مزید خبریں

گھمبیر مغلاں سڑک خستہ حالی کاشکار 

مقامی عوام نے فوری مرمت کی مانگ کی

پرویز خان
 
منجاکوٹ //گھمبیر مغلاں سڑک کی خستہ حالی پر مقامی لوگوں میں محکمہ کے تئیں زبردست غم وغصہ پایاجارہاہے ۔سڑک پر نہ ہی بلیک ٹاپ ہے اور نہ ہی نالیاں کام کررہی ہیںجس کے سبب سارا پانی سڑک میں جمع ہوجاتاہے جس سے اس کی حالت روز بروز خراب ہوتی جارہی ہے اور اب گاڑیوں کو چلنا بھی مشکل ہورہاہے ۔مولانا بشیر نے کہا کہ بہت پہلے اس سڑک پر بلیک ٹاپ بچھائی گئی تھی لیکن اب اس کا نام و نشان بھی باقی نہیں رہا۔ لوگوں نے الزام لگایا ہے کہ اس سڑک کی جانب کسی نے بھی توجہ نہیںدی ۔یہ سڑک پتراڑہ سے ہوتی ہوئی گھمبیر مغلاں،گالا اور بہروٹ میں جا کر ملتی ہے۔حالانکہ اس سڑک سے کافی علاقوں کے لوگوں کو فائدہ پہنچ سکتا ہے لیکن اس کو عدم توجہی کاشکار بنادیاگیاہے اوراس کی مرمت نہیں کی جارہی ۔لوگوں نے یہ الزام بھی لگایا کہ محکمہ مشینیں لگا کر تھوڑی سی نالی نکال کر لاکھوں روپے وصول کرلیتاہے لیکن ذرائع آمدورفت میں کوئی تبدیلی نہیں آتی ۔ان کاکہناتھاکہ اس سڑک پر سفر کرنا مشکل ہے اوراس سے ان کے سکول جانے والے بچوںکا مستقبل تاریک بناہواہے ۔مولوی محمود اور انور حسین نے کہاکہ گزشتہ مہینے وزیر برائے تعمیرات عامہ نے منجاکوٹ کادورہ کیا جس دوران انہیں وفود نے اس سڑک کی حالت کے بارے میں بتایاگیاتاہم اس کے بعد بھی کوئی اقدام نہیں کیاگیا ۔انہوںنے کہاکہ وزیر نے کہاتھاکہ تحصیل منجاکوٹ کی مختلف سڑکوں پر65 کلومیٹر تک بلیک ٹاپ بچھایاجائے گامگر اس کی شروعات کہیں بھی نہیں ہوئی۔لوگوں نے کہا کہ وعدے کھوکھلے ثابت ہورہے ہیں۔
 

اغوا کیاگیا شخص زخمی حالت میں واپس لوٹا

رمیش کیسر
 
نوشہرہ //سیال گائوں سے منگل کی رات اغوا کیاگیا شخص صبح زخمی حالت میں گھر واپس لوٹ آیا۔ یاد رہے کہ طالب حسین ولد محمد دین سکنہ سیال کو منگل کی رات نامعلوم تین نقاب پوش افراد اغوا کرلے گئے تھے جو صبح پانچ بجے زخمی حالت میں گھر واپس لوٹ آیا ۔طالب نے پولیس کو بیان دیتے ہوئے بتایاکہ تین نقاب پوش اس کے گھر میں داخل ہوئے اور انہوں نے اسے اغوا کرلیا اور جنگل میں لیکر اسے زدوکوب کیا ۔تاہم اس نے بتایاکہ اسے یہ معلوم نہیں ہے کہ اسے کس جگہ لیاگیاتھا۔اس حوالے سے پولیس تحقیقات کررہی ہے ۔ ایس پی نوشہر ہ نے بتایاکہ طالب کے بیان لئے جارہے ہیں اور فی الحال میڈیا کو اس کی جانکاری دینا مناسب نہیں۔
 

کار کی ٹکر سے 7سالہ بچہ زخمی 

راجوری //جموں پونچھ شاہراہ پر نوشہرہ کے لمیڑی علاقے میں ایک کار نے کمسن بچے کو ٹکر مار کر زخمی کردیا ۔سات سالہ ابھو کھجوریہ ولد پرویندرکھجوریہ ساکن بھاکر کو کار زیر نمبر JK11A 8032نے کرائسٹ سکول لمیڑی کے نزدیک ٹکر ماردی ۔بچے کو فوری طور پر سندر بنی ہسپتال منتقل کیاگیاجہاںسے اسے گورنمنٹ میڈیکل کالج و ہسپتال جموں بھیج دیاگیاہے ۔پولیس نے اس سلسلے میں گاڑی ضبط کرکے مزید کارروائی شروع کردی ہے ۔
 

خواس میں 4اساتذہ معطل 

سمت بھارگو
 
راجوری //محکمہ تعلیم نے خواس زون کے مختلف سکولوں میں تعینات چار اساتذہ کو غیر حاضری کی پاداش میں معطل کردیاہے ۔چیف ایجوکیشن افسر راجوری چوہدری لعل حسین کی قیادت والی ایک ٹیم نے خواس زون کے مختلف سکولوں کا معائنہ کیا جس دوران کچھ اساتذہ ڈیوٹی سے غیر حاضر پائے گئے ۔محکمہ تعلیم کے مطابق معائنہ کے دوران ہائی سکول کنڈل کے ٹیچر افتخار احمد ،مڈل سکول مرہوتہ سے ٹیچر تنویر حسین اور شکور حسین اور مڈل سکول کوٹ گلی سے ٹیچر توصیف احمد کو غیر حاضر پایاگیاجنہیں معطل کرنے کے احکامات جاری کئے گئے ہیں۔
 

ماہ صیام میں بنیادی سہولیات کی فراہمی کی اپیل 

پونچھ// ماہ صیام شروع ہوچکاہے لیکن پونچھ کے لوگوں کو بنیادی سہولیات فراہم نہیں ہیں ۔اس سلسلے میں بات کرتے ہوئے جامع انوار العلوم پونچھ حافظ مجید مدیر نے کہاکہ رمضان میں فرزندان توحید کو تمام تر سہولیات فراہم کی جائیں۔ انہوں نے کہا کہ ضلع پونچھ چونکہ ایک دور دراز سرحدی علاقہ ہے اس وجہ سے ابھی تک یہاں کے لوگوں کو سہولیات کی عدم دستیابی کا سامنا کرنا پڑ رہا ہے۔انہوں نے کہا کہ خصوصی طور پر پانی، بجلی اور راشن جیسی بنیادی سہولیات عوام کو فراہم نہیں ہوتی۔انہوں نے ضلع ترقیاتی کمشنر پونچھ کے کام کی سراہنا کرتے ہوئے کہا کہ موصوف کو عوام کی خدمت کرنے کا جذبہ ہے اس لئے وہ امید کرتے ہیں کہ ماہ مبارک رمضان کے دوران وہ روزہ داروں کو ان بنیادی سہولت کا فقدان نہیں ہونے دیں گے۔انہوں نے کہا کہ ماہ مبارک رمضان کے دوران خصوصی طور پر سبزیوں اور پھلوں کے نرخوں میں ایک دم سے اضافہ کر دیا جاتا ہے اوروہ امید کرتے ہیںکہ اس بار ایسا کچھ نہیں کیاجائے گا۔انہوں نے صفائی ستھرائی کی بھی اپیل کی ۔
 

رمضان سیز فائر 

بالاکوٹ کے لوگوں کو سکھ کا سانس لینے کی امید 

جاوید اقبال
 
مینڈھر//بالاکوٹ کے لوگوں نے رمضان سیز فائر پر مرکزی و ریاستی حکومت کا شکریہ ادا کرتے ہوئے کہا کہ اب امید کی جاسکتی ہے کہ سرحد پر بھی خاموشی رہے گی اور وہ آرام کی نیند سوسکیںگے ۔اس سرحدی علاقے کے لوگوں کاکہناہے کہ فائرنگ کے دوران انہوںنے بے پناہ مشکلات کاسامناکیاہے اور فائرنگ اور گولہ باری کے ڈر سے نماز تراویح پڑھنے بھی لوگ کتراتے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ رمضان سیز فائر صرف رمضان کے مہینے میں نہیں بلکہ اس کو لگاتار جاری رکھنا چاہیے کیونکہ فائرنگ اور گولہ باری سے لوگوں کا بھاری نقصان ہو رہاہے۔ ان کا کہنا تھا کہ سابق وزیر اعظم اٹل بہاری واجپائی نے بھی فائر بندی کا اعلان کیا تھالیکن وہ کئی سال تک جاری رہنے کے بعد ختم ہوگئی ۔ان کا کہنا تھا کہ 2015کے بعد فائرنگ کا تبادلہ ایک بار پھر شروع ہوا جو رکنے کا نام نہیں لے رہا ۔انہوں نے کہا کہ اس دوران سرحدی علاقہ بالاکوٹ میں کئی درجن لوگ مارے گئے اور بے شمار لوگوں کا مالی نقصان بھی ہوا۔انہوں نے حکومت کا شکریہ ادا کرتے ہوئے کہا کہ شائد یہ سیز فائر آنے والے مہینوں میں بھی جاری رہے ۔انہوںنے مرکزی و ریاستی حکومت سے اپیل کی کہ رمضان سیز فائر کو لگاتار جاری رکھا جائے ۔سابق سرپنچ ماسٹر عنایت اللہ خان، نمبردار بالاکوٹ محمد ایاز خان ،یوتھ لیڈر ظہیر خان نے کہا کہ وہ ریاستی وزیر اعلیٰ کے شکر گزار ہیں جنہوں نے مرکز سے رمضان کے مہینہ میں فائرنگ اور گولہ باری کو بند کروانے کافیصلہ لیاہے ۔ انہوںنے کہاکہ اس سیز فائر پر ہمیشہ عمل درآمد کیاجاناچاہئے ۔
 
 
 

رمضان سیز فائر کا خیر مقدم

پونچھ //رمضان سیز فائر کے فیصلے کا خیر مقدم کرتے ہوئے پی ڈی پی کے ضلع صدر پونچھ شمیم ڈار نے کہاکہ وہ وزیر اعلیٰ اور مرکزی حکومت کا شکریہ ادا کرتے ہیں ۔اپنے ایک پریس بیان میں انہوںنے کہاکہ اس اقدام سے بات چیت کی راہ ہموار ہوگی اور روزے داروں کو بھی کسی بھی قسم کی پریشانی نہ ہو گی۔انہوں نے کہا کہ ریاست میں سیکورٹی فورسز کی طرف سے عام عوام کے خلاف سخت گیر اقدام سے صورتحال اور امن عامہ میں مزید خرابی پیدا ہو رہی تھی اوربندوق سے آج تک کسی بھی مسئلہ کا حل نکلا ہی نہیں بلکہ بات چیت ہی واحد راستہ ہے۔انہوںنے کہاکہ جب وزیر اعلیٰ نے سیز فائر کی تجویز دی تو حزب اختلاف جماعتوںنے اسے مذاق سمجھا لیکن ا ب جب مرکزنے اس سلسلے میں فیصلہ لے لیاہے تو یہ جماعتیں بھی اس کا خیر مقدم کررہی ہیں۔
 

پولیس فسر کے اعزاز میں الوداعیہ

حسین محتشم
 
پونچھ// ڈی وائی ایس پی ہیڈ کوارٹر شاہد نعیم کے پونچھ سے تبادلہ پر سماج سیوا سوسائٹی کی طرف سے الوداعی پارٹی دی گئی ۔اس موقعہ پرسماج سیوا سوسائٹی کے چیئر مین جگل کشور، کوشل شرما اور دیگر کارکنان نے موصوف کی کارکردگی کی سراہنا کرتے ہوئے کہا کہ موصوف نے کم عرصہ میں پونچھ کیلئے جو خدمات انجام دی ہیں انکو ہمیشہ یاد کیا جائے گا۔ اس موقعہ پرسینئر کانگریس لیڈر تاج میر نے کہا کہ ایک پولیس افسر کی حیثیت سے جو کارکار کردگی شاہد نعیم نے دکھائی وہ لائق تحسین ہے۔انہوں نے کہا کہ وہ ان کے تئیں نیک خواہشات کا اظہار کرتے ہیں ۔دریں اثنا پولیس ملازمین یونین کے دفتر میں بھی یونین کی جانب سے ایک الوداعی پارٹی کا اہتمام کیا گیا جہاں ضلع صدر سرجیت سنگھ ،گیتا پرشاد، محمد صادق اور دیگر ملازمین نے بھی موصوف کی کارکردگی کو سراہا۔
 
 

سرنکو ٹ میدان حل کرنیکی کوشش 

ڈپٹی کمشنر نے معاملہ فوج کے ساتھ اٹھایا

پونچھ //ڈپٹی کمشنر پونچھ محمد اعجاز اسد نے سرنکوٹ میں کھیل کو د کے میدان پر چلے آرہے تنازعہ کو حل کرنے کیلئے محکمہ مال اور محکمہ دفاع کومشترکہ طور پر معائنہ کرنے کا حکم جاری کیاہے ۔اس بات کا فیصلہ ایک میٹنگ میں لیاگیاجس میں ایس ڈی ایم سرنکوٹ محمد رشید کوہلی ، اے سی محکمہ مال محمد بشیر لون ،تحصیلدار سرنکوٹ شاہد اقبال اور نائب تحصیلدار سرنکوٹ عبدالغنی ،چیف ایجوکیشن افسر مشتاق احمد ،رومیو فورس کے کمانڈنگ افسر کرنل ٹی ایلون اور بھوپندر تیاگی بھی موجو دتھے ۔یہ فیصلہ لیاگیاکہ تئیس مئی کو مشترکہ طور پر معائنہ کیاجائے گاتاکہ فوج اور محکمہ تعلیم کے درمیان چل رہے اس تنازعے کو حل کیاجاسکے ۔یہ بات قابل ذکر ہے کہ گورنمنٹ ہائر اسکینڈری سکول سرنکوٹ کو جانے والا راستہ ، شمشان گھاٹ اور قبرستان و زیارت کے ساتھ والی اراضی محکمہ دفاع کی تحویل میں ہے ۔
 

مینڈھر کے تمام واٹر کولر ناکارہ 

جاوید اقبال
 
مینڈھر//مینڈھر قصبہ میں پانی کے کولر خالی پڑے ہیں اور لوگوں کوان سے کوئی فائدہ نہیں ہورہا۔قصبہ میں پینے کے صاف پانی کے لئے لگے زیادہ تر کولر بند پڑے ہیں جس کی وجہ محکمہ پی ایچ ای کے ملازمین کی لاپرواہی کو بتایاجارہاہے جو ان کی نگرانی نہیں کرتے ۔مقامی لوگوں نے انتظامیہ کو تنقید کا نشانہ بناتے ہوئے کہا کہ انتظامیہ کی لا پرواہی اور محکمہ پی ایچ ای کے ملازمین کی غفلت سے واٹر کولروں میں پانی سپلائی نہیں ہو رہااورتمام واٹر کولر خالی پڑے ہیں۔لوگوں نے انتظامیہ سے اپیل کی کہ ماہ رمضان میں تمام قصبہ کے اندر لگے ہوئے واٹر کولروں میں پانی دستیاب کیا جائے تاکہ لوگ افطاری اور سحری کے وقت صاف و ٹھنڈے پانی کا استعمال کر سکیں۔ان کا کہنا تھا کہ گرمیوں کے موسم میں چھوٹے چھوٹے بچوں کو بھی پانی نہ ملنے کی وجہ سے مشکلات کا سامنا کرنا پڑ رہا ہے۔تحصیلدار مینڈھر جہانگیر خان نے رابطہ کرنے پر بتایاکہ اس سلسلہ میں انہیںآج ہی پتہ چلا ہے اوروہ ایس ڈی ایم صاحب سے بات کرکے واٹر کولروں میں پانی کی سپلائی کو بحال کرائیں گے تاکہ رمضان کے مہینے میں لوگوں کو پینے کا صاف پانی مہیا ہو سکے۔
 

بس اڈہ کی صفائی پر میونسپل کمیٹی کی سراہنا 

پونچھ// قصبہ پونچھ میں جگہ جگہ گندگی کے ڈھیر کی وجہ سے عوام پریشان رہتے ہیں۔ اس سلسلہ میںعوام کی جانب سے بارہا شکایت سامنے آنے کے بعد میونسپل کمیٹی نے حرکت میں آکر بس اڈہ پونچھ کا کچرا ٹھکانے لگایاجو پورے شہر سے جمع ہوتاہے۔بس اڈہ کے متصل تاریخی دشنامی اکھاڑا میں آنے والے عقیدتمندوں اور وہاں کے خدمتگاروں کے ساتھ ساتھ عام لوگوںکو اس گندگی سے کئی طرح کی پریشانیوں کا سامنا کرنا پڑ رہا تھا۔ جمعرات کو میونسپل کمیٹی کے افسر کی قیادت میں ایک ٹیم نے بس اڈہ کا دورہ کر کے وہاں سے گاڑیوں کے ذریعہ کچرا ہٹایا۔ای او میونسپل کمیٹی پونچھ نے کہا کہ عوام اور ذرائع ابلاغ کی جانب سے انہیں شکایات ملی تھیں کہ بس اڈہ پر گندگی کے ڈھیر ہیں جس کے بعد انہوں نے فوراً اس کی صفائی کرائی اور کچرا گاڑیوں کے ذریعہ ٹھکانے لگایا۔مقامی لوگوںنے صفائی کروائے جانے پر میونسپل کمیٹی کی سراہنا کی ہے۔