مزید خبریں

گورنمنٹ ایمپلائزاینڈ ورکرس جوائنٹ ایکشن کمیٹی کااجلاس 

جموں//جے اینڈکے گورنمنٹ ایمپلائزاینڈ ورکرس جوائنٹ ایکشن کمیٹی(آر)کااجلاس بابوحسین ملک کی صدارت میں منعقدہوا جس میںملازمین کے مسائل پرغوروخوض کے علاوہ آنگن واڑی ورکروں پرلاٹھی چارج کی مذمت کی گئی ۔اس دوران میٹنگ میں بھارت بھوشن، خورشیداحمددیوانی، اشوک سنگھ، یش پال شرما ، میناکشی شرما، جسونت سنگھ،پرشوتم شرما، بھارت بھوشن کوتوال، انسویا گپتا، سیوارام راٹھور، منشی شرما ،فریدہ بانو،وکاس چندر، وکاس شرما، راجیش ،شام لال، محمدصدیقی، لیکھ راج،نریش کمار، اوم پرکاش ،کپل گپتا، ادھے سنگھ پٹھانیہ، سندیپ سنگھ،مختیارسنگھ ،درشن انگورانا، علی محمد ، سدرشن سنگھ، سنجیوسنگھ جموال ،منگت سنگھ ودیگران شامل تھے۔اس دوران مقررین نے مطالبہ کیاکہ ملازمین کے ساتھ کئے گئے معاہدوں کومدنظررکھ کر ملازمین کے مطالبات بشمول تمام محکموں کے کلریکل کیڈرملازمین کی تنخواہوںسے تفاوت دورکی جائے۔بابوحسین ملک نے حکومت پر ریاستی ہائی کورٹ کے ایس ڈبلیوپی نمبر 3058/2015پردیئے گئے فیصلے کوعملانے کیلئے زوردیا۔انہوں نے تمام محکموں کی ڈی پی سی ہرچھ ماہ بعدمنعقدکرنے اورعارضی ملازمین کی مستقلی کابھی مطالبہ کیا۔
 

بارہمولہ ،لیہہ اور کرگل میں پی او ایس مشینیں

ذوالفقار نے جلد از جلد نصب کرنے کی ہدایت دی

جموں/ خوراک، شہری رسدات و امور صارفین اور قبائلی امور کے وزیر چودھری ذوالفقار علی نے متعلقہ محکموں کے افسروں کو ہدایت دی ہے کہ وہ بارہمولہ، لیہہ اور کرگل اضلاع سمیت دیگر رہ گئے اضلاع میں اس مہینے کے آخر تک پی او ایس مشینیں نصب کرنے کا عمل مکمل کریں۔وزیر موصوف نے یہ ہدایات یہاں ایک میٹنگ کے دوران ریاست میں ای پی ڈی ایس نظام کی عمل آوری کا جائزہ لیتے ہوئے دیں۔انہوں نے عمل آوری ایجنسی پر زور دیا کہ وہ ریاست میں ای پی ڈی ایس نظام وقت پر مکمل کرنے کے لئے وقت کا خاص خیال رکھیں۔انہوں نے کہاکہ تمام اضلاع میں غذائی اجناس کی فروخت کا کام یکم؍ اپریل 2018ء سے پی او ایس مشینوں تک منتقل کیا جانا چاہیئے ۔وزیر نے اس موقعہ پر راشن کارڈ منیجمنٹ نظام کی پیش رفت کا بھی جائزہ لیا۔وزیر کو جانکاری دی گئی کہ 26 ؍ مارچ 2018تک 19ضلعوں میں پی او ایس مشینوں کے ذریعے 230554 لین دین عمل میںلائے گئے ۔انہیں بتایا گیا کہ اب تک 1150122 راشن کارڈ صارفین میں تقسیم کئے گئے۔ذوالفقار علی نے ریاست میں غذائی اجناس کی سٹاک اور سپلائی پوزیشن کی صورتحال کا بھی جائزہ لیا۔کمشنر سیکرٹری امور صارفین ایم ڈی خان اور متعلقہ محکمہ کے کئی دیگر افسران بھی اس موقعہ پر موجود تھے۔
 

مہاتما گاندھی کی زندگی ، فلاسفی پر اورنٹیشن پروگرام کاانعقاد

جموں/ بابائے قوم مہاتما گاندھی کی زندگی اور فلاسفی پر قانون ساز کونسل سیکرٹریٹ میں یہاں گاندھی سمرتی اور درشن سمیتی نئی دلی کی طرف سے منعقدہ ایک اورنٹیشن پروگرام کا اہتمام کیا گیا۔امداد باہمی اور امور لداخ کے وزیر چیرنگ دورجے اس موقعہ پر مہمان خصوصی تھے جبکہ ایم ایل سی رومیش اروڑہ نے تقریب پر صدارت کی ۔کئی ممتاز شخصیات نے تقریب میں حصہ لیا اور مہاتما گاندھی کی تعلیمات پر روشنی ڈالی ۔ اس موقعہ پر جن لوگوں نے تقریب سے خطاب کیا اُن میں سیکرٹری جے اینڈ کے قانون ساز کونسل عبدالمجید بٹ ، ڈائریکٹر گاندھی سمرتی ڈی ایس گیان ،پروفیسر پشپا ، پروفیسر ٹی اے تھومس ، شمیم رینہ ، پروفیسر ہیمان شو شامل تھے۔ارکان قانون سازیہ جنہوں نے تقریب میں شرکت میں رومیش اروڑہ ،نریش کمار گپتا ، پردیپ کمار شرما ، وکرم رندھا وا ، گردھاری لال رینہ ، اشوک کھجوریہ ، شوکت حسین گنائی ، قیصر جمشید لون ، سریندر موہن امباردار اور سیف الدین بٹ شامل ہیں۔
 
 
 

 لوپیڈایمپلائز فیڈریشن کی صوبائی کمیٹی کااجلاس 

جموں//آل جے اینڈکے لوپیڈایمپلائز فیڈریشن کی صوبائی کمیٹی کااجلاس منعقدہواجس میں ساتویں تنخواہ کمیشن کی سفارشات کومرکزی حکومت کی طرزپرلاگوکرنے اورجنوری 2018کی ڈی اے قسط ترجیحی بنیادوںپرواگذارکرنے کامطالبہ کیاگیا۔اس دوران میٹنگ سے خطاب کرتے ہوئے عبدالمجیدخان نے کہاکہ گذشتہ کچھ برسوں سے فیڈریشن کی جانب سے کی جارہی جدوجہدکے ثمرآورنتائج برآمدہوئے ہیں ۔انہوں نے ملازمین سے تنظیم کومضبوط کرنے پرزوردیا۔انہوں نے میڈیکل الائونس 300روپے سے بڑھاکر1000روپے کرنے ،ایڈہاک،کنٹریکچول اور کیجول لیبرملازمین کی مستقلی ، لیوانکیشمنٹ کافائدہ ٹیچروں کودینے، کلریکل کیڈرملازمین کی تنخواہوں سے تفاوت دورکرنے ، کم ازکم یومیہ اجرت 350روپے کرنے ، جنوری تاجون 2009سے پری 2006پنشنرس کے ڈی اے قسطیں واگذارکرنے ،ولیج گارڈوں کوکم ازکم یومیہ اجرت بڑھانے،نمبرداروں،آنگن واڑی ورکروں کی تنخواہیں بڑھانے وغیرہ مانگوںکوپوراکرنے کامطالبہ کیا۔
 
 

کٹھوعہ میںمویشی سمگلنگ کی کوششیں ناکام

جموں//پولیس نے کٹھوعہ میں مویشی سمگلنگ کی کوشش کوناکام بنادیاہے۔یہاں پولیس ذرائع سے موصولہ اطلاعات کے مطابق پولیس نے اتوارکی رات کومویشی سمگلروں کے ایک گروہ کونکیان کے نزدیک روکا لیکن انہوں نے رات کے اندھیرے کافائدہ اٹھاکر بھاگ گئے اوراپنے پیچھے 23مویشی چھوڑگئے جنھیں پولیس نے اپنی تحویل میں لے لیا۔سمگلروں میں دوخواتین اوردومردشامل تھے جن میں سے ایک کی شناخت اجے کے طورپرہوئی ہے۔پولیس مویشی سمگلروں کے گروہ کی تلاش کررہی ہے ۔ایک دیگرمویشی سمگلنگ کوشش میں پولیس نے ایک مبارک حسین کوگرفتارکیااوراس کے قبضے سے 9 مویشی بازیاب کئے۔پولیس نے دونوں کیسوںکومتعلقہ تھانوں میںد رج کرکے تحقیقات شروع کردی ہے۔
 
 
 

سی ای او ادہم پورکامختلف سکولوں کامعائینہ

ادہمپور//ضلع ترقیاتی کمشنر ادہمپور کی ہدایت پرچیف ایجوکیشن آفیسر نے تحصیل پنچاری کے کئی تعلیمی اداروں کا دورہ کیا ۔اس دوران انہوں نے تعلیمی سہولیات اور تعلیمی میعار کا جائزہ لیا۔انہوں نے گورنمنٹ ہائر سکینڈری اسکول پنچاری اورہائی اسکول پنچاری کے علاوہ یہا ں کے دوسرے تعلیمی اداروں کا دورہ کیا۔اس دوران انہوں نے کلاس روم ،لیبارٹریوںتعلیمی معیار کے ساتھ ساتھ اساتذہ  کے کام کاج کا بھی جائزہ لیا۔اوراس دوران اساتذہ سے اپیل کی کہ تعلیمی نظام میں بہتری لانے کے لئے ہر ممکن کوشش کرے اور یہ اساتذہ کے لئے سنہری موقع ہے کہ وہ تعلیمی معیار کو بڑھاوا دے سکتے ہیں ۔اس دوران انہوں نے زونل ایجوکیشنل افسروں کے نام ایک حکمنامہ جاری کرتے ہوئے کہا کہ وہ اپنے اعحاطہ کے تعلیمی اداروں کا مسلسل جائزہ لیا کریں۔
 
 

رہبرتعلیم ٹیچرس فورم کاوفد وزیر وناظم تعلیم سے ملاقی

تنخواہوں کی وقت پرواگذاری کامطالبہ کیا

جموں//رہبر تعلیم اساتذہ فورم کا ایک وفدسینئرنائب چیئرمین بھوپندرسنگھ کی سربرائی میں وزیر تعلیم سعیدمحمد الطاف بخاری اورڈائرریکٹرسکول ایجوکیشن سے ملاقی ہوا۔اس دوران فورم نے ریاست کے 40 ہزار رہبر تعلیم اساتذہ کے درپیش مسائل کے بارے میں وزیراورڈائریکٹرموصوف کوآگاہ کرتے ہوئے کہا کہ رہبر تعلیم اساتذہ کی تنخواہوں کو واگزار کرنے کے لئے ہر ممکن قدم اٹھایا جانا چاہیئے اور اگر ان کی تنخواہوں کو ریاستی بجٹ کے ساتھ جوڑا جاتا تواساتذہ کو وقت پر تنخواہ دستیاب ہوتیں اور ان کو مالی دشواریوں سے دوچار نہیں ہونا پڑتا۔اس دوران وفدنے اپنی ٹرانسفر کا مسئلہ بھی وزیر کے سامنے رکھا۔وزیر نے ان کے تمام مسائل سننے کے بعدان کو یقین دلایا کہ ان کا مسلہ جلد از جلد حل کیا جائے گا۔ا س کے بعد فورم کے ممبران نئے تعئنات شدہ سکول ایجوکیشن ڈریکٹر سے بھی ملے اور ان کی تعئناتی پران کو مبارکباد پیش کیا۔اس دوران راکیش کمارسرنگل نے بھی فورم کے عہدہ داران کو یقین دلایا کہ ان کے مسائل کا فوری طور پر حل نکالا جائے گاتاکہ اساتذہ باقایئدہ طور پرطلاب کوتعلیم سے آراستہ کرنے میں مشغول ہو جائے۔رہبر تعلیم اساتذہ کے اس وفد میں سئنیرنائب چیرمین کے علاوہ اختر عباس نائک،آفتاب ملک،تیرتھ سنگھ،سرجیت سنگھ،رندیپ سنگھ اور اشونی کمار شامل تھے۔