مزید خبرں

مہاراجہ بازارمیں شبانہ آتشزدگی

کئی دکانیں خاکستر ،کروڑوں روپے کا نقصان

نیوز ڈیسک
 
سرینگر //مہاراجہ بازار امیراکدل سرینگر میں گذشتہ شب آگ کی ایک پُراسرار واردات میں کئی دکانیں خاکستر ہوئی ہیں جس کی وجہ سے کروڑوں روپے مالیت کا نقصان ہوا ہے ۔ اس دوران مہاراجہ بازار میں کل دکانیں بند رہیں جبکہ دوپہر تک آگ بجھانے کا کام جاری تھا۔ معلوم ہوا ہے کہ مہاراجہ بازار میں گذشتہ رات ایک عمارت سے آگ اچانک نمودار ہوئی جس نے آنافا پوری عمارت کو اپنی لپیٹ میںلے لیاہے جبکہ آس پاس کے دکانوں کو بھی آگ نے نہیں چھوڑا۔ اس دوران اگرچہ محکمہ فائر اینڈ ایمرجنسی کی گاڑیاں فوری طور پر جائے واردات پر پہنچ گئیں لیکن عمارت کو خاکستر ہونے سے نہ بچاسکے تاہم آگ کو مزید دکانوں اور عمارت تک پھیلنے سے روکا گیا ۔ اس دوران مہاراجہ بازار میں کل دکانیں دن بھر بند رہیں ۔آگ کی واردات میں ہوئے نقصان کا جائزہ لینے کیلئے ضلع انتظامیہ اور پولیس کے اعلیٰ افسران نے جائے واردات کا دورہ کیا ۔ ( سی این آئی )
 

 شہر میںسٹریٹ لائٹس کو ٹھیک کیا جائے:پی ڈی پی

 سرینگر// سابق ممبر اسمبلی بٹہ مالو اور پی ڈی پی لیڈرنور محمد شیخ نے انتظامیہ پر زور دیا ہے کہ ماہ رمضان کے دوران لازمی انتظامات کو یقینی بنایا جائے ۔انہوں نے کہا کہ شہر میں بیکار پڑی سٹریٹ لائٹس کے علاوہ سحری اور افطارکے ساتھ ساتھ شام کے بعد بجلی سپلائی میں معقولیت لائی جائے تاکہ روزداروں کو کسی قسم کی تکلیف کا سامنا نہ کرنا پڑے ۔ انہوں نے بازاروں میں ریٹ لسٹ پر صارفین کو اشیاء  ضروریہ ،ریسوئی گیس اور دیگر سہولیات بہم رکھنے کا مطالبہ کیا ۔
 

حیدر پورہ،پیر باغ اور صفاکدل میں

 مارکیٹ چیکنگ
سرینگر//ایل ایم ڈی نے کل شہر کے مختلف علاقوں بشمول حیدر پورہ،پیر باغ ،صفاکدل اوردیگر ملحقہ علاقوں کا دورہ کیا جس دوران سات دکانداروں کو ناجائز منافع خوری ، ذخیرہ اندوزی اورغیر معیار ی اشیأ کی فروخت میں ملوث پایا گیا۔ چنانچہ ان پر 10000روپے کا جرمانہ عائد کیا گیا۔
 
 

متاثرین کو عبوری ریلیف دیا جائے

الطاف بخاری کا انتظامیہ پر زور

سرینگر// سابق وزیر خزانہ  سید محمد الطاف بخاری نے مہاراجہ بازار میں آگ کی واردات میں دکانیں خاکستر ہونے پرسخت افسوس کا اظہار کرتے ہوئے انتظامیہ پر زور دیا کہ متاثرین میں فوری طور عبوری ریلیف فراہم کی جائے ۔انہوں نے متاثرہ دکانداروں کے ساتھ ہمدردی کا اظہار کیا ہے اور مطالبہ کیا کہ آگ سے ہوئے نقصان کا تخمینہ لگا کر متاثرین کی باز آباد کاری شروع کی جائے ۔انہوں نے میونسپل کارپوریشن کے افسران پر زور دیا کہ وہ دکانداروں کو نئے سرے سے دکانات تعمیر کرنے کی اجازت دیں ۔