مزید خبریں

نوشہرہ کے سرحدی گاﺅں میں طبی مرکز قائم کرنے کی مانگ 

رمیش کیسر 
 
نوشہرہ //سب ڈویژن نوشہرہ کے سرحدی علا قوں کی عوام نے ریاستی انتظامیہ سے مانگ کرتے ہوئے کہاکہ ان علا قوں میں طبی سہولیات فراہم کرنے کےلئے طبی سنٹر قائم کئے جائیں ۔مقامی لوگوں نے کہاکہ ان علا قوں میں مذکورہ سنٹر نہ ہونے کی وجہ سے عوام کو شدید مشکلات کا سامنا کرنا پڑرہا ہے ۔سرحدی گاﺅ گلائی اور دبوڑا کی عوام نے کہا ہے کہ ان کے گاﺅں میں انتظامیہ کی جانب سے کوئی بھی طبی مرکز قائم نہیں کیا گیا ہے تاہم اس سلسلہ میں متعدد بار اعلیٰ انتظامیہ سے رجوع بھی کیا گیا لیکن اس طرف کوئی دھیان نہیں دیا گیا ۔نریش کمار ،رمیش کمار ،رام پرکاش ودیگر ان نے کہاکہ سرحد کے قریب ہونے کی وجہ سے مذکورہ علاقوں میں پاکستانی افواج کی جانب سے شدید گولہ بھاری کی جاتی ہے لیکن ان گاﺅں میں عوام کو بہترین طبی سہولیات فراہم نہیں کی گئی ہیں ۔انہوں نے کہاکہ ان گاﺅں میں طبی مرکز کےساتھ ساتھ دیگر بنیادی سہولیات بھی فراہم نہیں کی گئی ہیں ۔مقامی لوگوں نے ریاستی انتظامیہ سے اپیل کرتے ہوئے کہا کہ ان سرحدی گاﺅں میں طبی سنٹر قائم کیا جائے تاکہ لوگوں کو درپیش مشکلات حل ہو سکیں۔
 

عشق رسول کے بغیر زندگی بیکار ہے،علامہ عبد الرشید داﺅدی 

 مینڈھر میں پیغام مصطفےٰ کانفرنس،طلباءکی دستار بندی بھی کی گئی 

جاوید اقبال
 
مینڈھر//مینڈھر جامع مسجد کے سامنے ایک روزہ عظیم الشان پیغام مصطفےٰ کانفرنس کا اہتمام کیا گیا ۔سنی تحریک پیغام مینڈھر کی جانب سے منعقدہ کانفرنس میں مولانا عبد الرشید داﺅدی بطور مہمان خصوصی شامل ہوئے ،جنہوں نے عشق مصطفےٰﷺ سے لبریز شاندار خطا ب کیا ۔ان کے علا وہ مفتی محمد اسلم مصباحی کے علا وہ دیگر علماءومعززین بھی موجود تھے ۔اپنے خطاب میں مولانا عبد الرشید داﺅدی نے کہاکہ دنیاوی تعلیم کے ساتھ ساتھ دینی تعلیم کی بھی اشد ضرورت ہے جبکہ عشق مصطفےٰ ﷺ کے بغیر عبادت فضول ہے۔انہوں نے کہاکہ عشق رسول ہی اصل ایمان ہے بلکہ ایمان کی جان ہے۔اس موقع پر مولانا مفتی محمد اسلم مصباحی،مولانا سید نزاکت حسین شاہ،مولانا محمد یاسر عرفات نے بھی خطاب کئے ۔مذکورہ کانفرنس مولانا محمد صدیق امام جامع مسجد دربار چھوٹے شاہ کے دعائیہ کلمات اور صلوتہ و سلام کے ساتھ اختتام پذیر ہوئی ہوا۔اسی دوران ادارہ پیغام مصطفےٰ مینڈھر کے آٹھ طلباءجنہوں نے قرآن مجید قرآت و تجوید سے تکمیل تک پہنچایا ان کے سرو ں پر عبد الرشید داﺅدی نے اعزازی دستار بندی کی ۔انہوں نے مذکورہ دینی ادارہ کے منتظمین کی تعریف کرتے ہوئے کہاکہ دینی ادارے پیغام رسول پاک ﷺکو نوجوانوں تک پہنچانے میں ایک اہم رول ادا کررہے ہیں ۔ یہاں یہ بات بھی قابل ذکر ہے کہ مولانا عبد الرشید داﺅدی نے اس سے قبل کوٹرنکہ اور راجوری میں منعقدہ اجلاس میں شرکت کی ۔سنی تحریک پیغام مصطفےٰ مینڈھر کے چیرمین و ادارہ پیغام مصطفےٰ کے بانی و مہتمم مولانا ایاز قادری نے تمام انتظامیہ و علماءاور معززین کا شکریہ ادا کیا ۔
 

منکوٹ میں عوام 2ماہ سے پینے کے صاف پانی سے محروم 

جاوید اقبال
 
مینڈھر//مینڈھر کے سرحدی علاقہ منکوٹ کے محلہ کورلا ،محلہ ساجی اور محلہ نڑول کی عوام گزشتہ دو ماہ سے پینے کے صاف پانی سے محروم ہو چکے ہیں لیکن انتظامیہ عوامی مسائل کی جانب کوئی توجہ نہیں دے رہی ہے ۔مقامی لوگوں نے الزام عائد کرتے ہوئے کہاکہ علا قہ میں نصب بجلی کا ٹرانسفارمر خراب ہو نے کی وجہ سے کورلا چھجلہ لوہر میں قائم سپلائی اسکیم ہی بند ہو چکی ہے ۔مقامی سرپنچ کا کہنا تھا کہ ٹرانسفارمر کی خرابی کی وجہ سے علا قہ میں پانی کا نظام ہی ٹھپ ہو چکا ہے اور لوگ کئی کلو میٹر دور سے پینے کا صاف پانی لانے پر مجبور ہو چکے ہیں ۔انہوں نے کہاکہ بار بار متعلقہ محکمہ کے افیسران سے اپیل کی گئی لیکن اس طرف کو ئی توجہ نہیں دی جارہی ہے ۔مقامی لوگوں نے کہاکہ رمضان شروع ہونے سے قبل ہی علا قہ میں پانی کی سپلائی بحال کی جائے ۔متعلقہ محکمہ کے ایگزیکٹو انجینئر نے کہاکہ آئندہ ماہ رمضان سے قبل ہی خراب ٹرانسفارمر کو تھیک کروایا جائے گا اور پانی کی سپلائی کوبحال کردیا جائے گا۔
 

گورسائی میں’جشن امام عصرؑ ‘کے عنوان سے پروگرام کا اہتمام 

حسین محتشم
 
پونچھ//پوری دنیاکی طرح پونچھ میں بھی حضرت امام مہدی عجل اللہ تعالی فرجہ الشریف کے یوم ولادت باسعادت کا جشن منایا گیا۔ اس سلسلہ میں مسجد فاطمہ زہرا سلام اللہ حسین آباد گورسائی میں جشن امام عصر کے عنوان سے محفل مقاصدہ منعقد کی گئی جس میں ضلع بھر کے شعرائے کرام نے دیئے گئے طرحی مصرع پر اپنے کلام پیش کیا گیا۔ اس محفل کا آغاز تلاوت کلام پاک سے ہوا جس کے بعد مقامی ثناخواں نے نعت و منقبت کا نذرانہ پیش کیا۔ اس دوران جن شعرائے کرام نے اپناکلام پیش کیا ان میں سید ناطق حسین جعفری، ذاکر حسین فردوس ، عظمت جعفری، مولانا سید سلمان حیدر، ابرار نقوی، محتشم احتشام، ارشد نقوی، زر غام عسکری، حسن عبداللہ، سید علی نصر اللہ اور سید محمد ہادی شامل ہیں۔اس دورا ن مولانا سید مختار حسین جعفری نے خطاب کرتے ہوئے موجودہ دور میں جوانوں کی ذمہ داریوں پر اپنے خیالات کا اظہار کرتے ہوئے کہاکہ مودہ دور انتظار کا نہیں ہے بلکہ عمل کا ہے۔ امام بارگا عالیہ منڈی اور سرنکوٹ میں بھی امام زمانہ حضرت امام مہدی عجل اللہ تعالی فرجہ الشریف کے یوم ولادت باسعادت کا جشن منایا گیا۔ ضلع پونچھ میں شب برات سے ہی گھروں اور مذہبی مقامات کوسجایا گیا تھا۔ امام بارگاہوں اور مسجدوں کو سجایا گیا اور مٹھائیاں و شربت تقسیم کئے گئے۔عمارتوں پرچراغاں کیا گیا ہے اور پورے شہر میں جشن ومسرت کا ماحول رہا۔ محافل سے خطاب کے دوران مقررین نے بتایا کہ پندرہ شعبان دو سوپچپن ہجری قمری میں فرزند رسول منجی عالم بشریت امام زمانہ حضرت امام مہدی عجل اللہ تعالی فرجہ الشریف کی ولادت باسعادت ہوئی، امام زمانہ حضرت امام مہدی علیہ السلام سلسلہ عصمت کی چودھویں اور سلسلہ امامت کی بارہویں کڑی ہیں آپ کے والد ماجد حضرت امام حسن عسکری علیہ السلام اور والدہ ماجدہ جناب نرجس خاتون ہیں۔انہوں نے کہا کہ آپ کے متعلق نبی کریم حضرت محمد مصطفیﷺنے بیشمار پیشینگوئیاں فرمائی ہیں اور رسول اکرمﷺ فرماتے ہیں قائم میری اولاد میں سے ہوگا اس کا نام میرا نام ہوگا جبکہ آنحضور ﷺنے یہ بھی فرمایا ہے کہ امام مہدی (عج) کا ظہور آخری زمانہ میں ہوگا۔
 

ڈاکٹر شہزاد ملک کا ٹو پہ میں عوامی اجلاس 

 مینڈھر//ماہر تعلیم ڈاکٹر شہزاد ملک نے سرحدی تحصیل مینڈھر کے ٹوپہ علاقہ میں ایک عوامی اجلاس منعقد کیا ۔اس اجلاس میں مقامی لوگوں کی ایک بڑی تعداد موجود تھی ،جنہوں نے علا قہ میں درپیش مسائل کے بارے میں جانکاری فراہم کی ۔مقامی لوگوں نے کہاکہ سرحدی علا قوں کی عوام کو بنیادی سہولیات فراہم نہیں کی جارہی ہیں جس کی وجہ سے مذکورہ علا قوں کی عوام پسماندہ طرز کی زندگی بسر کرنے پر مجبور ہو چکی ہے ۔مقامی لوگوں نے کہا کہ ٹوپہ علا قہ میں ،پینے کا صا ف پانی ،بجلی اور سڑکوں کی حالت خراب ہے جبکہ بچوں کی تعلیم کی طرف بھی کو ئی دھیان نہیں دیا جا رہاہے۔
 

یاسین ملک کی بگڑتی صحت پر پیپلز مومنٹ کی تشویش

راجوری// جموں کشمیر پیپلز مومنٹ نے مشترکہ مزاحمتی قیادت کے سینئر رہنما اور جموں کشمیر لبریشن فرنٹ کے چیرمین محمد یاسین ملک کی این آئی اے کی تحویل میں بگڑتی ہوئی صحت پر گہری تشویش کا اظہار کرتے ہوئے خبردار کیا ہے کہ اگر موصوف کو کسی طرح کا نقصان پہنچا تو اس کی تمام تر ذمہ داری حکومت پر عائد ہو گی۔سینئر حریت رہنما اور پیپلز مومنٹ کے چیرمین میر شاہد سلیم نے اپنے ایک بیان میں کہا ہے کہ مزاحمتی قیادت کے خلاف فرضی مقدمات قائم کر کے انہیںکئی طریقوں سے زدو کوب کر کے حراساں کیا جاتا ہے تاکہ وہ مسئلہ کشمیر کے متعلق اختیار کئے گئے موقف سے دست بردار ہو جائیں۔انہوں نے کہا یاسین ملک نے اپنی غیر قانونی گرفتاری کے خلاف احتجاج درج کرنے کے لئے گزشتہ دس روز سے بھوک ہڑتاک شروع کی ہوئی ہے جس کی وجہ سے ان کی صحت خراب ہو تی جارہی ہے ۔ جس کے بعد انہیں رام منوہر لوہیا اسپتال میں داخل کروایا گیا ہے۔میر شاہدسلیم نے کہا کشمیری قوم اور بالخصوص حریت پسند قیادت کے ساتھ جو رویہ اختیار کیا گیا ہے اس کی انسانی تاریخ میں کوئی مثال نہیںملتی ۔انہوں نے کہا آج پوری قوم یاسین ملک کی تیزی سے بگڑتی صحت کے بارے میں فکر مند ہے اور ان کی صحت یابی کے لئے ربِ ذولجلال کے حضور دست بدعا ہے۔انہوں نے کہاحکومت کی جانب سے کشمیر میں اختیار کی گئی پالیسی سے نئی دلی اور کشمیر کے درمیان موجود خلیج اور بھی وسیع ہو گئی ہے۔میر شاہد سلیم نے انسانی حقوق کی علمبردار تنظیموں سے اپیل کی ہے کہ وہ وہ انسانی حقوق کیخلاف ورزیوں کا نوٹس لیں ۔