مزید خبرں

حکومت تجارتی سرگرمیوں کی بحالی کیلئے سنجیدہ |  شرماکی تاجروں کی تجاویز کوجامع دستاویزمیں شامل کرنے کی ہدایت

سرینگر//حکومت نے واضح کیا ہے کہ جموں کشمیر میں تجارتی سرگرمیوں کی بحالی کیلئے سرکار سنجیدہ ہے،جبکہ لیفٹنٹ گورنر کے صلاح کار کے کے شرما نے کہ جموںوکشمیر میں معاشی سرگرمیوں کی بحالی کے لئے ایک مفصل اور جامع لائحہ عمل مرتب کرنے کیلئے سرکاری محکوں سے پیش کی گئی تجاویز کو بھی دستاویزات میں شامل کرنے کی ہدایت دی ہے۔جموں کشمیر میں تجارت کی بحالی کیلئے لیفٹنٹ گورنر کے مشیر کے کے شرما کی صدارت میں قائم کی گئی کمیٹی کی چوتھی میٹنگ یہاںمنعقد ہوئی جس کے دوران کئی معاملات پر تبادلہ خیال کیا گیا۔ میٹنگ کے دوران لیفٹنٹ گورنر کے صلاح کار  نے کہا کہ حکومت جموںوکشمیرمیں تجارتی سرگرمیوں کی بحالی کو یقینی بنانے کے لئے سنجیدہ ہے جس پر ملک کے دیگر حصوں کی طرح کووِڈ- 19 وَبا کے سبب منفی اثرات ثبت ہوئے ہیں ۔ اُنہوں نے کہا کہ میٹنگ کے اِنعقاد کا مقصد حکومت کی جانب سے تجارتی سرگرمیوں کی بحالی کے لئے مختلف اِقدامات اٹھانا ہے ۔شرما نے اَفسروں کو دونوں صوبوں کی تجارتی برادری کی جانب سے پیش کی گئی تجاویز اِس ضمن میں مرتب جامع دستاویز میں شامل کرنے کی ہدایت دی۔اُنہوں نے اِس دستاویز میں مختلف سرکاری محکموں بشمول سیاحت ، صنعت و حرفت و خزانہ کی جانب سے موصول کی گئی آرا ء کو شامل کرنے کے لئے بھی کہا تاکہ جموںوکشمیر میں معاشی سرگرمیوں کی بحالی کے لئے ایک مفصل اور جامع لائحہ عمل مرتب کیا جاسکے۔ شرما نے کہا ’’ ہم تجارت سے وابستہ لوگوں کے مشکلات سے آگاہ ہیں اور اُن کی بحالی کے لئے کوشا ں رہیں گے‘‘۔میٹنگ کے دوران جموںوکشمیر میں تجارتی سرگرمیوں کی بحالی کے لئے اُٹھائے جانے والے مختلف اِقدامات پر غور و خوض ہوا۔ جموں او رسری نگر میں منعقدہ میٹنگوں کے دوران متعلقین بشمول صنعت کاروں ، سیاحتی انجمنوں،چھوٹے پیمانے کے صنعت کاروں اور صنعت وحرفت سے وابستہ دیگر افسران کی جانب سے پیش کی گئی تجاویز اور خزانہ ، سیاحت ، صنعت و حرفت محکموں کی آراء پر مفصل غور و خوض ہوا تاکہ اِس ضمن میں ایک جامع دستاویز مرتب کی جاسکے۔ میٹنگ میں فائنانشل کمشنر خزانہ ڈاکٹر ارون مہتا ، کمشنر سیکرٹری سیاحت زبیر احمد ، چیئرمین جموں وکشمیر بینک آر کے چبر ، ڈائریکٹر انڈسٹریز جموں انو ملہوترا، سپیشل سیکرٹری خزانہ شمیم احمد ، سپیشل سیکرٹری صنعت و حرفت ایم ایم گاسی  کے علاوہ  دیگر اعلیٰ افسران نے شرکت کی۔
 
 

مغل باغات کے عالمی ثقافتی فہرست میں اندراج کیلئے کوششیں | تقافتی ورثے کی بحالی یقینی بنانے کی کمشنر سیکریٹری پھولبانی کی ہدایت

سرینگر //وادی کشمیر میں مغل باغات کی تجدید و مرمت اور بحالی کے کام کا جائیزہ لینے کیلئے منعقدہ میٹنگ میں کمشنر سیکرٹری پھول بانی ، گارڈنز اینڈ پارکس شیخ فیاض احمد نے افسروں کو مغل باغات کی بحالی کے دوران ان باغات کی وراثت کے تحفظ کو یقینی بنانے کیلئے کہا ۔ کمشنر سیکرٹری سیاحت و ثقافت بھی میٹنگ میں اپنی سفارشات اور تجاویز پیش کرنے کیلئے موجود تھے ۔ناظمِ پھول بانی ، سیاحت ، آرکائیوز اینڈ آرکیالوجی محکموں کے نمائندے بھی میٹنگ میں موجود تھے ۔ کمشنر سیکرٹری نے افسروں کو کہا کہ ان ثقافتی اہمیت کے حامل باغات پر خصوصی اور متواتر توجہ دینے کی ضرورت ہے ۔ انہوں نے ان ڈھانچوں کے فنِ تعمیر کوقائم رکھنے کی بھی ہدایت دی کیونکہ ایسا کرنے سے ہی یہ باغات عالمی ثقافتی مقامات کے طور پر تسلیم کئے جائیں گے ۔ محکمہ سیاحت کے سیکرٹری نے کہا کہ ان ثقافتی آثارِ قدیمہ کی بحالی کا کام محکمہ آثارِ قدیمہ کی تجاویز اور رہنمائی کے تحت ہی ہاتھ میں لیا جانا چاہئیے ۔ انہوں نے کہا کہ بحالی کے کام یونیسکو کی ہیری ٹیج فہرست کے مطابق ہونے چاہئیے ۔ محکمہ آثارِ قدیمہ کو مغل باغات کے حساس نوعیت کے کاموں کو ہاتھ میں لینے کیلئے مہارت اور رہنمائی فراہم کرنے کیلئے کہا گیا تا کہ ان کو کو ئی نقصان نہ پہنچ سکے ۔ متعلقہ محکموں اور کنسلٹینٹوں کی ایک کمیٹی  تشکیل دینے کا بھی میٹنگ میں فیصلہ لیا گیا تا کہ پروجیکٹ کا بغور مطالعہ کر کے کئی جمالیاتی نکتہ نظر کو  مدِ نظر رکھ کر کام مکمل کیا جا سکے ۔ میٹنگ میں کہا گیا کہ چھ مغل باغات بشمول نشاط ، شالیمار ، چشمہ شاہی ، پری محل ، اچھہ بل اور ویری ناگ فی الوقت یونسکو کی ورلڈ ہیری ٹیج لسٹ پر ہیں ۔ میٹنگ میں بتایاگیا کہ باغات کی باہری دیوار وںکی مرمت، باغات کے اندر ڈھانچوں کی بحالی ، پانی کی نہروں، آبگاہوں کا تحفظ وغیرہ کے کام ہاتھ میں لئے جائیں گے تا کہ ان باغات کی شان بحال کی جا سکے ۔ میٹنگ میں تمام متعلقین کو تجاویز پیش کرنے کیلئے بھی کہا گیا تا کہ اس ثقافتی ورثے کا تسلیم شدہ معیار کے مطابق تحفظ یقینی بنایا جا سکے ۔ میٹنگ لفٹینٹ گورنر کے مشیر بصیر احمد خان کی محکمہ پھول بانی کو دی گئی ہدایات کے تحت منعقد کی گئی جنہوں نے محکمہ کو مغل باغات کے تحفظ کیلئے وایٹ پیپر تیار کرنے کیلئے کہا ہے ۔ واضح رہے کہ حکومت نے پہلے ہی ڈوزئیر تیار کرنے کیلئے کنسلٹینٹوں کی خدمات حاصل کی ہے تا کہ اسے بذریعہ حکومت ہند یونیسکو کو پیش کیا جا سکے اور یہ باغات  مستقل طور عالمی ہیری ٹیج مقامات کے طور پر درج  ہو سکیں ۔ جس سے یہ مقامات عالمی سیاحتی نقشے میں شامل کئے جائیں گے ۔ 
 
 

کووِڈ- 19کی وباء کے دور میں فلو ویکسین لینا ضروری | 6ماہ کے بچے سے لیکر عمررسیدہ افراد تک کوٹیکہ لگانے کا ’ڈاک‘ کا مشورہ

سرینگر //ڈاکٹرس ایسوسی ایشن کشمیر نے کہا ہے کہ اس وقت فلو ویکسین انتہائی اہم ہے کیوں کہ کووروناوائرس کی اس وباء میں فلو وائرس زیادہ مہلک ثابت ہوسکتا ہے ۔ رواں برس فلو مخالف ویکسین کو سب سے زیادہ اہمیت کا حامل قراردیتے ہوئے ڈاکٹرس ایسوسی ایشن کشمیر کے صدر ڈاکٹر نثارالحسن نے کہا ہے کہ کووڈ – 19کی عالمگیروباء کے دور میں فلوویکسین لینا سب سے زیادہ ضروری ہے ۔ ڈاکٹر نثارالحسن نے کہا کہ آنے والے موسم سرماء میں ہم کو دوہرے وائرس سے مقابلہ ہے جس میں ایک فلو ہے اور دوسرا کورونا وائرس ہے اور یہ سیزن عام لوگوں کیلئے انتہائی پیچیدہ ثابت ہوسکتا ہے ۔ انہوں نے کہا کہ آپ ایک ہی بار فلو اور کووِڈ- 19 سے متاثر ہوسکتے ہیں جس سے مریض راست طور آئی سی یو اور وینٹی لیٹر پر پہنچ سکتا ہے اسلئے رواں سیزن میں فلو ویکسین لینا انتہائی لازمی بن گیا ہے جس سے بیک وقت دو وائرسوں کے خطرے کو ٹالا جاسکتا ہے جبکہ ا سے پہلے سے کافی بوجھ تلے دبے طبی شعبہ کو بھی راحت مل سکتی ہے ۔انہوں نے کہا کہ فلو ویکسین لینے سے یہ بات آسان ہوجائے گی کہ آیا آپ کووِڈ- 19 سے متاثر ہے یا نہیں کیوں کہ دونوں وائرس کی نشانیاں ایک جیسی ہے اور اگر مریض فلو سے متاثر ہے تو اس کو بہت زیادہ خطرہ ہے کہ یہ کووِڈوائرس سے بھی متاثر ہوگا ۔ انہوں نے کہا کہ فلو ویکسین وینٹی لیٹر کی مدد اور کوروناکا شدید خطرہ کم کرسکتا ہے ۔ ڈاکٹرس ایسوسی ایشن کے صدر نے برازلین سروے رپورٹ کا حوالہ دیتے ہوئے کہا ہے کہ فلو ویکسین اگر کوروناوائرس سے متاثر ہونے سے پہلے لیا جائے تو اس سے 20% خطرہ کم ہوسکتا ہے۔ڈاکٹر نثارالحسن نے لوگوں کو صلاح دی ہے 6ماہ کے بچے سے لیکر عمر رسیدہ افراد کو فلو ویکسین فلو سیزن شروع ہونے سے پہلے لیناچاہیے اور فلو سیزن ماہ اکتوبر سے شروع ہوجاتا ہے اور ویکسین موثر ہونے کیلئے اس کو ماہ ستمبر میں ہی لینا چاہئے ۔ رواں سیزن کا فلو ویکسین موجودہ وبائی دور میں بہتر بنایا گیا ہے تاکہ اس سے لوگوں کو اور زیادہ فائدہ پہنچنے ۔ 
 
 

قومی تعلیمی پالیسی2020 | اہداف کی تکمیل کیلئے سب کمیٹیاں تشکیل 

سری نگر// کشمیر یونیورسٹی کے وائس چانسلر کی صدار ت میں ماہرین تعلیم اور یونیورسٹی حکام کی ایک میٹنگ میں قومی تعلیمی پالیسی 2020پر تبادلہ خیال کیا گیا۔ اس موقعہ پر یونیورسٹی کے وائس چانسلر پروفیسر طلعت احمد نے کہا کہ قومی تعلیمی پالیسی2020میں اعلیٰ تعلیم کیلئے جن مقاصد کو سامنے رکھاگیا ہے وہ اساتذہ،اسکالرزاورطلاب سمیت متعلقین کیلئے نہایت ہی فائدہ مندہیں۔انہوں نے کہا کہ لازمی ہے کہ قومی تعلیمی پالیسی کے رہنماخطوط جیسے تعلیم،تحقیق،ڈھانچہ،ترقی اوردیگر شعبوں پر عملدرآمد کیلئے مقررہ مدت کے اندرشروعات کی جائیں ۔وائس چانسلر نے کہا کہ نصاب ،تدریس وتحقیق میں تبدیلی جہاں قومی تعلیمی پالیسی کے تحت ضروری ہو،پرعملدرآمدکیلئے قبل ہی اقدامات یقینی بنانے ہوں گے۔قابل ذکر ہے کہ قومی تعلیمی پالیسی کے اعلان کے بعد ،پروفیسرطلعت نے ماہرین تعلیم اور یونیورسٹی حکام کی ایک اعلیٰ سطحی میٹنگ  تشکیل دی تھی،جو پالیسی پر بروقت عملدرآمد کیلئے کارروائی کی نشاندہی کرتی۔ تبادلہ خیال کے بعد وائس چانسلر نے تعلیم ،تحقیق،انتظامیہ اورنصاب اورکالجوں کے ڈھانچہ  سے متعلق سب کمیٹیاں تشکیل دینے کی ہدایت دی،جو قومی تعلیمی پالیسی کے اہداف کی تکمیل کیلئے سفارشات پیش کریں گی۔ ادھریونیورسٹی کے سوشل ورک شعبہ نے قومی تعلیمی پالیسی2020کے موضوع پر ایک ویب نار کااہتمام کیا۔اس دوران جواہر لال نہرو یونیورسٹی کے پروفیسر مناتی پانڈانے ایک ورچیول خطبہ دیا۔اس سے قبل ویب نار کاافتتاح ڈین ریسرچ کشمیر یونیورسٹی پروفیسر شکیل رومشو نے کیا۔
 
 

 درماندہ 3,75,731شہریو ں کی واپسی 

جموں//حکومت جموں وکشمیر نے کووِڈلاک ڈاون کے سبب ملک کے مختلف حصوں میں درماندہ جموںوکشمیر کے       3,75,731شہریوں کو براستہ لکھن پور اور کووِڈخصوصی ریل گاڑیوں اور بسوں کے ذریعے تمام رہنما خطوط اور ایس او پیز پر عمل پیرا رہ کر یوٹی واپس لایا۔حکومت نے لکھن پور کے ذریعے اَب تک بیرون ملک سے929مسافرو ں کویوٹی واپس لایا ہے ۔اِس طرح جموںوکشمیر حکومت نے اَب تک 131کووِڈ خصوصی ریل گاڑیوں اور براستہ لکھن پور بسو ںکے کاروان میں اَب تک بیرون یوٹی درماندہ 3,75,731شہریو ں کو کووڈِ۔19 وَبا سے متعلق تمام اَحتیاطی تدابیر پرعمل کرکے واپس لایا ۔تفصیلات کے مطابق 30اگست سے 31 اگست 2020ء کی صبح تک لکھن پور کے راستے سے2767  درماندہ مسافریوٹی میں داخل ہوئے جبکہ925مسافر سوموارکو 110ویں دلّی کووِڈ خصوصی ریل گاڑی سے جموں پہنچے ۔اَب تک 110ریل گاڑیوں  میںیوٹی کے مختلف اَضلاع سے تعلق رکھنے والے98,240درماندہ مسافر جموں پہنچے جبکہ 21خصوصی ریل گاڑیوں سے 15,696مسافر اودھمپور ریلوے سٹیشن پر اُترے۔
 
 

راجواڑ ہندوارہ کاہیلتھ سب سینٹر  | ترقی دینے کا معاملہمنظوری کے باوجود کھٹائی میں

اشرف چراغ 
کپوارہ//ہندوارہ کے سرمرگ راجواڑ کے ہیلتھ سب سینٹر کادرجہ دس برس قبل بڑھاکر اِسے نیوٹائپ پرائمری ہیلتھ سینٹر بنائے جانے کو منظوری دی گئی تاہم ابھی تک اس اسپتال کی عمارت تعمیرنہیں کی گئی۔مقامی لوگوں کے مطابق ہیلتھ سب سینٹرسرمرگ راجواڑکاسال2010میں درجہ بڑھاکر اس کونیوٹائپ پرائمری ہیلتھ سینٹربنایاگیاتاکہ لوگوں کو علاج کی بہتر سہولیات دستیاب ہو۔مقامی لوگوں نے مزید بتایا کہ محکمہ صحت نے نیوٹائپ پرائمری ہیلتھ سینٹر کی عمارت تعمیر کرنے کیلئے اس کاسنگ بنیاد بھی رکھالیکن دس برس گزرجانے کے باوجودنہ ہی عمارت کی تعمیر کاکام ہاتھ میں لیاگیا اور نہ ہی سب سینٹر کو پرائمری ہیلتھ سینٹر کے طور ترقی دی گئی جس کے نتیجے میں لوگوں میں ناراضگی پائی جاتی ہے ۔لوگوں کا کہنا ہے کہ محکمہ صحت نے ا ن کے ساتھ جو مذاق کیا ہے اس کی انہیں امید نہیں تھی ۔انہوں نے کہا کہ یہاں کے لوگوں کو آج بھی علاج کیلئے کئی کلومیٹر دور زچلڈارہ اور ہندوارہ کے اسپتالوں کارُخ کرناپڑتا ہے جس دوران انہیں شدیدمشکلات درپیش آتی ہیں۔انہوں نے کہا کہ انہیں معلوم نہیں کہ سب سینٹر کونیوٹائپ پرائمری ہیلتھ سینٹر کے طور ترقی دینے کا معاملہ کیوں کھٹائی میں ڈالاگیا۔انہوں نے انتظامیہ سے مطالبہ کیا کہ راجوارکے سب سینٹر کو نیوٹائپ پرائمری ہیلتھ سینٹر کے طور ترقی دینے کے اقدام فوری طوراُٹھائیں جائے تاکہ مقامی لوگوں کی مشکلات کاازالہ ہو۔ اس حوالہ سے بلاک میڈیکل آ فیسر ویلگام کا کہنا ہے کہ عنقریب ہی سر مرگ کے نیو ٹائپ پرائمری ہلتھ سینٹر میں ڈاکٹر تعینات کیا جائے گا اور مذکورہ اسپتال عمارت کی تعمیرکاکام بھی شروع کیا جارہا ہے ۔
 
 

میر جنید کی وزیر دفاع سے ملاقات |  جموں و کشمیر کو درپیش مسائل اجاگر کئے

یواین آئی
سری نگر// جموں و کشمیر ورکرس پارٹی کے صدر میر جنید نے وزیر دفاع راجناتھ سنگھ سے اپنی حالیہ ملاقات کے دوران لاک ڈائون سے یہاں کی معیشت کو ہونے والے نقصان، پنچایتی نمائندوں کی سلامتی اور نوجوانوں کو درپیش مسائل اجاگر کئے ۔ ایک بیان کے مطابق وزیر دفاع نے موصوف صدر کو یقین دلایا ہے کہ مرکزی حکومت جموں و کشمیر کی ترقی کے لئے کوشاں ہے۔ بیان میں کہا گیا ہے،’’میر جنید نے وزیر دفاع راجناتھ سنگھ سے ملاقات کی جس دوران جموں و کشمیر کی زمینی صورتحال پر تبادلہ خیال کیا گیا۔ ایک گھنٹے تک جاری رہنے والی میٹنگ کے دوران میر جنید نے جموں و کشمیر کے حوالے سے اہم امور کو اجاگر کیا‘‘۔ بیان کے مطابق وزیر دفاع نے میر جنید کو 5 اگست 2019 کو پارلیمان میں کئے گئے وعدوں کی تکمیل کے بارے میں یقین دلایا۔ میر نے پنچایتی نمائندوں کی سلامتی کے بارے میں اپنے خدشات ظاہر کئے اور وزیر دفاع سے معاملے کو دیکھنے کی درخواست کی۔ بیان کے مطابق میر جنید نے لاک ڈاؤن کی وجہ سے وادی کی معیشت کو ہونے والے نقصان سے وزیر دفاع کو آگاہ کیا اور ان سے درخواست کی کہ وہ کابینہ کے اجلاسوں میں اس مسئلے کو اٹھائیں۔میر نے وزیر دفاع کے ساتھ ہند  چین کشیدگی کے بارے میں بھی بات کی اور دشمن سے لڑنے والی فوج کے ساتھ اظہار یکجہتی کا اظہار بھی کیا۔ انہوں نے پنچایتی نمائندوں کے ذریعے ہونے والی تبدیلیوں سے بھی وزیر دفاع کو آگاہ کیا اور اس بات کے لئے شکریہ ادا کیا کہ بی جے پی حکومت نے جموں و کشمیر میں پنچایتی راج اداروں کو با اختیار بنایا ہے۔
 
 

بونیارمیں بھاری تعداد میں اسلحہ کی برآمدگی کادعویٰ

 اوڑی//ظفر اقبال//اوڑی کے دُدرن بونیار کے جنگل میں پیر کو پولیس اور فوج نے ایک تلاشی کارروائی کے دوران اسلحہ اور گولہ بارود برآمد کرنے کادعویٰ کیا ہے۔ذرائع کے مطابق برآمد کئے گئے ہتھیاروں میں دوAK47 بندوقیں، 2میگزین،74گولیاں ،ایک پستول ، 38گولیاں، 10گرنیڈ، 2وائرلیس سیٹ اور ایک پائوچ شامل ہے۔برآمدکئے گئے گرنیڈوں کوفوری طور پر ناکارہ بنایا گیا۔اس سلسلے میں پولیس اسٹیشن بونیار میں کیس درج کرکے تحقیقات شروع کی گئی ہے۔ 
 
 

کرائم برانچ کا’جے کے پی سی سی‘ کے انجینئر کے گھر چھاپہ

سرینگر//کرائم برانچ کشمیر کی طرف سے پیر کو جے کے پروجیکٹ کنسٹرکشن کارپوریشن کے مختلف افسران کے گھروں پر مالی بے ضابطگیوں کے سلسلے میں چھاپے ڈالے گئے۔کرائم برانچ کشمیر کے ایک عہدیدار نے بتایا کہ اس سال جے کے پی سی سی یونٹوں کے عہدیداروں کی طرف سے سرکاری فنڈز کے ناجائز استعمال کی شکایات کے بعد ایک مقدمہ درج کیا گیا تھا۔سرکاری عہدیدار کا کہنا تھا کہ افسران مبینہ طور پر سرکاری رقوم کے غبن میں ملوث ہیں جس کی وجہ سے سرکاری خزانے کو بھاری مالی نقصان ہوا۔انہوں نے بتایا کہ سرینگر اور ضلع پلوامہ کے پانپور میں مختلف مقامات پر چھاپے مارے گئے۔ ان چھاپوں کے دوران اہم دستاویزات کو ضبط کرلیا گیا۔سرینگر میں چھاپہ برزلہ میں ایک انجینئر کے گھر پر ڈالا گیاجبکہ پانپورمیں لالونی محلہ کدلہ بل میں بھی ایک چھاپہ مارا گیا۔
 
 

محکمہ بجلی کے 66افسران کے مراتب کی ترقی | سفارشات متعلقہ کمیٹی کو پیش

سرینگر//بجلی محکمہ اور محکمہ اطلاعات کے پرنسپل سیکرٹری روہت کنسل نے یہاں سول سیکرٹریٹ میں محکمہ بجلی کے افسران کی ترقی کی سفارش کے لئے تشکیل دی گئی کمیٹی کی میٹنگ کی صدارت کی۔ میٹنگ میں جموں و کشمیر پاور ٹرانسمیشن کارپوریشن لمٹیڈ (جے کے پی ٹی سی ایل) کے منیجنگ ڈائریکٹر ، ڈائریکٹر فائنانس پی ڈی ڈی ، سپیشل سیکرٹری پی ڈی ڈی ، سپیشل سیکرٹری محکمہ قانون، ایڈیشنل سیکرٹری جی اے ڈی ، کمیٹی کے تمام ممبران کے علاوہ محکمہ کے دیگر متعلقین نے شرکت کی۔میٹنگ کے دوران مفصل غور و خوض ہوا اور افسروں کی بطور چیف انجینئر اور سپر اِنٹنڈنگ انجینئران کو باقاعدہ بنانے پر تبادلہ خیال ہوا۔کمیٹی نے 21افسران کو چیف انجینئر اور 45 افسران کو سپر اِنٹنڈنگ انجینئر کے مرتبہ کے مطابق ترقی دینے کے لئے سفارش کی جو جی اے ڈی قائمہ و منتخبہ کمیٹی کو غور و خوض کے لئے بھیج دی گئیں۔کمیٹی نے فیصلہ لیا کہ سبکدوش ہونے والے افسران اپنی کار کردگی کی سند پیش کریں گے ۔روہت کنسل نے منیجنگ ڈائریکٹر جے کے پی ٹی سی ایل  پی ۔آر ۔انگورالاکو الوداع کہا جو آج اپنے فرائض سے سبکدوش ہوئے۔ روہت کنسل نے محکمہ بجلی میں اُن کی خدمات کو سراہتے ہوئے انہیں ریٹائرمنٹ کے بعد کی زندگی کے لئے  نیک تمنائوں کی دعا کی۔
 
 
 
 
 
 
 
 
 
 
 
 

اپنی پارٹی میں10 سیاسی کارکن شامل  | زمینی سطح پر عوامی بہبودکیلئے کام کریں:الطاف بخاری 

سرینگر//سنگرامہ اور زینہ گیر سوپور کے بلاک ڈیولپمنٹ کونسلوں کے وائس چیئرپرسن سمیت دس سینئر سیاسی کارکنان نے جموںوکشمیر اپنی پارٹی میں شمولیت اختیار کی۔ پارٹی ترجمان کے مطابق صدر دفتر بنڈ لال چوک سرینگر میں منعقدہ تقریب کے دوران سنگرامہ اسمبلی حلقہ سے پیپلز کانفرنس کے سابق انچارج اور بی ڈی سی چیئرمین سنگرامہ فاروق احمد بٹ، بی ڈی سی چیئرمین زینہ گیر سوپور فاروق احمد راتھر، سرپنچ بلگام محمد مقبول پیر، سرپنچ رنگیل فہمیدہ بیگم،سنگرامہ سے یوتھ لیڈر عادل احمد راتھر، یوتھ لیڈر ہلال احمد میر، ہائیگام سے عبدالقیوم گنائی، چاندکھوٹھ سے سنیئر سیاسی کارکن محمد اکبر وانی ، رہبن سوپور سے وقار احمدبٹ اور پلہالن سے یوتھ لیڈر سجاد احمد شیخ شامل ہیں۔ پارٹی صدرسید محمد الطاف بخاری نے پارٹی لیڈران شعیب ملک ، نور محمد شیخ، منتظر محی الدین، فاروق اندرابی ، عرفان نقیب اور میر عماد رفیع کی موجودگی میں ان کا خیر مقدم کیا۔ 
 
 
 
 
 
 
 

پی آئی بی سرینگر کی جانب سے آئی ایم پی سی سی میٹنگ کا انعقاد | لوگوں تک درست اور بروقت معلومات پہنچانے پر زور

سرینگر/ / پریس انفارمیشن بیورو (پی آئی بی) سرینگر کے زیر اہتمام وزارت اطلاعات و نشریات (ایم آئی بی) اور مرکزی حکومت کی دیگر تنظیموں کی مختلف اکائیوں کی انٹر میڈیا پبلسٹی کوآرڈینیشن کمیٹی (آئی ایم پی سی سی) کی ایک میٹنگ سرینگر میں منعقد ہوئی۔ یہ پہلا موقع تھا جب کورونا وائرس کے پیش نظر میٹنگ آن لائن موڈ کے ذریعے منعقد کی گئی۔میٹنگ کی صدارت دیوپریت سنگھ ، ایڈیشنل ڈائریکٹر جنرل (ریجن) پی آئی بی چندی گڑھ اور سرینگر نے کی۔ جموں و کشمیر کے مختلف حصوں میں واقع ایم آئی بی کے مختلف یونٹوں کے نمائندوں کے علاوہ انڈین انسٹی ٹیوٹ آف ماس کمیونیکیشن جموں اور دفاعی دستوں کے ترجمان متعلقہ مقامات سے میٹنگ میں شریک ہوئے۔دیو پریت سنگھ نے شرکاء سے مخاطب ہوکر کہا کہ جاری وبائی بیماری کے پیش نظر عائد پابندیوں کے پیش نظر ، مواصلات کے مجاز طریقوں کی اہمیت ہر لمحہ بڑھتی جارہی ہے۔ انہوں نے تمام متعلقہ افراد پر زور دیا کہ وہ عوام الناس کے مفادات کے لئے حکومت کی جانب سے کئے جانے والے مختلف اقدامات کے بارے میں بروقت اور درست معلومات کے صحیح وقت پر پھیلائو کو یقینی بنائے۔ میٹنگ کی صدر نے سوشل میڈیا اور دوسرے آن لائن پلیٹ فارم کے ذریعے جعلی خبروں کی تشہیر کے معاملے پر بھی تبادلہ خیال کیا۔ اس طرح کے واقعات سے پیدا ہونے والے انتشار اور الجھن کا ذکر کرتے ہوئے انہوں نے اس سلسلے میں تمام ضروری اقدامات کرنے کی ضرورت کا اعادہ کیا۔ڈپٹی ڈائریکٹر (میڈیا اور مواصلات) پی آئی بی سرینگر غلام عباس نے شرکاء کا خیرمقدم کرتے ہوئے ذرائع ابلاغ کے مختلف یونٹوں کے مابین رابطوں کی اہمیت پر روشنی ڈالی اور کہا کہ تمام یونٹوں کے مابین بانٹی گئی معلومات عوام کے ایک بڑے حصے تک فائدہ مند معلومات پہنچانے میں معاون ثابت ہوگی۔سی آر پی ایف سرینگر کے پی آر او شری پنکج سنگھ نے شرکاء کو سی آر پی ایف کی کارکردگی سے متعلق درست حقائق کی بروقت تشہیر کو یقینی بنانے کے لئے فوج کی جانب سے کئے گئے اقدمات سے آگاہ کیا۔ آل انڈیا ریڈیو (اے آئی آر) سرینگر کے پروگرام ہیڈ ستیش ومل نے میٹنگ کے دوران کہا کہ اس وبائی بیماری کے پیش نظر عائد پابندیوں کے باوجود آل انڈیا ریڈیو سرینگر نے جموں و کشمیر کے اطراف و اکناف میں لوگوں تک پہنچنے کی اپنی روایت برقرار رکھی ۔جموں فوج کے پی آر او دیویندر آنند نے کہا کہ ان کا دفتر جموں کے دور دراز علاقوں میں ایم آئی بی کے مختلف میڈیا یونٹوں کے ساتھ قریبی رابطہ کاری میں کام کر رہا ہے۔دوردرشن سرینگر کے پروگرام ہیڈ جی ڈی طاہر نے شرکا کو آگاہ کیا کہ کووڈ19- کی وجہ سے کیندرا کو درپیش اضافی ذمہ داریوں اور کام کے بوجھ کے باوجود مرکز اپنی معمول کی سرگرمیاں انجام دینے میں کامیاب رہا ہے۔پروگرام ہیڈ اے آئی آر جموں رینو رینا نے کہا کہ اس وبا سے متاثرہ معاشرے کے تمام طبقات تک پہنچنے کے لئے اسٹیشن نے مختلف پروگرام شروع کئے ہیں۔ نیہا جلالی ، ڈپٹی ڈائریکٹر ریجنل آئوٹ ریچ بیورو جموں نے وبائی امراض کے اس مشکل وقت کے دوران بیورو کے ذریعہ کی جانے والی مختلف سرگرمیوں کا عمدہ طریقے سے جائزہ پیش کیا۔
 
 

انجمن صدائے فن کی جانب سے حسینی محفل 

کپوارہ//انجمن صدائے فن راجواڑ کی جانب سے آن لائن حسینی محفل کا انعقاد کیا گیا جس میں بڑی تعداد میں شرکاء اور شعراء نے حصہ لیا ۔تقریب کے آ غاز میںکشمیر عظمیٰ کے نمائندہ برائے کپوارہ اشرف چراغ نے کلیدی خطبہ پیش کیا اور شہدائے کربلا کوخراج عقیدت پیش کیا ۔اس دوران کئی شعراء نے شرکت کر کے سامعین کو محظوظ کیا ۔تقریب کی صدارت نذیر ابن شہباز نے انجام دی جبکہ مہمان خصوصی کا شرف نثار اعظم ،نادم شوقیہ اور ریحانہ کو ثر نے حاصل کیا اور نظامت کے فرائض تنظیم کے صدر زاہد جمال بانڈے نے انجام دئے ۔
 
 
 

عزاداروں پرطاقت کا استعمال افسوسناک: ناصر اسلم

سرینگر// نیشنل کانفرنس نے عاشورہ کے جلوسوں پر طاقت کے بے تحاشہ استعمال اور عزاداروں پر پیلٹ فائرنگ کی مذمت کرتے ہوئے کہا ہے کہ حکمرانوں نے ظلم و تشدد کی تمام حدیں پار کردی ہیں۔ پارٹی کے صوبائی صدر کشمیر ناصر اسلم وانی نے ایک بیان میں کہا کہ جس طرح سے کشمیر میں عزاداروں پر پیلٹ اور ٹیئر گیس شلنگ کی گئی، دنیا میں اس کی کوئی بھی مثال نہیں ملتی۔انہوں نے کہا کہ محرم کے ایام خصوصاً عاشورہ پر عزاداروں کیخلاف طاقت کا استعمال ، ٹیئر گیس شلنگ اور فائرنگ ناقابل قبول ہے۔وانی نے کہا کہ ملک کی مختلف ریاستوں میں مختلف مذاہب سے تعلق رکھنے والے لوگوں نے سخت ترین لاک ڈائون کے باوجود پروگراموں کا انعقاد کیا جن میں ہزاروں لوگوں نے شرکت کی لیکن ان پروگراموں کے انعقاد پر کوئی روک نہیں لگائی گئی اور نہ ان پروگراموں کے شرکاء کے خلاف طاقت کا استعمال کیا گیا لیکن کشمیر میں عزاداروں پر بے تحاشہ استعمال کیا گیا، جنہوں نے کووڈ 19کی احتیاطی تدابیر پر بھر پور عمل کرکے جلوس نکالنے کی کوشش کی۔ناصر اسلم نے نے اُن عناصر کے خلاف بھی سخت کارروائی کا مطالبہ کیا گیاجو دلی میں بیٹھ کر کشمیر میں عزاداروں کیخلاف بے تحاشہ طاقت کے استعمال کو فرقہ وارانہ رنگت دینے کی کوشش کررہے ہیں۔
 
 
 

کنگن تھانہ میں سب انسپکٹر کی سبکدوشی پر تقریب

گاندربل//ارشاد احمد// ضلع پولیس گاندربل میں تعینات چھترگل کنگن سے تعلق رکھنے والا ایک سب انسپکٹر چوہدری محمد شفیع کھٹانہ 37 سال محکمہ پولیس میں اپنی خدمات انجام دینے کے بعد سوموار کو ملازمت سے سبکدوش ہوگیا ۔ کھٹانہ پورے علاقے میں با اخلاق ،ملنسار اور شریف انفس مانے جاتے ہیں۔ان کے سبکدوش ہونے کے سلسلے میں پولیس تھانہ کنگن میں ایک مختصر تقریب منعقد ہوئی۔جس میں ان کی عزت افزائی کی گئی جہاں پر علاقے کے لوگوں نے ان کاشاندار استقبال کیا۔
 
 

صوبائی کمشنر کے پرنسپل سیکریٹری کی سبکدوشی پر الوداعی تقریب

سرینگر//صوبائی کمشنر کشمیر نے اپنے پرنسپل پرائیویٹ سیکریٹری غلام نبی کھانڈے کو نوکری سے سبکدوشی پرالوداع کیا۔اس سلسلے میں صوبائی کمشنر کے دفتر میں ایک مختصر تقریب منعقد کی گئی جس میںکھانڈے کی انتھک محنت اور لگن سے اپنا کام انجام دینے کیلئے سراہا گیا۔
 
 

 اونتی پورہ میںغیر ریاستی منشیات فروش گرفتار

سرینگر//اونتی پورہ پولیس نے ایک شخص کو گرفتار کرکے اُس کے قبضے سے 250گرام ہیروئن بر آمدکرنے کا دعویٰ کیا۔ پولیس ترجمان نے  بتایا کہ اونتی پورہ پولیس نے لدرمنڈ اونتی پورہ کے نزدیک عقیل احمد انصاری ساکن بارکھان ، نواب گنگ بریلی یوپی نامی ایک شخص کی گرفتاری عمل میں لاکر اُس کے قبضے سے ہیروئن برآمد کرلیا۔مذخورہ شخص کو اونتی پورہ تھانہ منتقل کیا گیا ۔پولیس نے اس سلسلے میں ایف آئی آر نمبر118/2020کے تحت کیس درج کرلیا۔
 
 

 آئی ٹی آئی(مانو) حیدرآباد میں |  14 ستمبر داخلے کی آخری تاریخ

حیدرآباد// مولانا آزاد نیشنل اردو یونیورسٹی کے انڈسٹریل ٹریننگ انسٹی ٹیوٹ (آئی ٹی آئی) حیدرآباد میں داخلے جاری ہیں۔ ڈاکٹر عرشیہ اعظم پرنسپل آئی ٹی آئی کے مطابق ڈرافٹسمین سیول، میکانک (ریفریجریشن اینڈ ایئر کنڈیشننگ)، الیکٹریشین، الیکٹرانک میکانک اور پلمبنگ جیسے روزگار پر مبنی کورسز میں داخلے کے لیے درخواست فارم 14؍ستمبر 2020 تک داخل کرسکتے ہیں۔امیدوارکو یونیورسٹی ویب سائٹ manuu.edu.in پر اپنا رجسٹریشن کروانا ہوگا اور ٹریڈس کی ترجیح کے تسلسل میں اپنی درخواستیں آن لائن داخل کرنی ہوںگی۔ تمام اصل سرٹیفکیٹس کی اسکان کاپی بھی یونیورسٹی ویب سائٹ پر اپلوڈکرنی ہوگی۔تمام درخواست گذاروںکو چاہیے کہ دسویں سطح پر اردو بطور مضمون؍زبان؍ذریعہ تعلیم کامیاب کرچکے ہوں۔ کورس کے لیے درکار اعلی ترین قابلیت اگر 8ویں کامیاب ہوں تب درخواست گذارکو چاہیے کہ اردو بطور مضمون؍زبان؍ذریعہ تعلیم 8ویں کامیاب کرچکے ہوں۔ تمام پروگرامس کا ذریعہ تعلیم اردو ہے۔ داخلہ میرٹ کی بنیاد پرہوگا۔ مذکورہ تمام پروگرامس کے لیے کوئی فیس نہیںلی جائے گی۔ البتہ قابل واپسی احتیاطی رقم  60/- روپئے داخلے کے وقت ڈپازٹ کرنی ہوگی۔ حکومت ہند کے قواعد کے مطابق ریزرویشن پالیسی کا اطلاق ہوگا۔ مزید تفصیلات ویب سائٹ سے حاصل کی جاسکتی ہیں۔
 
 

شاہ آباد ڈورو کے معروف معالج فوت

سرینگر//شاہ آباد ڈورو کے معروف معالج میر غلام رسول حرکت قلب بند ہونے کی وجہ سے سوموار کو انتقال کرگئے۔اُن کی عمر 61برس تھی۔موصوف ’ہیولز انڈیا لمیٹڈ ‘کے منیجر باپت کشمیرمیر اعجاز حسین اور اسسٹنٹ پروفیسر گورنمنٹ ڈگری کالج اننت ناگ میر الطاف حسین کے والد تھے۔ علاقے میں اُن کے موت کی خبر پھیلتے ہی لوگوں کی ایک کثیر تعداد ڈورو پہنچ گئی جہاں انہوں نے مرحوم کی نماز جنازہ میں شرکت کی۔ اس دوران سماج کے مختلف طبقوں سے وابستہ افراد نے غمزدہ خاندان سے تعزیت کا اظہار کیا جن میں ضلع ترقیاتی کمشنر بارہمولہ ڈاکٹر جی این ایتو،ضیاء العلوم پونچھ کے صدر مولانا سید حبیب، ہمالین ایجوکیشن مشن راجوری کے بانی فاروق مضطراور معروف شاعر ڈاکٹر لیاقت جعفری شامل ہیں ۔ خاندانی ذرائع کے مطابق مرحوم کی فاتحہ خوانی جمعرات کو اُن کے آبائی قبرستان واقع شاہ آباد ڈورو پر انجام دی جائے گی۔
 

 

ترال میں چوردوگائیں اور بچھڑا چُراکرلے گئے

سید اعجاز 

ترال //مونگہامہ ترال میں چوروں نے دوران شب 2گائیںاور ایک بچھڑا چرا لے گئے۔ مقامی لوگوں نے بتایا کہ چوروں نے 30اور 31اگست کی درمیانی رات کو عبد الرشید بٹ اور فیاض احمد بٹ نامی دو افراد کے گائو خانوں میں چوری کی یہ واردات انجام دی ۔دونوں افراد  صبح کوحسب معمول جب گائو خانے میں داخل ہوئے تو وہ یہ دیکھ کر ششدر رہ گئے کہ دو گائیں اور ایک بچھڑا غائب تھا ۔اس سے قبل بوچھو نامی گائوں میں اسی طرح کی واردات پیش آئی تھی۔
 
 

کے کے شرما کا پرنب مکر جی کی وفات پر اظہارِ تعزیت 

سرینگر//لفٹیننٹ گورنر کے مشیر کے کے شرما نے سابق صدر ہند پرنب مکر جی کی وفات پر تعزیت کا اظہار کیا ۔ شرما نے کہا ہے کہ اُن کی خدمات کو ہمیشہ یاد رکھا جائے گا ۔انہوں نے کہا کہ ایک اعلیٰ پایہ کے سیاستدان ہونے کے ساتھ ساتھ آنجہانی ایک بہت اچھے انسان اور اعلیٰ منتظم تھے اور اُن کی وفات ملک کیلئے صدمہ عظیم ہے ۔ مشیر نے سوگوار خاندان کے ساتھ اظہارِ تعزیت کرتے ہوئے آنجہانی کی روح کے ابدی سکون کیلئے دعا کی ۔ 
 
 
 

کرالہ پورہ کپوارہ کے معروف استاد فوت

اشرف چراغ

 
کپوارہ//کرالہ پورہ کپوارہ کے ایک معروف استاد محمد اقبال پیر مختصر علالت کے بعد انتقال کر گئے ۔مرحوم اس وقت ہائر سیکنڈری سکول ویلگام میں بحیثیت کامرس لیکچر ر تعینات تھے ۔ان کی وفات پر مختلف سیاسی و سماجی تنظیمو ں کے علاوہ ایجیک (ق) کپوارہ کے صدر میر فیا ض ،ٹیچرس فورم کپوارہ ،محکمہ تعلیم اور سول سو سائٹی کرالہ پورہ نے گہرے صدمے کا اظہار کرتے ہوئے مرحوم کے حق میں دعائے مغفرت کی ۔محمد اقبال پیر کے انتقال پر علاقہ میں ماتم کی لہر دوڑ گئی ۔موصوف کو اپنے آ بائی گائو ں درد ہرے کرالہ پورہ میں رہنما خطوط کے مطابق سپرد خاک کیا گیا۔
 
 
 

دیرینہ رکن کے انتقال | نیشنل کانفرنس کا اظہارِ تعزیت

سرینگر//نیشنل کانفرنس نے پارٹی کے دیرینہ رکن بشیر احمد شیخ ساکن جاگرا اوڑی کے انتقال پر گہرے صدمے کا اظہار کیا ہے۔ پارٹی کے ضلع صدر بارہمولہ جاوید احمد ڈار، صوبائی سیکریٹری ایڈوکیٹ شوکت احمد میر اور شمالی زون کے نائب صدر ڈاکٹر سجاد شفیع نے سوگواران کے ساتھ  تعزیت کا اظہار کیا اور اُن کی جنت نشینی کیلئے دعا کی۔ اور ان کی پارٹی کے تئیں خدمات بھی یاد کی گئیں ۔ 
 
 

منڈل کمیشن سفارشات کو لاگو کیا جائے:اپنی پارٹی

او بی سی طبقہ جات کیلئے27فیصدریزرویشن کا مطالبہ

جموں// اپنی پارٹی نے جموں وکشمیر میں دیگر پسماندہ طبقہ جات(او بی سی)کو 27فیصد ریزرویشن دینے کا مطالبہ کیا ہے۔ پارٹی صوبائی صدر  منجیت سنگھ نے کہاکہ حکومت کو چاہئے کہ دیگر ریاستوں کی طرح جموں وکشمیر میں او بی سی طبقہ کو27فیصدریزرویشن دی جائے جوکہ سات دہائیوں سے اپنے حقوق سے محروم ہیں۔ موصوف پارٹی دفتر گاندھی نگر جموں میں ایک تقریب پراپنے خیالات کا اظہار کررہے تھے ۔ اس موقع پر سینئرلیڈ رمحمد دلاور میر، جنرل سیکریٹری وجے بقایہ، جنرل سیکریٹری وکرم ملہوترہ، شنکر سنگھ چب، ابہے بقایہ، اعجاز کاظمی، رقیق احمد خان، سوہن سنگھ، بودھ راج بھگت ، سرکیش رانا، گورو کپو ر موجود تھے جنہوں نے او بی سی طبقہ جات کے ممبران اور جنتا دل لیڈران کی اپنی پارٹی میں شمولیت کا خیر مقدم کیا۔منجیت سنگھ کی صدارت میں منعقدہ ا،س تقریب میں تلک راج، چمن لال، انیل چنوترہ، جس پال سنگھ، اوتار سنگھ، پریم ساگر، وجے کمار، اکشے شرما، دیو راج شرما، کمل کمار، رمن کمار، آشا رانی، سکھ دیو کمار، موہندر پال، جگمیت سنگھ، تلک راج نے شمولیت کی۔ اس کے علاوہ جنتا دل لیڈران رضیہ بیگم، سید غلام نبی شاہ نے بھی پارٹی میں شمولیت اختیار کی۔
 

شالہ بگ میں لکڑی ضبط :محکمہ جنگلات

گاندربل//ارشاد احمد//فارسٹ پروٹیکشن فورس گاندربل اور محکمہ جنگلات کی مشترکہ کارروائی کے تحت ہرن شالہ بگ رینج کے ڈگہ پورہ بلاک کے کمپارٹمنٹ نمبر 16/17 سے غیر قانونی طریقے سے کاٹی گئی لکڑی بھاری مقدار میںضبط کی گئی۔