مزید خبرں

جنگلی درندوں سے تحفظ ، محکمہ جنگلی حیات کا جانکاری کیمپ

ضلع رام بن میں وائلڈ لائف کے محض 11 ملازم تعینات،100درکار

 محمد تسکین
 بانہال // انسانوں اور جنگلی درندوں کے درمیان بڑھتی تصادم آرائیوں کو کم کرنے اور جنگلی جانوروں کے حملوں سے بچنے اور تحفظ کیلئے محکمہ جنگلات حیات رینج بٹوت وائلڈ لائف ڈویڑن کشتواڑ کی طرف سے بانہال کے آرم ڈھکی منگت کے علاقے  میں ایک عوامی بیداری کیمپ کا انعقاد کیا گیا جس کی صدارت رینج آفیسر وائلڈ لائف رینج بٹوٹ منصور خان نے کی جبکہ علاقے کے معززین بشمول پنچ عبداالستار لون بلاک افسر وائلڈ لائف محمد رفیق، انچارج کنٹرول روم بانہال نجم الدین ، امان اللہ بٹ ،عبدالرشید گارڈ بھی اس موقعہ پر موجود تھے۔ اس دوران علاقے کے لوگوں کے سامنے انہوں نے جنگلی درندوں کے حملوں سے تحفظ کے طریقے بتائے اور ان میں تدبیروں سے بھرے کتابچے تقسیم کئے۔اپنے خطاب میں رینج افسر منصور خان نے لوگوں سے اپیل کی کہ وہ رات کے اوقات میں اپنے گھروں سے باہر نکلتے وقت احتیاط برتیں اور روشنی کا انتظام کرکے رات کے وقت گھر سے باہر قدم رکھیں۔ انہوں نے کہا کہ جنگلوں سے گزرتے وقت شور شرابہ نہ کریں اور جنگلی جانوروں کو دیکھنے کی صورت میں شور مچانے کے بجائے اپنی راہ لیں تاکہ شور سے جنگلی درندہ خوف زدہ ہوکر حملہ اور نہ بنے۔ انہوں نے لوگوں میں پٹاخے اور پمفلٹ تقسیم کئے اور مکئی سے گھری بستی والوں کو شام کے وقت ٹین وغیرہ بجانے کی تلقین کی تاکہ جنگلی درندوں کو بستیوں سے پرے رکھا جائے۔ رام بن اور بانہال میں محکمہ جنگلی حیات کا محکمہ وائلڈ لائف ڈویژن کشتواڑ کے زیر کنٹرول ہے جبکہ اس کا رینج ہیڈکوارٹر بٹوٹ میں واقع ہے۔ ضلع پتنی ٹاپ سے جواہر ٹنل تک اور راج گڑھ سے گول گلاب گڑھ تک پھیلے وسیع و عریض جنگلوں میں جنگلی حیات اور عوام کے تحفظ کیلئے محض 11 ملازمین تعینات ہیں جس کی وجہ سے علاقوں پر نگاہ رکھنا اور جنگلی جانوروں سے عوامی جان و مال کی حفاظت ناممکن ہے۔ محکمہ وائلڈ لائف کا کہنا ہے کہ بانہال ، کھڑی ، رامسو چکہ سربگھنی ، پوگل پرستان ، گول ، رام بن اور بٹوٹ  کے علاقوں کیلئے کم از کم100 ملازم درکار ہیں۔ لوگوں نے مستقبل میں بھی ایسے جانکاری کیمپوں کے انعقاد پر زور دیا۔ 
 
        

بجرانی ڈوڈہ میں بیداری کیمپ منعقد

ایس سی، ایس ٹی ، او بی سی ڈیولپمنٹ کارپوریشن کی طرف سے ڈوڈہ کے شنو بجرانی میں ایک بیداری کیمپ منعقد کیاگیا جس دوران لوگوں کارپوریشن کی طرف سے درج ذیل طبقہ جات کی فلاح و بہبود کیلئے چلائی جارہی سکیموں کے بارے میں جانکاری فراہم کی گئی ۔اس موقعہ پر لوگوں کو یہ بتایاگیاکہ وہ کس طرح سے سکیموں سے استفادہ کرکے اپنی زندگی کو خود کفیل بناسکتے ہیں ۔ کارپوریشن کے جنرل منیجر جی قیو کٹھانہ نے نوجوانوں پر زور دیاکہ وہ سکیموں سے فائدہ اٹھائیں اور اپنے لئے روزگار کے مواقع پیدا کریں ۔
 
 

کشمیر معاملے پر تیسری پارٹی کی مداخلت خوش آئند :جاوید رانا 

جاوید اقبال 
مینڈھر //نیشنل کا نفرنس سنیئر لیڈر اور سابقہ ممبراسمبلی مینڈھر جاوید رانا نے کشمیر مسئلے کو حل کر نے کیلئے تیسری پارٹی کی مداخلت کو خوش آئند قرار دیتے ہوئے کہاکہ امریکی صدر کی ثالثی سے معاملہ حل ہو سکتا ہے ۔جاری اپنے ایک بیان میں این سی لیڈر نے کہاکہ اگر وزیر اعظم نریندر مودی نے امریکی صدر کو ثالثی کی دعوت دی ہے تو اس میں کچھ بھی غلط نہیں ہے جبکہ مذکورہ عمل سے خطہ میں امن کی فضا کو قائم کر نے کے ساتھ ساتھ دونوں پڑوسی ممالک کے درمیان بہتر تعلقات قائم ہو سکتے ہیں ۔انہوں نے کشمیر معاملہ کو حل کر نے کیلئے ثالث کا رول ادا کرنے کیلئے تیار ہونے پر امریکی صدر کی تعریف بھی کی ۔این سی سنیئر لیڈر نے سیاسی پارٹیوں و دیگر لیڈران سے اپیل کرتے ہوئے کہاکہ وہ معاملہ پر غیر ضروری تبصرہ نہ کریں جبکہ سب کو مذکورہ معاملہ کے سلسلہ میں سامنے آئے اقدامات کی تعریف اور استقبال کرنا چاہیے ۔سابقہ ممبر اسمبلی نے کہاکہ گزشتہ 70برسوں سے دونوں پڑوسی ممالک کے درمیان خراب تعلقات کی وجہ سے دونوں ممالک کا کافی نقصان ہو چکا ہے جبکہ امن کی راہ اختیار کرنے سے ریاست میں ہلاکتوں کے سلسلہ پر بھی روک لگائی جاسکتی ہے لیکن اگر بہتری کی جانب ہاتھ نہ بڑھا یا گیا تو آئندہ اور بھی نوجوانوں کی جانیں ضائع ہو نگی ۔انہوں نے کہاکہ دونوں ممالک کے درمیان بہتر تعلقات کیلئے نئی حکمت عملی اختیار کرنے میں کچھ بھی غلط نہیں ہے ۔