مزید خبریں

این سی سی نظم وضبط اورقیادت کی علامت:منوج سنہا | یوم جمہوریہ کی پریڈ میں حصہ لینے والے کیڈٹ لیفٹیننٹ گورنرسے ملاقی

سری نگر//لیفٹیننٹ گورنر منوج سنہا نے جموںو کشمیر یوٹی اور لداخ کے NCC کیڈٹس کے دستوں کے ساتھ بات چیت کی، جنہوں نے نئی دہلی میں یوم جمہوریہ پریڈ میں حصہ لیا۔ کے این ایس کے مطابق انہوں نے اس موقعہ پر کہا کہ NCC کیڈٹس نظم و ضبط اور قیادت کی علامت ہیں جو قوم کی تعمیر میں غیر متزلزل عزم کے ساتھ ہیں۔جموں و کشمیر میں NCC کیڈٹس نے کووِڈ کے مشکل وقت کے دوران بیداری مہم اور ویکسی نیشن پروگرام کے دوران تفویض کردہ مشن کو مؤثر طریقے سے انجام دینے جیسی سرگرمیوں میں مثال کے طور پر قیادت کی۔انہوں نے کہا کہ اسکول ایجوکیشن ڈیپارٹمنٹ اور یوتھ افیئرز دیہاتوں اور دور دراز علاقوں میں این سی سی کوریج کی توسیع کی تہہ دل سے حمایت کر رہے ہیں۔ ہماری کوششیں نہ صرف دیہات کے نوجوانوں  کو مسلح افواج میں شامل ہونے کی ترغیب دیں گی بلکہ یہ ہمارے نوجوانوں میں بھائی چارے، نظم و ضبط، قومی اتحاد اور بے لوث خدمات کی اقدار کو بھی ابھاریں گی۔انہوں نے کہا کہ این سی سی کیڈٹس منشیات کی لعنت کو ختم کرنے میں اہم کردار ادا کر سکتے ہیں۔دنیا کی سب سے بڑی یونیفارمڈ یوتھ آرگنائزیشن کے طور پر، این سی سی بیداری پیدا کر سکتی ہے، منشیات کے استعمال سے لڑنے کا کلچر بنا سکتی ہے اور کالجوں اور کمیونٹی میں نوجوان اور کمزور لوگوں کے تجسس کی موثر رہنمائی کر سکتی ہے۔ 
 
 
 

ڈیوٹی سے غیرحاضری 

ایگزیکٹوانجینئر کی ایک دن کی تنخواہ کی کٹوتی

اننت ناگ //ڈپٹی کمشنر اننت ناگ نے 29جنوری کو بغیر اجازت ڈیوٹی سے غیرحاضررہنے کی پاداش میں ایگزیکیٹ وانجینئر ایف سی ڈی کی ایک دن کی تنخواہ کاٹنے کا حکم دیا ہے۔یہ رقم ضلع کے ریڈ کراس فنڈ میں جمع ہوگی۔ڈپٹی کمشنر نے سنیچرکو اننت ناگ کے مختلف دفاتر کا معائنہ کیاتھا اور25ملازمین کو ڈیوٹی سے غیر حاضر پایاتھا۔حکم کے مطابق ڈپٹی کمشنر نے ایک انکوائری افسر کو مقررکیا ہے جوایگزیکیٹوانجینئر سے اس بات کی وضاحت طلب کرے گاکہ کیوں نہ اُس کے خلاف ضابطے کے تحت کارروائی کی جائے۔
 
 
 

خستہ حال تجارت کوبچایاجائے

کے ٹی ایم ایف کی اختتام ہفتہ کے لاک ڈائون پرنظرثانی کی اپیل

 سرینگر//کشمیرٹریڈرس اینڈمینوفیکچررس فیڈریشن کے اختتام ہفتہ کے لاک ڈائون میں مزید نرمی کا مطالبہ کرتے ہوئے کہا کہ وادی کشمیر کے تاجر پہلے ہی اقتصادی بحران سے جوجھ رہے ہیں۔ا یک پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے کشمیرٹریڈرس اینڈ مینوفیکچررس فیڈریشن کے زعمائوں جن میں سینئرکے ٹی ایم ایف  رہنما نثاراحمداورایم الطاف شامل تھے، نے کہا کہ کوروناوائرس کی عالمگیر وباء کی وجہ ست انتظامیہ نے کافی سوچ سمجھ کرلاک ڈائون کا فیصلہ لیا ہے تاہم اس سے تاجر برادری کو کافی پریشانی ہوئی ہے۔ انہوں نے کہا کہ چیف سیکریٹری، صوبائی کمشنر اورضلع کمشنر سرینگر کافی دوراندیش اورمدبرایڈمنسٹریٹر ہیں ،جن کی ہمیشہ ہی وادی کے تاجروں سے ہمدردی ہے ۔انہوں نے کہا  کہ کوروناوائرس کے مثبت معاملات میں تیزی کا سبب لوگوں کی  لاپروہی ہے اور اس کیلئے ہم سب ذمہ دار ہیں، تاہم لاک ڈائون اب اس مسئلہ کا حل نہیں ہے کیوں کہ طبی ماہرین نے بھی بتایا ہے کہ کووِڈ وباء اب ہمارے ساتھ کافی وقت تک رہ سکتا ہے اور اب ہمیںاسی کے ساتھ اپنی زندگی کے معاملات چلانے ہوں گے۔ انہوں نے بتایا کہ ہفتہ وار لاک ڈائون میں اگرچہ کل تخفیف کا اعلان کیا گیا ، تاہم اس میں مزید نرمی اورنظرثانی کی ضرورت ہے تاکہ یہاں پہلے سے خستہ حال تجارت مزید تباہ نہ ہو۔ انہوںنے بتایا کہ تاجروں کا بینک قرضہ ہے ،کمپنیوں کا مال ہے جن کی وقت پر ادائیگی ہونی چاہئے اور اگر تجارتی سرگرمیاں ٹھپ ہوں گی تو اقتصادی بحالی ناممکن ہے۔ انہوںنے انتظامیہ سے  پر زور اپیل کی کہ وہ اس معاملے پر سنجیدگی سے غور کریں اور کووڈلاک ڈائون پرنظر ثانی کریں۔ اس دوران انہوںنے لوگوں پر بھی زور دیا کہ وہ کووڈ ایس او پیز پر سختی سے عمل کریں تاکہ معمولات کی سرگرمیاں متاثر نہ ہوں۔
 
 
 

کرافٹ ڈیولپمنٹ انسٹی چیوٹ کے انتظام کی منتقلی 

چیمبر کا خیرمقدم کیا

سرینگر//کشمیرچیمبرآف کامرس اینڈ انڈسٹری کے صدرشیخ عاشق نے کرافٹ ڈیولپمنٹ انسٹی چیوٹ کاانتظامی کنٹرول محکمہ صنعت وتجارت کو منتقل کرنے کے  انتظامی کونسل کے فیصلے کی ستائش کی ہے۔ایک بیان کے مطابق چیمبر کے صدر نے اس فیصلے کاخیرمقدم کرتے ہوئے کہا کہ اس کا مقصدجموں کشمیرکے روایتی،جدیداورمختلف نوع فنون کو اہداف پر مبنی حکمت عملی اورمنصوبہ بندی کے ساتھ فروغ دیناہے۔کرافٹ ڈیولپمنٹ انسٹی چیوٹ مختلف دستکاریوں اور فنون کی نشاندہی کرکے ان کے فروغ اور ان کیلئے جی آئی ٹیگنگ حاصل کرنے کیلئے اہم رول اداکرتا ہے۔کرافٹ ڈیولپمنٹ انسٹی چیوٹ نے ابھی تک پشمینہ،سوزنی،کانی،ختم بند،پیپرماشی،اخروٹ کی لکڑی کاکام اورقالین بافی کیلئے جی آئی ٹیگنگ حاصل کرنے میں کامیابی حاصل کی ہے۔چیمبرصدر نے جموں کشمیرحکومت پرزوردیا کہ وہ کرافٹ ڈیولمپنٹ انسٹی چیوٹ کو مالی امدادفراہم کرنے کیلئے رقومات مختص رکھیں تاکہ انسٹی چیوٹ کو مختلف منصوبوں اور پروجیکٹوںکی عمل آوری میں کوئی دشواری پیش نہ آئے۔
 
 
 
 

تعلیمی اداروں کو کھولنے کیلئے لائحہ عمل مرتب کیاجائے:شمیمہ فردوس

سرینگر// نیشنل کانفرنس خواتین ونگ کی ریاستی صدر شمیمہ فردوس نے کہا ہے کہ گذشتہ اڑھائی سال سے سکول اور تعلیمی ادارے بند رہنے سے نہ صرف بچوں کی تعلیم بہت زیادہ متاثر ہوئی ہے بلکہ بچے ذہنی تنائو کا شکار ہوگئے ہیں اور ان کی نشونما پر بھی منفی اثرات مرتب ہوئے ہیں۔ انہوں نے حکومت پر زور دیا ہے کہ سکولوں اور دیگر تعلیمی اداروں کو کھولنے کیلئے لائحہ عمل مرتب کیا جائے تاکہ بچے معمول کے مطابق سکول جاکر تعلیم حاصل کرسکیں۔ شمیمہ فردوس ضلع سرینگر کی خواتین عہدیداروں اور کارکنوں کے ایک اجلاس سے خطاب کررہی تھیں۔ انہوں نے کہا کہ پورے ملک میں مذہبی اجتماعات، سیاسی سرگرمیاں، الیکشن ریلیاں یہاں تک کہ سنیما بھی کھلے ہیں لیکن تعلیمی اداروں کو کھولنے کیلئے کسی بھی سطح پر سنجیدگی کا مظاہرہ نہیں کیا جارہا ہے۔ سکولوں کو کھول کو بچوں کی بلا خلل تعلیم کو یقینی بنانا حکومت کی ترجیحات میں ہونا چاہئے لیکن یہاں الیکشنوں اور دیگر غیر ضروری کاموں کو ترجیح مل رہی ہے۔ شمیمہ فردوس نے جموں وکشمیر انتظامیہ پر زور دیاکہ سرمائی تعطیلات ختم ہونے سے پہلے پہلے سکولوں کے کھولنے کیلئے لائحہ عمل مرتب کیا جائے اور تعطیلات ختم ہونے کے ساتھ ہی سکول کھول دیئے جائیں۔ انہوں نے انتظامیہ پر اس بات کیلئے بھی زور دیا کہ وہ سکول بند رہنے کے ایام کے دوران ایسے طلباء و طالبات کے فیس میں رعایت سے متعلق بھی کوئی لائحہ عمل مرتب کریںجن کے والدین کا روزگار کورونا اور مسلسل نامساعد حالات رہنے سے متاثر ہواہے۔ حکومت ایک پالیسی مرتب کرکے ایسے طلباء و طالبات کی فیس سکولوںکو ادا کرے تاکہ سکولوں کو بھی اپنے عملے کی تنخواہیں واگزار کرنے میں کوئی دشواری پیش نہ آئے کیونکہ یہاں کے بیشتر سکول ایسے ہیں جو فیس وصولے بنا اساتذہ اور دیگر عملہ کو تنخواہیں واگذار کرنے کی بساط نہیں رکھتے ہیں۔ شمیمہ فردوس نے کہا کہ بچے ہی ہمارے مستقبل کے معمار ہوتے ہیں اور آگے چل کر یہی بچے ہر ایک شعبے کو آگے بڑھاتے ہیں اور ان بچوں کی تعلیم و تربیت ہماری اولین ترجیح ہونی چاہئے اور حکومت کی ذمہ دار بناتی ہے کہ طلباء و طالبات کی بلا خلل تعلیم جاری رہ سکے۔ 
 
 
 

کشمیریونیورسٹی میں’DELNET‘پرویبنار

سرینگر//کشمیریونیورسٹی کے یوجی سی ہیومن ریسورس ڈیولپمنٹ سینٹر نے پیرکو’DELNET‘پرایک ویب نارکااہتمام کیا۔ DELNET‘کی ڈائریکٹر ڈاکٹر سنگیتاکول اس موقعہ پرمہمان خصوصی تھیں اورانہوں نے DELNET‘کی اہمیت اور افادیت کو اُجاگرکیا۔انہوں نے ڈیلنیٹ کے کام اوراعلیٰ تعلیم میں اس کے فوائد کامظاہر ہ کیا۔انہوں نے جموں کشمیرکے اعلیٰ تعلیمی اداروں پرزوردیا کہ وہ DELNET‘ کے ساتھ ہاتھ ملاکرجموں کشمیر میں علم کی مشعل کو روشن کریں۔ انہوں نے ایچ آر ڈی سی پربھی زوردیا کہ وہ مستقبل میں ایسے کورسوں کا اہتمام جاری رکھیں تاکہ مختلف شعبوں اوراداروں میںتربیت یافتہ افرادی قوت حاصل ہو۔اس ویبنار میں ملک کے اعلیٰ تعلیمی اداروں کے 70کے قریب شرکاء نے حصہ لیا۔
 
 
 

جموں میں روپوش ڈرائیور 9سال کے بعد گرفتار

سری نگر//جموں و کشمیر میںنو سال کی تلاش کے بعد تیز رفتار گاڑی چلانے پر ایک شخص گرفتارکر لیا ہے۔ پولیس نے پیر کے روز کہا کہ انہوں نے جموں شہر میں ایک شخص کو 9 سال بعد گرفتار کیا ہے جس پر تیز رفتار گاڑی چلانے اور لوگوں کو زخمی کرنے کا مقدمہ درج کیا گیا تھا۔ کے این ایس کے مطابق ضلع کشتواڑ کے گاؤں ہونڈنا دڑوالے کے رہنے والے چمن لال پر 2013 میں دومانہ کے علاقے میں تیز رفتاری سے گاڑی چلانے، پیدل چلنے والوں کی زندگیوں کو خطرے میں ڈالنے اور کچھ کو زخمی کرنے کا مقدمہ درج کیا گیا تھا۔پولیس نے بتایا کہ تب سے وہ روپوش تھاْ۔اس حوالے سے پولیس نے کیس درج کرنے کے بعد کئی ٹیمیں تشکیل دیں اور مقامی انٹیلی جنس معلومات اکٹھی کی گئیں۔ انہوں نے کہا کہ ایک اطلاع کی بنیاد پر، اور تکنیکی اور دستی نگرانی کے ساتھ اسے پکڑا گیا۔انہوں نے بتایا کہ اس کیس میں چارج شیٹ داخل کی گئی تھی اور ایک مقامی عدالت نے اس کے خلاف ضابطہ فوجداری کے سیکشن 512 (سی آر پی سی) کے تحت جنرل وارنٹ جاری کیا تھا۔
 
 
 

کولگام میںپولیس اہلکار دل کادورہ پڑنے سے فوت

خالد جاوید
کولگام//کولگام میں پولیس اہلکار دوران ڈیوٹی حرکت قلب بند ہونے سے فوت ہوگیا ۔ ڈسٹرکٹ پولیس لائنز کولگام میں تعینات بلال احمد میر ولد عبدالرحمان میر ساکنہ چندین پججن، دیوسر نامی پولیس اہلکار کو اُس وقت دل کا شدیددورہ پڑا، جب وہ ڈیوٹی پر تھا۔اُسے اسپتال لینے کی کوشش کی گئی مگروہ موقع پر ہی فوت ہوگیا۔ اُس کی لاش آبائی گائوں پہنچتے ہی صف ماتم بچھ گئی۔
 
 
 

جموں کشمیر کے ڈاکٹروں کی کرٹیکل کیئراینڈ آئی سی یوتربیت

صحت وطبی تعلیم محکمہ اورایمزنئی دہلی کے درمیان مفاہمت

جموں//ایڈیشنل چیف سیکرٹری ہیلتھ اینڈ میڈیکل ایجوکیشن ( ایچ اینڈ ایم ای ) وویک بھردواج اور ڈائریکٹر ایمس پروفیسر رندیپ گلیریا نے  ایک ورچول پروگرام میں یو ٹی کے ڈاکٹروں کیلئے کووِڈ سے متعلق اہم دیکھ بھال اور آئی سی یوکے تربیتی پروگرام کا آغاز کیا ۔ یہ ٹریننگ ای سی آر پی ۔ II کے تحت آل انڈیا انسٹی ٹیوٹ آف میڈیکل سائینسز ( اے آئی آئی ایم ایس ) دہلی کے ماہرین کے ذریعہ دی جا رہی ہے ۔ جموں و کشمیر کے 20 اضلاع سے 40 ڈاکٹروں کا ایک گروپ تربیتی پروگرام میں حصہ لے رہا ہے ۔اس تربیتی پروگرام کیلئے آگے آنے کیلئے ایمس کا شکریہ ادا کرتے ہوئے وویک بھردواج نے کہا ،’’ بڑھتے ہوئے ماحولیاتی نظام میں یہ تربیتی پروگرام مرکز کے زیر انتظام علاقے میں صحت کی دیکھ بھال کی فراہمی کے نظام پر کئی گنا اثر ڈالے گا ۔ ایک طرف یہ تربیت ہمارے صحت کی دیکھ بھال کرنے والے پیشہ ور افراد کی نازک معاملات خاص طور پر کووڈ سے متعلق معاملات کو سنبھالنے کی صلاحیت میں اضافہ کرے گی ۔اس کے علاوہ وہ دور دراز مقامات پر تعینات ڈاکٹروں کو مزید تربیت دینے کیلئے بھی بہتر طریقے سے لیس ہوں گے ‘‘۔ اس موقع پر تبصرہ کرتے ہوئے اے آئی ایم ایم ایس کے ڈائریکٹر پروفیسر رندیپ گلیریا نے دور دراز علاقوں کیلئے اچھے معیار کی اہم دیکھ بھال کی فراہمی کو بہتر بنانے کیلئے ٹیلی مشاورت کے دائرہ کار پر زور دیا ۔ پروگرام کی نظامت مشن ڈائریکٹر این ایچ ایم یاسین ایم چودھری نے کی ۔ 6 روزہ انٹر ایکٹو ٹریننگ پروگرام کو ایمس نئی دہلی کے 6 ٹرینرز کے ذریعہ سہولت فراہم کی جائے گی ۔
 
 
 
 
 
 
 
 
 
 
 
 
 
 

بانڈی پورہ تھانہ کا ڈپٹی کمشنرنے معائنہ کیا

عملے کے ساتھ بات چیت اور کام کاج کا جائزہ لیا

سرینگر// ڈپٹی کمشنر بانڈی پورہ اویس احمد نے پولیس اسٹیشن بانڈی پورہ کا غیر رسمی دورہ کیا اور پولیس اسٹیشن کے کام کاج کا جائزہ لیا۔ ڈی سی بانڈی پورہ کو سی سی ٹی این ایس لیبارٹری کے بارے میںجانکاری دی گئی۔ایس ایس پی بانڈی پورہ محمد زاہد اور پولیس کے دیگر افسران بھی اس موقع پر موجود تھے۔بعد ازاں ڈی سی بانڈی پورہ نے ایس ایچ او بانڈی پورہ اور پولیس اسٹیشن کے دیگر عملے کے ساتھ بھی بات چیت کی اور کرائم اینڈ کریمنل ٹریکنگ نیٹ ورک سسٹم کے حوالے سے ان کے ورک کلچر اور پیشہ ورانہ مہارت کی تعریف کی اور انہیں اسی جوش اور جذبے کے ساتھ کام کرنے کی ترغیب دی تاکہ علاقے کے عوام کی حقیقی شکایات کا فوری ازالہ کیا جائے۔ اس کے علاوہ انہوں نے منشیات فروشوں، جواریوں اور دیگر سماج دشمن عناصر کے خلاف کارروائی میں ان کے کردار کو بھی سراہا۔
 
 

 شوپیاں کی NEET پاس کرنے والی طالبہ  ڈپٹی کمشنر نے ملاقات کر کے مبارکباد دی

شوپیان//ضلع انتظامیہ شوپیاں نے NEET پاس کرنے والی طالبہ جبینہ بشیر کو مبارکباد پیش کی جس نے NEET کے امتحان میں 423 نمبر حاصل کیے۔زامہ پتھری تحصیل کیلر شوپیاں کے دور دراز علاقے سے تعلق رکھنے والی اس طالبہ نے ڈپٹی کمشنر شوپیاں سچن کمار ویشیا سے ملاقات کی اور ان سے بات چیت کی جنہوں نے اس کی دلچسپیوں، مشکلات اور اس کے نقطہ نظر کے بارے میں دریافت کیا۔ ڈی سی نے اسے مبارکباد دی اور امید ظاہر کی کہ وہ علاقے کے بہت سے دوسرے نوجوانوں کو دوسرے باوقار امتحانات میں کامیاب ہونے کی ترغیب دیں گی تاکہ معاشرے کی بہترین طریقے سے خدمت کی جا سکے ۔ڈی سی نے اسے مشورہ دیا کہ وہ اپنے عزم پر توجہ مرکوز رکھیں اور دوسروں کے لیے ایک تحریک بنتے رہیں۔تقریب میں ایڈیشنل ڈپٹی کمشنر شوپیاں مشتاق احمد سمنانی، اسسٹنٹ کمشنر ریونیو شوپیاں، شہباز احمد بودا، چیف پلاننگ آفیسر شوپیاں، خورشید احمد کھٹانہ، تحصیلدار کیلر عبدالرشید ملک اوردیگر افسران نے شرکت کی۔ 
 
 
 

آئی جی کشمیرکا سوپور کا دورہ |  سکیورٹی صورتحال کا جائزہ لیا

یو این آئی
سرینگر//انسپکٹر جنرل پولیس کشمیر رینج وجے کمار نے سوپور میں سیکورٹی صورتحال کا ایک اعلیٰ سطحی میٹنگ کے دوران جائزہ لیا۔انہوں نے میٹنگ کے دوران افسران پر زورد یا کہ سرگرم جنگجوئوں کے خلاف آپریشنز میں تیزی لائی جائے۔پولیس کے ایک ترجمان نے بتایا کہ آئی جی کشمیر وجے کمار نے پیر کے روز سوپور میں سیکورٹی صورتحال کا جائزہ لیا۔انہوں نے بتایا کہ میٹنگ کے دوران آئی جی کشمیر کو شمالی کشمیر کی سیکورٹی صورتحال کے بارے میں افسران نے جانکاری فراہم کرتے ہوئے بتایا کہ پولیس کسی بھی چیلنج کا مقابلہ کرنے کے لئے تیار ہے۔انہوں نے بتایا کہ آئی جی کشمیر نے میٹنگ کے دوران پولیس افسران پر زور دیا کہ سرگرم جنگجوئوں کے خلاف آپریشنز میں تیزی لائی جائے۔اْن کے مطابق آئی جی وجے کمار نے بتایا کہ پولیس اور لوگوں کے درمیان تال میل کو مزید مضبوط کرنے کی ضرورت ہے۔ آئی جی کشمیر نے افسران پر زور دیا کہ سماج دشمن عناصر کے خلاف بھی سخت کارروائی عمل میں لائی جائے۔پولیس ذرائع  کے مطابق میٹنگ کے دوران آئی جی کشمیر وجے کمار نے منشیات اور نشیلی ادویات کا دھندہ کرنے والوں کے خلاف بھی سخت کارروائی عمل میں لانے کے احکامات صادر کئے۔ آئی جی نے پولیس اور فوج کے سینئر افسران کی مشترکہ میٹنگ کی صدارت کی جس دوران اْنہیں شمالی کشمیر کی سیکورٹی صورتحال کے بارے میں مفصل جانکاری فراہم کی گئی۔دریں اثنا آئی جی کشمیر نے پیر کے روز ہی جنوبی کشمیر کے حسن پورہ بجبہاڑہ جا کر وہاں پر مہلوک پولیس اہلکارکے گھر والوں سے تعزیت کا اظہار کیا۔اس موقع پر آئی جی نے اہل خانہ کویقین دلایا کہ اْن کی ہر سطح پر مدد فراہم کی جائے گی۔معلوم رہے کہ گزشتہ روز حسن پورہ بجبہاڑہ میں مشتبہ جنگجوئوں نے پولیس ہیڈ کانسٹیبل علی محمد گنائی پر فائرنگ کی تھی جس کے نتیجے میں اْس کی موقع پر ہی موت واقع ہوئی۔
 
 
 

سید نور شاہ ولیؒ کا  10روزہ عرس آج سے شروع |  کووڈ کے پیش نظر بھاری اجتماعات کی اجازت نہیں ہوگی:ڈپٹی کمشنر

کولگام//ڈپٹی کمشنر کولگام ڈاکٹر بلال محی الدین بٹ نے صوفی بزرگ حضرت سید نور شاہ ولی بغدادیؒکے سالانہ عرس کے انتظامات کا جائزہ لینے کے لیے ایک میٹنگ کی صدارت کی۔ اوقاف کے اراکین کو آگاہ کیا گیا کہ اس سال کوویڈ 19 وبائی امراض کے پیش نظر بڑے اجتماعات منعقد کرنے کی اجازت نہیں ہوگی۔یہ بھی بتایا گیا کہ عرس یکم فروری سے شروع ہو گا جبکہ 10 فروری تک درگاہ کنڈ میں عقیدت و احترام سے منایا جائے گا۔ڈی سی نے افسران کو ہدایت کی کہ وہ بلاتعطل بجلی کی فراہمی، پینے کے صاف پانی کی فراہمی، صفائی کے مناسب اقدامات کے علاوہ صحت کی سہولیات اور مزار پر حفاظتی انتظامات کو یقینی بنائیں۔انہوں نے کووڈ19 پروٹوکول پر سختی سے عمل پیرا ہونے پر زور دیا۔انہوں نے متعلقہ افراد کو ناکارہ سٹریٹ لائٹس کی مرمت اور مزار کے احاطے سے برف ہٹانے کی بھی ہدایت کی۔ڈی ڈی سی ممبر کنڈ گلزار احمد، اے ڈی سی شوکت احمد راتھر اور دیگر محکموں کے افسران نے بھی میٹنگ میں شرکت کی۔
 
 

جہانگیر آخون نے ڈی آئی او بارہمولہ کا چارج سنبھالا

بارہمولہ// جہانگیر آخون نے پیر کو ڈسٹرکٹ انفارمیشن افسر بارہمولہ کا چارج سنبھال لیا۔ 2012 بیچ کے کے اے ایس افسر نے پہلے ہی ضلع انفارمیشن افسر بانڈی پورہ کے طور پر کام کیا ہے اور بی ڈی او، سی ڈی پی او اور دیگر عہدوں پر بھی کام کیا ہے۔چارج سنبھالنے کے بعدمذکورہ افسر نے ایک میٹنگ بلائی اور ضلع انفارمیشن دفتر بارہمولہ کے عہدیداروں سے بات چیت کی۔ انہوں نے ضلع اطلاعات کے دفتر کو بہتر انداز میں چلانے کے لیے عہدیداروں سے تعاون کی خواہش کی۔ انہوں نے دفتری عملے کی تعداد اور ضلع اطلاعات کے دفتر کے کام کاج کا جائزہ لیا۔ انہوں نے ملازمین کے مختلف مسائل تحمل سے سنے اور انہیں یقین دلایا کہ ان کے حقیقی مطالبات کو ترجیحی بنیادوں پر حل کیا جائے گا۔
 

منشیات مخالف مہم

سرینگر ، اننت ناگ اور بانڈی پورہ میں3افراد گرفتار

سرینگر//منشیات مخالف مہم کے دوران سرینگر ،اننت ناگ  اور بانڈی پورہ میں پولیس نے 5افرادکو گرفتارکرکے ان کے قبضے سے ممنوعہ نشیلی اشیاء کو برآمد کیا۔ مخصوص اطلاع پر عبداللہ برج سرینگر پر راجباغ پولیس کی ایک پارٹی نے مخصوص اطلاع پر ایک شخص کو گرفتار کیا جو ایک بریف کیس لے کر جارہا تھا۔ابتدائی پوچھ گچھ پر مذکورہ شخص کی شناخت عمر صادق ڈار ساکن گوپال پورہ واتھورہ بڈگام کے بطو رہوئی ۔اس کی ذاتی تلاشی لی کے دوران ممنوعہ نشیلی ادویات سپاسمو پروکسیوان پلس کیپسول 250سٹرپس،  6000کیپسول برآمد ہوئے۔راجباغ تھانہ نے اس سلسلے میں ایف آئی آر نمبر 6/2022درج کر کے مزید تحقیقات شروع کر دی ہے۔اس دوران اننت ناگ پولیس نے نواز احمد وانی ساکن ہاکورہ کو گرفتار کرلیاہے۔ مذکورہ شخص ممنوعہ نشیلی اشیاء کی فروخت میں ملوث بتایا گیا اور اس کے مطابق اس نے اپنے رہائشی مکان میں بھاری مقدار میں نشہ آور اشیاء ذخیرہ کر رکھی ہیں۔ تھانہ پولیس اننت ناگ نے اس سلسلے میں کیس متعلقہ دفعات کے تحت درج کر کے تفتیش شروع کر دی۔ اننت ناگ پولیس اور متعلقہ ایگزیکٹو مجسٹریٹ پر مشتمل ایک تلاشی ٹیم تشکیل دی گئی جس نے اُس کے گھر کی تلاشی لی۔ تلاشی کے دوران مذکورہ شہری کے مکان سے تقریباً 70کلو پوست کا بھوسا برآمد ہوا تاہم ملزمان موقع سے فرار ہوگئے۔اس کے علاوہ اننت ناگ تھانہ کی پولیس پارٹی نے ایس ڈی آرایف ہیڈکورٹرکے سامنے ڈگہ پورہ کھنہ بل میں ایک ناکہ چیکنگ عمل میںلائی اور ایک شخص رئوف احمد ننداساکن ڈگہ پورہ کھنہ بل جو ایک بیگ اٹھائے مشکوک حالت میں گھوم رہا تھا کو پکڑ لیا۔ مذکورہ شخص نے پولیس کو دیکھ کر فرار ہونے کی کوشش کی تھی۔ تلاشی کے دوران اس کے قبضے سے ایک تھیلا جس میں12کلو پوست کا بھوسا تھا برآمد ہوا۔ اس سلسلے میں مقدمہ درج کر کے تفتیش شروع کر دی گئی ۔بانڈی پورہ میں پولیس نے دو افراد کو غیر قانونی شراب کی 15 بوتلوں سمیت گرفتار کیا۔فارسٹ چیک پوسٹ کے قریب پازلپورہ میں قائم ایک چوکی پر افسران نے ایک گاڑی زیر نمبرJK01K-9517 کو روکا جس میں دو افراد سوار تھے جن کی شناخت ریاض احمد گنائی ساکن آیت مولہ اور جاوید احمد آہنگر ساکن بنکوٹ کے طور پر کی گئی۔ دوران تلاشی ان کے قبضے سے 15 بوتلیں ناجائز شراب برآمد ہوئیں۔ واردات میں استعمال ہونے والی گاڑی بھی قبضے میں لے لی گئی ۔پولیس نے قانون کی متعلقہ دفعات کے تحت ایک کیس زیر ایف آئی آر نمبر 03/2022 پیٹھ کوٹ تھانہ میں درج کیا ہے۔جے کے این ایس 
 
 
 

سرینگر میں بدعت کی بیخ کنی کیلئے ہیلپ لائن قائم

سرینگر//یو این آئی //ضلع سرینگر میں منشیات کی بدعت کے قلع قمع کو یقینی بنانے کے لئے سرینگر پولیس نے ایک ہیلپ لائن قائم کی ہے۔ پولیس ترجمان نے کہا کہ سرینگر پولیس نے سماج میں منشیات کی بدعت کی بیخ کنی کو یقینی بنانے کے لئے ایک ہیلپ لائن قائم کی ہے تاکہ لوگوں کا تعاون حاصل کیا جائے اور انہیں اس بدعت کے خاتمے کے لئے حصہ دار بنایا جاسکے۔بیان میں کہا گیا کہ اس ہیلپ لائن سے لوگ بھی منشیات کے خلاف جاری جنگ میں شریک ہوں گے۔پولیس نے عوام سے اپیل کی ہے کہ وہ وادی میں بالعموم اور ضلع سرینگر میں بالخصوص منشیات کے دھندہ اور اس کے متعلق دیگر سرگرمیوں کے بارے میں پولیس کو مطلع کریں۔بیان میں کہا گیا کہ منشیات کی بدعت سرینگر کا سب سے بڑا چلینج ہے جس سے ہمارے انسانی وسائل ضائع ہو رہے ہیں ۔ترجمان نے کہا کہ یہ ہیلپ لائن چوبیس گھنٹے چالو رہے گی اور ایس ایس پی سرینگر راکیش بلوال خود اس کی نگرانی کریں گے۔انہوں نے کہا کہ منشیات کے متعلق جانکاری فراہم کرنے والوں کے نام پوشیدہ رکھے جائیں گے انہیں انعامات سے بھی نوازا جائے گا۔
 
 
 

 آبی ذخائر کی بحالی :گلسر جھیل سے تجاوزات ہٹانے کی مہم شروع

غیر قانونی تعمیرات منہدم،ضلع کمشنر کا مہم جاری رکھنے کا اعلان 

سرینگر// ضلع انتظامیہ سرینگر نے پیر کو گلسر جھیل کو تجاوزات سے پاک کرنے کیلئے ایک بڑا آپریشن شروع کیا تاکہ تاریخی آبی ذخائر کی شان کو بحال کرنے کے لیے تاریخی آبی ذخائر کے اندر اور اس کے ساتھ ساتھ غیر قانونی تعمیرات کو ختم کرنے کے لیے ایک واٹر ماسٹر اور موٹر بوٹس کو کارروائی میں شامل کیا جائے۔انسداد تجاوزات آپریشن ڈپٹی کمشنر سرینگر محمد اعجاز اسد کی ہدایت پر شروع کیا گیا جس کے دوران تحصیلدار عیدگاہ اشفاق احمد خان اور ڈپٹی سپرانٹنڈنٹ پولیس محمد شفقت کی سربراہی میں انسداد تجاوزات کے خصوصی دستے نے گلسر جھیل میں متعدد رہائشی عمارتوں کو مسمار کیا ۔یہ بات قابل ذکر ہے کہ گزشتہ چند مہینوں سے ضلع انتظامیہ سرینگر نے گلسر جھیل سمیت سرینگر کے تاریخی آبی  آبی ذخائر کی بحالی کے لیے اس طرح کی انسداد تجاوزات اورمسماری مہم کا ایک سلسلہ شروع کیا ہے۔آج کے انسداد تجاوزات آپریشن کے دوران، پہلی بار واٹر ماسٹر اور موٹر بوٹس کو کام کی رفتار تیز کرنے اور تاریخی آبی ذخائر کی بحالی اور بحالی کے لیے ایکشن میں ڈالا گیا۔ ڈپٹی کمشنر نے اس سلسلے میںکہا کہ اس طرح کی انسداد تجاوزات مہم مستقبل میں بھی بھرپور طریقے سے جاری رہے گی تاکہ وسیع تر عوامی مفاد میں تاریخی واٹر چینل کی قدیم شان کو مکمل طور پر بحال کیا جا سکے۔انہوںنے کہا کہ یہ تبدیلی مقامی کمیونٹی اور ضلعی انتظامیہ کی مشترکہ کوششوں سے ممکن ہوئی ہے اور ہم دیکھ رہے ہیں کہ جھیل کو کافی حد تک بحال کیا گیا ہے۔