ایف آئی آر نمبر 74/2021 زیردفعہ 379 IPC پولیس تھانہ سٹی میں درج کیا گیا اور تحقیقات شروع کی گئی۔پولیس ٹیم نے سخت کوششیں کیں اور علاقے کے CCTV فوٹیج کی مدد سے آخر کار تینوں مشتبہ افراد کو گرفتار کرلیاجن کی شناخت راہول شرماولدکیول کرشن،انوراگ شرماولد اشونی شرما اوراکھل شرما ولدراج کمار ساکنان رتنال تحصیل بشنہ ضلع جموں کے طو رہوئی۔ مسلسل پوچھ گچھ کے دوران ملزمان نے چوری کی واردات میں ملوث ہونے کا اعتراف کیا اور ان کے انکشاف پر ان کی گاڑی سے مسروقہ ادویات برآمد کی گئیں جس کی رجسٹریشن نمبر JK02BH 9497 تھی۔ اس سلسلے میں گاڑی بھی ضبط کر لی گئی۔کیس کی مزید تفتیش جاری ہے۔
 
 

 جموں و کشمیر کو امن وخوشحالی کی طرف لے جانے کیلئے 

لوگوں کی نیشنل کانفرنس سے ہی امیدیں وابستہ :گپتا

جموں//نئے نامزد ضلع صدر جموں اربن اور بلاک صدور کو مبارکباد دیتے ہوئے نیشنل کانفرنس کے صوبائی صدر رتن لعل گپتا نے کیڈر کو امن اور سیاسی استحکام کی طرف لے جانے والی ذمہ داری کو نبھانے کی تلقین کی۔انہوں نے کہا’’نیشنل کانفرنس نے اپنے قیام سے لے کر اب تک لوگوں کو سیاسی طور پر بااختیار بنانے میں بہت کچھ کیا ہے تاکہ عوامی حوصلہ مند لوگوں کو ایک متحرک پلیٹ فارم فراہم کیا جائے اور تمام سطحوں پر فیصلہ سازی میں ان کی شرکت کو یقینی بنایا جائے"۔انہوں نے مزید کہا کہ سرشار کارکنوں کی شمولیت مزید آگے بڑھے گی۔ پارٹی کے گڑھ کو مضبوط کریں اور ان کی مشکلات کو کم کرنے کے لیے عوام کے وسیع پیمانے پر پہنچنے میں مدد کریں۔ انہوں نے کہا کہ جموں و کشمیر کے سیکولر اخلاق اور اس کی جامعیت میں یقین رکھنے والوں کے لئے پارٹی فطری انتخاب ہے۔ اجے کمار سدھوترہ، سابق وزیر اور مرکزی سکریٹری نے جموں اربن کے عہدیداروں اور کارکنوں سے اپنے خطاب میں کہا کہ نیشنل کانفرنس ایک سیکولر پارٹی ہے اور ہمیشہ جموں و کشمیر کے لوگوں کے ساتھ کھڑی رہی ہے۔ یہ جموں و کشمیر کے لوگوں کی امنگوں کی نمائندگی کرتا ہے۔نیشنل کانفرنس کے کارکنوں نے نیشنل کانفرنس کی پالیسیوں اور پروگراموں پر اپنے اعتماد کا اظہار کرتے ہوئے صوبائی صدر کو یقین دلایا کہ وہ پارٹی کے مقاصد کے حصول کے لیے اپنے اپنے علاقوں میں عوام کی بہتری کے لیے کام کریں گے۔
 
 
 

یوا راجپوت سبھا کا جموں میں احتجاج، مہاراجہ ہری سنگھ کے جنم دن پرتعطیل کا مطالبہ

جموں// یوا راجپوت سبھا نے منگل کے روز یہاں مہاراجہ ہری سنگھ کے جنم دن پر سرکاری تعطیل کے مطالبے کو لے کر ہوئے زبردست احتجاج درج کیا۔احتجاجی جم کر نعرہ بازی کر رہے تھے اور انہوں نے توی برج کو بھی بند کر دیا جس سے ٹریفک کی نقل و حمل متاثر رہی۔اس موقع پر ایک احتجاجی نے میڈیا کے ساتھ بات کرتے ہوئے کہا کہ ہم جموں وکشمیر کے آخری ڈوگرہ حکمران مہاراجہ ہری سنگھ کے جنم دن پر سرکاری چھٹی کا مطالبہ کر رہے ہیں جو ہمارا حق ہے ۔انہوں نے کہا کہ ہم کافی عرصہ سے یہ مطالبہ کر رہے ہیں لیکن حکام ہماری بات نہیں سن رہے ہیں۔ان کا کہنا تھا کہ ہم ہر مہینے کی23 تاریخ کو اپنے اس مطالبے کو لے کر احتجاج درج کرتے ہیں اور اگر ہمارا مطالبہ فوری طور پورا نہیں کیا گیا تو ہم اگلے ماہ کی دس تاریخ سے مسلسل ہڑتال کریں گے ۔موصوف احتجاجی نے کہا کہ مہاراجہ ہری سنگھ کا یہاں دس سال قبل کوئی نام نہیں لیتا تھا لیکن آج ہم ان کا نام لینے والے کافی لوگ ہیں۔انہوں نے کہا کہ مہاراجہ ہری سنگھ کوئی عام شخصیت نہیں تھیں بلکہ ان کی وساطت سے ہی جموں و کشمیر بھارت کا حصہ بن گیا۔ان کا کہنا تھا کہ ہم ڈوگرہ سماج کے لئے نوکریاں نہیں مانگتے ہیں بلکہ مہاراجہ ہری سنگھ کے یوم پیدائش پر سرکاری چھٹی کا مطالبہ کر رہے ہیں۔قابل ذکر ہے کہ مہاراجہ ہری سنگھ جموں وکشمیر کے آخری ڈوگرہ حکمران تھے ۔
 
 

محکمہ آب رسانی کا نام تو بدلا مگر کام نہیں بدلا 

قصبہ و دیہات میں پانی کی عدم دستیابی سے عوام پریشان 

 عاصف بٹ 
کشتواڑ//مرکز و جموں کشمیر انتظامیہ کی جانب سے جہاں عوام کو پانی فراہم کرنے کے بڑے دعوے کئے جاتے ہیں لیکن زمینی سطح پر حالات اسکے بالکل برعکس ہیں۔ ضلع کشتواڑ کے دیہات میں جہاں عوام پانی کی بوندبوند کو ترستی ہے وہیں اب قصبہ کی عوام کو بھی پینے کے پانی کی مشکلات کا سامان کرنا پڑرہا ہے۔کشمیر عظمیٰ کو مقامی لوگوں نے بتایا کہ سات آٹھ روز کے بعد پانی محض 20 سے 25 منٹ کیلئے فراہم کیاجاتا ہے جسے ہفتہ بھر کیلئے گزارا کرنا کافی مشکل ہوجاتا ہے۔ان کا کہناتھاکہ اگرچہ فیس ہرسال وصولی جاتی ہے لیکن انکی مشکلات کا ازالہ نہیں کیاجاتاہے، جہاں پہلے پانی کی مشکلات گرمیوں کے دوران ہوتی تھیں، اب عوام کو سردیوں میں بھی مشکلات آرہی ہیں جبکہ متعلقہ محکمہ خاموش تماشائی بناہوا ہے۔لوگوں نے بتایا کہ ملازمین کو ہربار مطلع بھی کیا جاتاہے لیکن صرف دلاسادیاجاتاہے۔نتن کمارنامی شہری نے بتایا کہ محکمہ کی جانب سے گھروں میں لگائی گئی پائپوں میں پانی کا بہائو اتنا ہوتا ہے کہ بڑی مشکل سے بالٹیاں بھر تی ہیں، قصبہ کی آبادی میں گزشتہ دس سال میںکئی گنا اضافہ ہوا ہے لیکن عوام کو پانی کی فراہمی پرا نی آبادی کی بنیاد پر ہی کی جارہی ہے ۔سیاسی و سماجی کارکنان نے انتظامیہ و جل شکتی محکمہ سے عوام کو پینے کا پانی فراہم کرنے کی مانگ کی اور لاپرواہی برتنے والے افسران پر کاروائی کی مانگ کی تاکہ عوام کو مشکلات سے دوچار نہ ہونا پڑے۔
 
 
 

 ڈوڈہ بھلیسہ کے دو اہلکاروں کو سوریہ چکرا سے نوازا گیا 

متعدد سیاسی و سماجی شخصیات نے دی مبارکباد 

اشتیاق ملک
ڈوڈہ //ڈوڈہ ضلع کی سب ڈویڑن گندوہ سے تعلق رکھنے والے دو اہلکاروں کو سوریہ چکرا   سے نوازا گیا. اطلاعات کے مطابق تحصیل بھلیسہ کے گاؤں سمائی سے نریش کمار جو کہ42 راشٹریہ رائفلز (جے اے کے ایل آئی) میں بطور حوالدار تعینات ہیں اور النی ککوٹی گاؤں سے کانسٹیبل ذاکر حسین جو کہ سی آر پی ایف میں بطور کانسٹیبل تعینات ہیں کو صدر ہند رام ناتھ کوؤند نے وزیر اعظم و دیگر اہم شخصیات کی موجودگی میں دیا۔ دونوں اہلکاروں کو ان کی بہترین و مثالی خدمات پر اس اعزاز سے سرفراز کیا گیا۔ادھر متعدد سیاسی و سماجی شخصیات نے دونوں بہادر جوانوں کو مبارکباد پیش کرتے کہا کہ انہوں پورے علاقے کا نام روشن کیا ہے۔
 
 
 
 

ڈپٹی کمشنر رام بن کے حکم پر بانہال کے دو الٹراسائونڈ مراکز سربمہر

محمد تسکین
بانہال// ڈپٹی کمشنر رام بن مسرت الاسلام ، جو ضلع مجسٹریٹ بھی ہیں، کے حکم پر بلاک میڈیکل افسر بانہال ڈاکٹر رابعیہ خان نے بانہال کے ہسپتال روڈ پر واقع دو الٹرا ساونڈ تشخیصی مراکز کو سربمہر کیا ہے۔ منگل کی شام بلاک میڈیکل افسر بانہال ڈاکٹر رابعیہ خان کی قیادت میں کی گئی اس کاروائی کے دوران سب ضلع ہسپتال بانہال کے آس پاس واقع دو الٹرا ساؤنڈ لیبارٹریز جن میں نیو اقراء کھانڈے ڈائیگناسٹک سینٹر اور باباڈائیگناسٹک سینٹر شامل ہیں کو سیل کیا ہے۔بلاک میڈیکل افسر بانہال ڈاکٹر رابعیہ خان نے کشمیر عظمیٰ کو بتایا کہ اس ضمن میں کی گئی کاروائی ڈپٹی کمشنر رام بن مسرت الاسلام کے حکم پر عمل میں لائی گئی ہے اور اس سلسلے میں ایک شکایت ڈپٹی کمشنر رام بن کو موصول ہوئی ہے۔انہوں نے کہا کہ اس بارے میں مزید تفصیلات کو شیئر کیا جائیگا۔ 
 
 
 
 

 نوین چودھری نے بارہمولہ میںمجموعی ترقیاتی منظر نامے کا جائزہ لیا

 بہتر منافع بخش قیمتوں کیلئے سبزیوں کی کاشت کے نئے طریقے اَپنانے پر زور 

بارہمولہ//پرنسپل سیکرٹری زرعی پیداوار اور بہبودِ کساناں ، بھیڑ و پشو پالن نوین کمار چودھری نے ضلع بارہمولہ کا دورہ کیا اور انہوں نے وہاں محکموں کے کام کاج کا تفصیلی جائزہ لیا۔پرنسپل سیکرٹری جوکہ سیکرٹری اِنچارج ضلع بارہمولہ بھی ہیں ،نے باغبانی ، زراعت ، صحت ، تعلیم اور دیگر محکموں کی شعبہ وار کارکردگی کا جائزہ لیا۔ابتداً ضلع ترقیاتی کمشنر بارہمولہ بھوپندر کمار نے بذریعہ پاور پوائنٹ پرزنٹیشن مختلف محکموں کے تحت ترقیاتی سرگرمیوں اور شعبہ وار حصولیابیوںکا تفصیلی جائزہ پیش کیا۔اُنہوں نے کووِڈ ۔19 معاملات میں حالیہ اِضافے کے حوالے سے ضلعی اِنتظامیہ کی جانب سے اُٹھائے گئے مختلف اقدامات کے بارے میں جانکاری دی۔پرنسپل سیکرٹری نے محکمہ باغبانی کا جائزہ لیتے ہوئے کہا کہ باغبانی شعبہ ہماری معیشت میں ریڑھ کی ہڈی کی حیثیت رکھتا ہے اور بڑے پیمانے پر لوگ اَپنی روزی روٹی کے لئے اِس سے وابستہ ہیں۔اُنہوں نے بہتر منافع بخش قیمتوں کیلئے سبزیوں کی کاشت کے نئے طریقے اَپنانے پر زور دیا ہے۔انہوں نے متعلقہ اَفسران کو ہدایت دی کہ نشاندہی کی دستیاب زمین پر کسانوں کی منڈیاں قائم کریں جہاں  کسان اپنی مقامی پیداوار فروخت کر سکیں اور انہوں نے اَفسران سے مزید کہا کہ وہ مقامی کسانوں کو زیادہ آمدنی والی فصلوں کی طرف راغب کریں۔ جانے کے لیے تیار کریں۔اُنہوں نے کہا کہ بے روزگار نوجوانوں کی حوصلہ اَفزائی کرنے پر زور دیا جانا چاہیئے تاکہ وادی میں وسیع اِمکانات کے حامل زرعی شعبے میں کاروبار کو اَپنایا جاسکے۔اِس موقعہ پر پرنسپل سیکرٹری نے محکمہ باغبانی پر زور دیا کہ وہ کسانوں کو روایتی پھل دار درختوں کے بجائے اعلیٰ کثافتی پودے لگانے کے بارے میں ضروری تربیت فراہم کرنے کے لئے بیداری کیمپوں کا اِنعقاد کرے۔پرنسپل سیکرٹری نے مختلف دیگر محکموں کا بھی تفصیلی جائزہ لیا ۔ پرنسپل سیکرٹری کو محکمہ صحت ، تعلیم ، زراعت ، آر اینڈ بی ، پی ایچ اِی اور دیگر محکموں کی حصولیابیوں اور پیش رفت کے بارے میں جانکاری دی۔اُنہوں نے اَفسران پر زور دیا کہ وہ مقررہ وقت میں مطلوبہ نتائج حاصل کرنے کے لئے کام کی رفتار کو تیز کریں۔بعد میں ضلع ترقیاتی کمشنر بارہمولہ نے میٹنگ کو موسم سرما کی تیاریوں کے بارے میںجانکاری دی اور اِس سلسلے میں تمام اِنتظامات کو تفصیل سے بتایا۔پی ڈی ڈی بارہمولہ کی طرف سے پرنسپل سیکرٹری کو جانکاری دی گئی کہ تمام علاقوں کو بجلی کی فراہمی طے شدہ ہے اور ضلع کے مختلف مقامات پر نئے ٹرانسفارمر لگائے جارہے ہیں۔دورانِ میٹنگ پرنسپل سیکرٹری نے تمام اِنجینئران پر زور دیا کہ وہ صارفین کو بالخصوص سردیوں کے موسم میں قابل اعتماد اور معیاری بجلی کی فراہمی کے لئے کام کریں۔اِس موقعہ پر ڈائریکٹر جنرل ہارٹیکلچر اعجاز احمد بٹ، ڈائریکٹر زراعت کشمیر چودھری محمد اقبال ، ڈائریکٹر سری کلچر منظور احمد قادری ، ڈائریکٹر شیپ ہسبنڈری بشیر احمد خان، ڈائریکٹر اینمل ہسبنڈری پورنیمامتل ، ڈائریکٹر ہارٹیکلچر ، پلاننگ اینڈ مارکیٹنگ وشیش مہاجن ، اے ڈی ڈی سی بارہمولہ ،اے ڈی سی بارہمولہ ، سوپور ، جوائنٹ ڈائریکٹر پلاننگ اور تمام ضلعی اور سیکٹرل اَفسران موجود تھے۔
 
 
 
 

ڈاکٹراَصغر سامون نے گورنمنٹ پولی تکنیک میں داخلوں کی صورتحال کا جائزہ لیا 

سرینگر// پرنسپل سیکرٹری سکل ڈیولپمنٹ ڈیپارٹمنٹ ڈاکٹر اصغر حسن سامون نے اس سلسلے میں منعقدہ ایک افسران کی میٹنگ کے دوران سرکاری پولی تکنیک کالجوں میں داخلوں کی صورتحال کا جائزہ لیا ۔ پرنسپل سیکرٹری نے اس موضوع پر ڈائریکٹر ایس ڈی ڈی ، سیکرٹری بی او ٹی ای اور پولی ٹیکنیک کے پرنسپل کے ساتھ تفصیلی تبادلہ خیال کیا ۔ انہوں نے سرکاری پولی تکنیک کے پرنسپلوں سے کہا کہ وہ تعلیمی سیشن 2021-22 کیلئے داخلوں کی آخری تاریخ 30 ؍نومبر 2021 ء تک صد فیصد داخلہ یقینی بنائیں ۔ انہوں نے سی آئی آئی آئی ٹی جموں اور بارہمولہ میں انسٹرومنٹ اینڈ کنٹرول کورس میں داخلہ لینے کے خواہشمند طلباء کو تین ماہ کیلئے مفت کورسز پر ایڈان کی توسیع دینے کی بھی ہدایت دی ۔ پرنسپل سیکرٹری نے پرنسپلوں سے کہا کہ وہ جاری داخلوں کی وسیع تشہیر کریں تا کہ ان پولی ٹیکنیک میں زیادہ سے زیادہ طلباء کے داخلے کی حوصلہ افزائی کی جا سکے ۔ انہوں نے متعلقہ افراد کو موجودہ سیشن کے دوران پولی ٹیکنیک میں خواتین امیدواروں کے 50 فیصد داخلہ کو یقینی بنانے کی بھی ہدایت دی ۔ میٹنگ میں گورنمنٹ پولی تکنیک کے پرنسپلوں اور سکل ڈیولپمنٹ ڈیپارٹمنٹ کے سینئر افسران نے شرکت کی ۔
 

 اِنڈیا انٹر نیشنل ٹریڈ فیئر میں جے اینڈ کے ڈے منایا گیا 

نئی دہلی //ہندوستان کے بین الاقوامی تجارتی میلے 2021 ء کے تحت پرگتی میدان نئی دہلی میں آج جموںو کشمیر کا دن  منایا گیا ۔ 14 ؍نومبر کوشروع ہونے والا میلہ 27 ؍نومبر کو اختتام پذیر ہو گا ۔ میلے نے ایک شاندار تقریب اور یو یو ٹی کی شرکت کی حیثیت اختیار کر لی ہے ۔ جے اینڈ کے پویلین کے ذریعے میلے میں ایک مخصوص خصوصیت بن گئی ہے ۔ اس دن کی خاص توجہ یو ٹی کے جموں و کشمیر علاقوں کا ثقافتی پروگرام تھا ۔ محکمہ ثقافتی اکیڈمی جے اینڈ کے کے فنکاروں نے پرفارم کیا ۔ اس پروگرام میں جموں و کشمیر کے متنوع ثقافتی اقدار کی بھر پور عکاسی کی گئی جس نے بڑی تعداد میں لوگوں کو اپنی طرف متوجہ کیا جنہوں نے اسٹیج پر پرفارم کرنے والے فنکاروں کی تعریف کی ۔ یہ پروگرام ملک بھر کے لوگوں کے سامنے جموں و کشمیر کے متنوع ثقافتی ورثے کو دکھانے کیلئے امیدوں کی ایک منفرد تصویر ثابت ہوا ۔ پویلین میں ہزاروں لوگوں کا ہجوم تھا جہاں سٹال ہولڈرز جے اینڈ کے نے اپنی اشیاء کی نمائش کی اور جموں و کشمیر کے مقامی فن اور ہنر کی اپنی ہنر مندی اور مہارت کا مظاہرہ کیا جس کی دُنیا بھر میں پہچان ہے ۔ مہمانوں نے پرگتی میدان ایمفی تھیٹر میں جے کے ہینڈی کرافٹس اور ہینڈ لوم ڈیپارٹمنٹ کی طرف سے ثقافتی دعوت کو پسند کیا ۔ 
 
 

جموں وکشمیر میں عوامی حکومت کے بغیر ترقیاتی عمل ٹھپ :منجیت سنگھ

حکومت ِہند سے کسانوں کے دیرینہ مطالبات کو تسلیم کرنے کی گذارش

وجے پور//اپنی پارٹی صوبائی صدر جموں اور سابقہ وزیر منجیت سنگھ نے حکومت ِ ہند سے گذارش کی ہے کہ کسانوں کے سبھی دیرینہ مطالبات کو تسلیم کیاجائے تاکہ ایک سال کے زائد عرصہ سے جاری طویل جدوجہد کا پر امن اختتام ہواور مزید کئی ماہ تک یہ مسئلہ نہ لٹکے۔ضلع سانبہ کے وجے پور رندھاوا کالونی وارڈ نمبر4میں ایک میٹنگ سے خطاب کرتے ہوئے منجیت سنگھ نے کہاکہ تین متنازعہ زرعی قوانین کی واپسی حکومت ِ ہند کا خوش آئند فیصلہ ہے۔ تاہم کسانوں کے دیگر دیرینہ مطالبات اور پر امن احتجاج کے دوران دہلی ودیگر علاقہ جات میں قیمتی جانیں کھونے والے کسانوں کے اہل خانہ کو معاوضہ بھی دیاجانا چاہئے۔ انہوں نے کہاکہ ملک کی مختلف ریاستوں سے کسان دہلی میں جمع ہیں اور حکومت کیلئے لازمی ہے کہ وہ کسانوں کو اِس جدوجہد کو مزید طول دیکھنے پر مجبور نہ کرے۔ اگر حکومت سنجیدہ ہے تو کم سے کم قیمت، جاں بحق کسانوں کے لواحقین کو معاوضہ سمیت سبھی مطالبات تسلیم کر لینے چاہئے۔ زرعی شعبہ ملک میں ریڑھ کی ہڈی کی حیثیت رکھتا ہے اور کارپوریٹر سیکٹر وبڑے تجارتی گھرانوں کو دور رکھ کر اِس کو تحفظ فراہم کیاجائے ۔ انہوں نے کہاکہ یہ حکومت ِ ہند کی ذمہ داری ہے کہ وہ مطالبات کو غیر سیاسی لے اور انسانی بنیادوں پر حل کرے۔ دریں اثناء انہوں نے ترقیاتی پروجیکٹوں پر سست روی سے جاری کام پر گہری تشویش کا اظہار کرتے ہوئے کہاکہ منتخب حکومت کی عدم موجودگی میں ترقیاتی عمل ٹھپ ہے۔ ترقیاتی پروجیکٹوں میں تاخیر اور ناقص کارکردگی کے لئے حکام کو جوابدہ نہیں بنایاجارہا۔ حکومت کو چاہئے کہ حکام کو ذمہ دار ٹھہرایاجائے۔ انہوں نے کہاکہ عوامی حکومت کے بغیر ترقی نہیں ہوسکتی اور اِس وجہ سے لوگوں میں دوری بڑھتی ہی جارہی ہے۔
 
 
 

لمبیڑی نوشہرہ کی ارمغان مغل تامل فلم میں نظر آئیں گی

 جموں//راجوری ضلع میں، ایل او سی سے متصل گاؤں لمبیڑی (نوشہرہ) کی بیٹی بالی ووڈ میں دھوم مچائے گی۔ کچھ دنوں میں وہ تامل فلم میں نظر آئیں گی۔ سابق فوجی افسر کی بیٹی ارمغان مغل کو بچپن سے ہی ماڈلنگ اور اداکاری کا شوق تھا۔ راجوری ضلع میں، ایل او سی سے متصل گاؤں لمبیڑی (نوشہرہ) کی بیٹی بالی ووڈ میں دھوم مچائے گی۔ کچھ دنوں میں وہ تامل فلم میں نظر آئیں گی۔ سابق فوجی افسر کی بیٹی ارمغان مغل کو بچپن سے ہی ماڈلنگ اور اداکاری کا شوق ہے اور اب ان کا یہ شوق پورا ہونے جا رہا ہے۔ اداکارہ مغل نے بتایا کہ انہوں نے ماڈلنگ سے شروعات کی۔ اب وہ اداکاری کی دنیا میں قدم رکھنے جارہی ہیں اور جلد ہی ان کی تامل فلم ریلیز ہونے جارہی ہے۔قسمت نے اس کا ساتھ دیا، اس نے بہت محنت کی اور اپنے والدین کی آشیرباد سے وہ اس مقام تک پہنچی ہے کہ اسے بالی ووڈ میں کام کرنے کا شرف حاصل ہوا ہے۔ انہوں نے کہا کہ ایسا نہیں ہے کہ ہمارے معاشرے میں بیٹیوں کو آگے نہیں آنے دیا جاتا لیکن صحیح تعلیم اور رہنمائی نہ ہونے کی وجہ سے لوگ صحیح قدم نہیں اٹھا پاتے اور خوف کی وجہ سے آگے نہیں بڑھ پاتے۔اگر انہیں صحیح تعلیم، سہولتیں ملیں اور ان کے لیے صحیح راستے بنائے جائیں تو ہر حال میں ہر کوئی آگے بڑھ کر آگے آنا چاہے گا۔ فلم انڈسٹری ایک اچھا اور صاف ستھرا پیشہ ہے، یہاں کام کرنا درست ہے اور کوئی مسئلہ نہیں ہونا چاہیے۔ والد اسحاق مغل فوج میں افسر تھے، وہ چند سال قبل ریٹائر ہوئے اور ممبئی میں تعمیراتی شعبے سے وابستہ ہیں، جب کہ والدہ گھریلو خاتون ہیں۔ارمغان نے بتایا کہ میں اب جو کچھ بھی ہوں صرف والدین کی وجہ سے ہوں۔ انہوں نے نوجوان نسل کو والدین کی عزت کرنے اور ان سے دل سے پیار کرنے کا مشورہ دیتے ہوئے کہا کہ جب آپ کسی مقام پر پہنچ جائیں تو والدین جتنی محبت ان سے کوئی اور نہیں کر سکتا۔
 
 
 

بی جے پی حکومت کی غلط پالیسیوں سے عوام پریشان :بھگت | مہنگائی و بڑھتی ہوئی بے روزگاری پر کیا اظہار تشویش 

ڈوڈہ //چیئرمین لوک آدھیکار مشن جموں و کشمیر و کانگریس لیڈر ڈاکٹر امر چند بھگت نے بڑھتی ہوئی مہنگائی و بے روزگاری پر موجودہ سرکار کو ہدف تنقید بناتے ہوئے کہا کہ بی جے پی حکومت انتخابات کے دوران لوگوں کے ساتھ کئے گئے وعدوں کو پورا کرنے میں ناکام رہی ہے۔کانگریس پارٹی کی طرف سے چلائی جارہی جن جاگرن ابھیان مہم کے تحت منعقد پروگرام کے دوران ڈاکٹر امر چند نے کہا کہ کھانے پینے کی اشیاء کی قیمتیں آسمان پر پہنچ گئی ہیں اور ڈیزل، پیٹرول و رسوئی گیس کی قیمتیں بھی بڑھتی جارہی ہیں جس کے نتیجے میں مزدور طبقہ و بے روزگار نوجوانوں کو شدید مشکلات کا سامنا کرنا پڑتا ہے۔انہوں نے کہا کہ مودی حکومت نے 'سب کا ساتھ و سب کا وکاس' نعرہ لگایا لیکن اس کے مخالف کام کیا۔ انہوں نے کہا کہ بی جے پی حکومت کی عوام دشمن پالیسیوں سے لوگوں کی مشکلات بڑھتی جا رہی ہیں۔بھگت نے کہا کہ دیہی علاقوں میں پانی، بجلی و سڑک رابطوں کی خستہ حالی کو دور کرنے کے لئے سرکار کوئی قدم نہیں اٹھا رہی ہے۔انہوں نے لوگوں سے آپسی بھائی چارے کو برقرار رکھتے ہوئے موجودہ حکومت کی غلط پالیسیوں کے خلاف جمہوری عمل کے تحت اپنی آواز بلند کریں۔
 
 
 

ضلع کشتواڑ میں بے روزگاری خطرناک مرحلے پر:اجیت بھگت

کشتواڑ// سینئر سماجی کارکن اور ممتاز لیڈر اجیت بھگت نے کہا کہ ہمارے ہنر مند، غیر ہنر مند، نیم ہنر مند ملازمین کو اپنی خواہش کے مطابق بھرتی نہیں کیا جاتا  جس کی وجہ سے ضلع چناب وادی کشتواڑ کے نوجوانوں نے مایوسی، منشیات اور مختلف مجرمانہ سرگرمیوں میں اپنا ذہن موڑ دیا۔بھگت نے کہا کہ ضلع انتظامیہ کشتواڑ ضلع نے مختلف آن لائن آف لائن بھرتی اسکیموں کی تعمیر کی ہے جس کا اب بھی ضلع انتظامیہ کشتواڑ اور ملٹی نیشنل کمپنیوں کے ذریعہ پچھلے کئی سالوں سے مناسب مفت اور کرایہ پر بھرتی کے عمل کا کوئی نتیجہ نہیں نکلا ہے۔ اجیت بھگت نے لیفٹیننٹ گورنر منوج سنہا سے درخواست کی کہ برائے مہربانی اس معاملے میں مداخلت کریں اور ہمارے باصلاحیت اور ضرورت مند نوجوانوں کو جلد از جلد صرف کشتواڑ ضلع میں مختلف زیر تعمیر پروجیکٹوں میں بہتری اور ترقی کے نقطہ نظر کے لیے بھرتی کریں۔