مزید خبرں

تعمیراتی کمپنی پر ادائیگی نہ کرنے کا الزام 

سب کنٹریکٹروں کا وزیر اعلیٰ کو میمورنڈم ارسال 

ایم ایم پرویز
رام بن //ایچ سی سی کمپنی کی جانب سے جموں ۔سرینگر قومی شاہراہ کو بانہال سے رام بن تک چار گلیار بنانے کے لئے مامور سب ۔کنٹریکٹروں نے کنٹریکٹر کمپنی کے خلاف سنگین نوعیت کے الزام عائد کئے ہیں۔ان کا الزام ہے کہ کمپنی نے جان بوجھ کر انجام دی ہوئی کام کے عوض ادائیگی نہیں کی ہے۔اس سلسلہ میں سب۔کنٹریکٹروں کا ایک اجلاس زیر قیادت ایسو سی ایشن کے صدر منعقد ہوئی ۔ اجلاس میں الزام عائد کیاگیا کہ سب۔کنٹریکٹروں نے مختلف بینکوں اور مالی اداروں سے قرضہ حاصل کیا ہے، جسے انہوں نے شاہراہ کی کام تکمیل دینے میں صرف کیا ہے لیکن بدقسمتی کی بات ہے کہ نیشنل ہائی وے اتھارٹی آف انڈیا کی جانب سے ایچ سی سی کمپنی کے حق میں ادائیگی واگذار کرنے کے باوجود سب۔کنٹریکٹرس کو 2016سے تا دم ادائیگی نہیں کی گئی ہے۔یونین نے بانہال ۔رام بن سیکٹر کے تمام سب۔کنٹریکٹروں کو 100فیصدر ادائیگی کرنے کا مطالبہ کیا ہے۔اجلاس میں بتایا گیا کہ پی آر ڈبلیو ریٹ قابل کار نہیں ہیںکیونکہ مارکیٹ ریٹ کے مطابق ان میں سر نو جائزہ لینے کی ضرورت ہے۔اس سلسلہ میں ایک میمورنڈم ریاست کی وزیر اعلیٰ محبوبہ مفتی،بشمول چیف سیکرٹری،ڈویژنل کمشنر جموں اور ضلع ترقیاتی کمشنر رام بن کو ارسال کیا گیا ہے۔
 
 
 
 
 

ریاسی ۔مہور سڑک خستہ حالی کا شکار

لوگوں کو مشکلات کا سامنا،ٹریکٹروں پر سفر کرنے کیلئے مجبور

زاہد ملک

مہور//ضلع ریاسی میں بہتر سڑکوں کے رابطہ کے بلند بانگ دعوؤں کے باوجود ضلع کی بیشتر سڑکیں خستہ حالی کا شکار ہیں۔سڑک کی خستہ حالی سے لوگوں کو اپنے منزل و مقصود تک پہنچنے میں کافی مشکلات کا سامنا کرنا پڑتا ہے۔ریاسی سے مہور سڑک کا کام محکمہ گرئف نے لیا ہوا ہے لیکن اس سڑک میں اس  طرح سے سست رفطاری سے کام چل رہا ہے ۔لوگوں کا کہنا ہے کہ آزادی سے لیکر آج تک یہ سڑک پختہ نہ ہوسکی اور مقامی لوگوں اور ڈرائیوروں کو مشکلات کا سامنا رہتا ہے۔سڑک کی خستہ حالی سے ریاسی سے مہور ہر سال کئی ایک حادثات پیش آتے ہیں جس کی وجہ سے کئی انسانی جانیں ضائع ہو جاتی ہیں۔ مقامی لوگوں نے کئی مرتبہ محکمہ گرئف کیخلاف احتجاجی مظاہرے کئے لیکن محکمہ کو ٹس سے مس نہیں ہوتا۔اسی طرح مہور سے گلابگڑھ سڑک بھی خستہ حالی کا شکار ہے لیکن محکمہ PMGSY خاموش تماشائی بنی بیٹھی ہے۔انہوں نے کہا کہ کچھ  سڑکوں پر پلوں کی تعمیر زیر غور ہے ان میں شیدول نالہ اور بدناڑ پل کا کام ابھی تک شروع نہیں ہو سکا ہے۔لوگوں کا کہنا ہے کہ شیدول اور بدناڑ کے پل کی تعمیر کیلئے رقومات منظور ہوئی ہے لیکن محکمہ کام کرنے میں کوتاہی کررہا ہے۔بل سے شبراس تقریباً 8کلومیٹر سڑک گزشتہ 8 برسوں سے زیر تعمیر ہے نامعلوم وجوہات کے بنا پر سڑک ابھی تک مکمل نہیں ہوسکی۔اسی طرح نہوچ سے دیول سڑک کا کام گذشتہ دوسالوں سے رکا پڑا ہے۔اس کے علاوہ کئی اور مقامی سڑکیں خستہ حالی کا شکار ہیں جو ابھی تک پختہ نہیں ہوسکی ہیں ان میں مہور سے بدر، بٹھوئی،بلمتکوٹ،گنڈی،سونگڑی سے شکاری،ہاڑیوالہ ،کینٹھی وغیر شامل ہے۔حیران کن بات تو یہ ہے کہ دیول،نہوچ،ڈوگہ اور برمیدار کے لوگ 21ویں صدی میں بھی رنگلائی سے دیول تک کا سفر ٹریکٹروں پر کرنے کیلئے مجبور ہیں۔
 
 
 
 

 ٹرائبل کوآرڈینیشن کمیٹی کا کھڑی دورہ 

محمد تسکین 

بانہال // رسانہ کٹھوعہ کی معصوم لڑکی کے قتل اور عصمت ریزی کیس میں ملوث مجرموں کی طرف سے سی بی آئی انکوائری کی مانگ کو سپریم کورٹ کی طرف سے مسترد کرنے کو خوش آ ئندقرار دیتے ہوئے آل ٹرائبل کوآرڈینیشن کمیٹی  نے کہا ہے کہ ملک میں قانون کی بالادستی پر ہمیں پورا اعتماد اور یقین ہے اور کٹھوعہ کیس قانون و انصاف کے تمام تقاضوں کو پورا کرتے ہوئے اپنے انجام کی   طرف بڑھ رہی ہے۔  اس موقع پر مقررین نے عوامی کی طرف سے معصوم بچی کو انصاف دلانے کیلئے چلائی جارہی تحریک کیلئے کھڑی تحصیل کے تمام لوگوں کا شکریہ ادا کیا۔ انہوں نے سول سوسائٹی بانہال کی طرف سے منگل کے روز کئے گئے والہانہ استقبال اور حوصلہ افزائی کیلئے ان کا شکریہ ادا کیا۔ منگل کے روز بانہال میں سول سوسائٹی کے حاجی عبدالغنی تانترے نے کٹھوعہ واقع کے مجرموں کو کیفر کردار تک پہنچانے تک اس تحریک اور اس کے لیڈروں کو بھر پور ساتھ دینے کا اعلان کرتے ہوئے کہا تھا کہ نوجوان گوجر لیڈر چودھری طالب حسین کے خلاف وکلاء سے لیکر سنگھ پریوار کے کئی لیڈر اور حکمران جماعتوں کے لیڈر اپنازہر اْگل رہے ہیں اور اْن پر حملے بھی کئے گئے اس لئے طالب حسین کی جان کو کسی بھی خطرے کیلئے سرکار کو ذمہ دار مانا جائے گا۔ انہوں نے کہا کہ زنا و بالجبر اور قتل کے واقعات کو ہمیں فرقہ پرستی اور مذہب کی بنیاد پر دیکھنے کے بجائے انسانیت کی نظرسے دیکھنا چاہئے اور ہمارے سماج اور سوسائٹی کو خواتین کے خلاف کسی بھی قسم کی زیادتی کو یکجا ہوکر مقابلہ کرنا چاہئے اور ایسے بیمار ذہنیت کے لوگوں کو پورے سماج میں الگ تھلگ کرنا چاہئے۔ عبدالغنی تانترے نے کہا کہ وہ سماج میں ہونے والی ایسی کسی بھی واقع کی پردہ پوشی کرنا اور مجرموں کی حمایت میں سامنے آنا پورے سماج کیلئے افسوسناک ہے۔ انہوں نے کہا کہ وہ رسانہ کے معاملے میں قانون کی بالا دستی چاہتے ہیں اور ایسے افراد کے خلاف کاروائی کرنا چاہتے ہیں جو جھوٹے الزامات اور بیانات کے ذریعے پروپگنڈہ کرکے لوگوں میں تفرقہ ڈال رہے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ پوری سوسائٹی  طالب حسین ، اس تحریک اور معصوم بچی کو انصاف دلانے تک اپنا بھرپور ساتھ دیتے رہیں گے۔ 
 
 
 

پی ڈی پی ضلع صدر کا سروڑ دورہ

ریاستی سرکار دیہی علاقوں کی ترقی کیلئے سنجیدہ: شیخ ناصر

کشتواڑ// دوردراز علاقہ جات میں پارٹی کارکنان تک پہونچنے ا ور عوامی مسائل سننے کے اپنے مشن کو جاری رکھتے ہوئے پیوپلز ڈیموکریٹک پارٹی کے ضلع صدر کشتواڑ شیخ ناصر حسین نے حلقہ انتخاب اندروال کے سروڑ علاقہ کے کھوری، لاس، ٹٹانی، ہورا اور بمل ناگ دیہاتوں کا تفصیلی دورہ کیا۔ دورے کے دوران ان کے ہمراہ پارٹی کے کئی سینئر کارکنان عبدالکبیر بٹ، بلاک صدر بونجواہ عابد ملک، اختر حسین،سجاد حسین لون، خورشید احمد بھی ہمرا ہ تھے۔ دریں اثناء شیخ ناصر نے بمل ناگ میں کرکٹ ٹورنامنٹ کے فائنل میچ کی اختتامی تقریب میں بھی شرکت کرکے فاتح کھلاڑیوں میں انعامات تقسیم کئے۔ کئی مقامات پر پارٹی کارکنان سے خطاب کرتے ہوئے پی ڈی پی ضلع صدر نے کہا کہ دوردراز پسماندہ علاقہ جات کی بہتر تعمیر و ترقی محبوبہ مفتی کی سربراہی میں موجودہ کولیشن سرکار کی اولین ترجیحات میں شامل ہے  انہوں نے کہا کہ ریاستی سرکار لوگوں کو ان کے دروازے تک  پہونچ کر مسائل کے ازالہ کیلئے واعدہ بند ہے اور اسی ضمن میں باذاتِ خود ریاست کی وزیر اعلی نے تمام ضلع صدر مقامات پر عوامی دربار کا انعقاد کرکے لوگوں کے مسائل سنے اور انہیں حل کیا جو کہ اایک تاریخی قدم مانا جاتا ہے۔ شیخ ناصر نے پارٹی کارکنا ن سے اپیل کی کہ وہ سرکار کی طرف سے جاری بہبودی سکیموں کو لیکر عوام میں جایں اور انہیں  ان کے بارے میں جانکاری دیں تاکہ زیادہ سے زیادہ تعداد میں لوگ ان سے مستعفید ہوجائیں۔
 
 
 
 

سنگلدان میںبیداری پروگرام کا اہتمام 

گذشتہ مالی سال کے دوران57کے وی آئی بی یونٹ قائم کئے گئے

رام بن / ضلع کے سنگلدا ن علاقہ میں جے اینڈ کے کھادی اینڈ ولئیج انڈسٹریز بورڈ کی جانب سے لوگوں میں وزیر اعظم کے روزگار پیدا کرنے کے پروگرام  (PMEGP)،سکیم آف فنڈ بابت ری جنریشن آف ٹریڈشنل انڈسٹریز (SFURTI) اور نیشنل ایس سی/ایس ٹی ہب(NSSH) سکیموں کے بارے میں بیداری پیدا کرنے کے لئے ایک بیداری کیمپ کا اہتمام کیاگیا ۔کیمپ کا افتتاح کے دوران ایس ڈی ایم گول پنکج بھنگوترہ نے کہا کہ بیروز گاروں کو روزگار کے مواقعے فراہم کرنے کے لئے ایسے پروگرام کا لگاتار منعقد کیا جائے۔انہوں نے کہا کہ آخروٹ اور انار ضلع کے اہم پیداوار ہونے کی وجہ سے کافی مقدار میں اُگا ئے جاتے ہیں، جسکے لئے لوگ آخروٹ اور انار کے پراسیسنگ یونٹ قائم کرنے کے لئے کے  وی آئی بی سکیموں سے استفادہ لے سکتے ہیں۔پروگرام میں ڈپٹی چیف ایگزیکٹو افسر جموں پون کمار گپتا نے شرکا کو ان سکیموں کی تفصیلی جانکاری فراہم کی۔اس موقعہ پر بتایا گیا کہ گذشتہ مالی سال کے دوران کے وی آئی بی نے 42  یونٹوں کے مقرررہ ہدف کے مقابلہ میں 57یونٹ قائم کئے ہیں، جس سے 226بیروز گار نوجوانوں کو روزگار فراہم ہوا۔
 
 
 
 

ڈی سی کا کشتواڑ میں ترقیاتی کاموں کی پیش رفت کا جائزہ

اے آئی بٹ

کشتواڑ//ضلع ترقیاتی کمشنر انگریز سنگھ رانا نے ایس ایس پی ابرار چودھری ، اے سی آر اندرجیت پریہار و دیگر ضلع افسروں کے ہمراہ کلید سے نئے ڈی سی آفس تک سڑک کا معاینہ کیا ۔مدعاینے کے دوران ڈی سی نے کام کی سست رفتاری پر تشویش کا اظہار کیا اور جنرل ریزرو انجینئر فورس کو مفاد عامہ کے لئے اسکی فوری طور تکمیل کی ہدایت دی۔ڈی سی نے متعلقہ ایجنسی کو سڑک کے اس ٹکڑے پر ڈرینئیج سسٹم کی مرمت کرنے کی بھی ہدایت دی،تاکہ لوگوں کو غیر صحت مند ماحول میں پریشانیوں کا سامنا نہ کرنا پڑے۔دریں اثنا ، ڈی سی نے ایس ایس پی ابرار چودھری سے کہا کہ جو شراب کے دوکان ایکسائز ایکٹ کی خلاف ورزیوں کے مرتکب ہوتے ہیں،اُن پر کیس درج کئے جائیں۔انہوں نے میونسپلحُکام سے شراب کی دوکانوں کے گرد و نواح میں خالی بوتلوں اور پلاسٹک تھیلیوں کو ہٹا کر صفائی وستھرائی یقینی بنانے کی ہدایت دی،جس کا خرچہ شراب دکان سے حاصل کرنے کی ہدایت دی گئی ۔
 
 
 
 

چنگام ،کشتواڑ میں مصوری کیمپ کا اہتمام 

کشتواڑ//فوج نے خطہ کے نوجوانوں کی مدد کے لئے اپنے وعدوں کوجاری رکھتے ہوئے ضلع کے چنگام علاقہ میں مصوری کا ایک مقابلہ منعقد کیا ۔اس مقابلے میں کل ملا کر 17 طلبا و طالبات نے شرکت کی۔اور اپنا ٹیلنٹ دکھایا ۔مصوری کے مختلف موضعو ں میں طلاب نے ایک طرف سے حُب الوطنی دکھائی دے رہی تھی وہیں دوسری جانب قدرت سے محبت دکھائی دے رہی تھی۔مقابلے کے اختتام پر طلاب کی کاوشوںکا اعتراف کرنے کے لئے فی کلاس کے بہترین طلبا کو انعامات سے نوازا گیا ۔
 
 
 

کوئوںکے حملے میں 6 ماہ کا بچہ شدیدزخمی

زاہد ملک 

ریاسی //اطلاعات کے مطابق کووں کے ایک حملے میںایک چھ مہینہ بچہ شیر عالم ولد رشید ساکنہ ٹوٹے ،ریاسی بُری طرح سے زخمی ہوا ہے۔بچے کے اہل خانہ کے مطابق بچہ برآمدے میں لیٹا ہوا تھا اور اہل خانہ کوئی کام کر رہے تھے کہ کووں نے اس پر حملہ کرکے اسکی دونوں آنکھوں کو زخمی کر دیا ہے۔بچے کو فوری طور سے ضلع ہسپتال ریاسی معا لجہ کیلئے بھرتی کیا گیا ،جہاں سے اسے بہتر محالجہ کے لئے جی ایم سی جموں منتقل کیا گیا ۔دریں اثنا، ڈپٹی ایس پی ہیڈ کوارٹر ، ریاسی نکھل گوگنا نے واقعہ کی تصدیق کی ہے۔
 
 

ریاسی میں عدم شناخت نعش برآمد 

زاہد ملک 

ریاسی //پولیس نے ایک غیر شناخت شدہ نعش برآمد کی ہے۔ اطلاعات کے مطابق پولیس نے ڈیم ٹاپ ریاسی سے ایک خاتوں کی غیر شناخت شدہ نعش برآمد کی ہے۔پولیس نے نعش کو ضلع ہسپتال ریاسی منتقل کیا ،جہاں پر اسکا پوسٹ مارٹم کرکے شناخت کے لئے رکھا گیا ہے۔

خاتون کی زہر خوانی 

زاہد بشیر

 
گول//یہاں علاقہ دلواہ میں ایک چھبیس سالہ خاتون ارشادہ بیگم زوجہ محمد فاروق نجار نے کسی ذاتی جھگڑے پر کوئی زہریلی شئے کھائی جس وجہ سے وہ بے ہوش ہو گئی اور اسے صبح کے وقت سنگلدان پی ایچ سی میں لے جایا گیا جہاں پر ڈاکٹروں نے اسے مردہ قرار دیا ۔ مردہ خاتون کو سب ڈسڑکٹ ہسپتال گول میں لایا جہاں پر اس کا پوسٹ مارٹم ہوا اور بعد میں نعش کو لواحقین کے سپرد کر دیا ۔ اس سلسلے میں پولیس نے رپورٹ درج کر کے مزید تحقیقات شروع کر دی۔

شراب کی45فروٹیاں ضبط 

ڈوڈہ //ضلع میں ناجائز شراب کے خلاف کاروائیاں جارہی رکھتے ہوئے پولیس پوسٹ پُل ڈوڈہ کی ایک ٹیم نے مصدقہ اطلاع ملنے پر زیر قیادت ایس آئی یوگ راج زیر نگرانی ڈپٹی ایس پی ہیڈ کوارٹرز ڈوڈہ افتخار احمد اور زیر ہدایات ایس ایس پی محمد شبیر چنار موڑ پر ایک ناکہ لگایا اور ایک شخض کو گرفتار کرکے اسکے قبضہ سے ناجائز شراب کی45فروٹیاں برآمد کیں۔، جسے وہ چنار موڈ ڈوڈہ سے ڈوڈہ قصبہ لے جا رہا تھا۔گرفتار شدہ کی پہچان پون کمار ولد گوری لعل ساکنہ گوالوٹ تحصیل و ضلع ڈوڈہ کے بیان کی گئی ہے۔پولیس نے اس سلسلہ میں ایک معاملہ زیر ایف آئی آر نمبر71/2018  زیر د فعہ 48-a ایکسائز ایکٹ درج کرکے تحقیقات شروع کر دی ہے۔لوگوں نے ضلع پولیس کی جانب سے ڈوڈہ قصبہ کو ناجائز شراب کی بدعت سے پاک رکھنے میں ڈوڈہ پولیس کی کاروائیوں کی ستائش کی ہے۔

  رام بن کے  2غیرحاضر ملازم معطل

رام بن //چیف ایجوکیشن افسر عبدالحمید فانی نے ضلع کے مختلف سکولوں کا اچانک دورہ کیا ۔ دورے کے دوران ایچ ایس رام سو کی استانی لیلا دیوی کو غیر حاضر پایا گیا ۔دورے کے دوران سی ای او نے ہائی سکول باترو میں دو ملازموں عبدالمجید ماسٹر اور نعیم احمد درجہ چہارم ملام کو مڈ ڈے میل کھاتے ہوئے دیکھا ،جو کہ ایم ڈی ایم سکیم کے تحت سکول کے طلاب کے لئے تیار کیا گیا تھا۔سکول میں دو ملازموں درجہ چہارم کے محمد لطیف اور راہل دیو سنگھ کو غیر حاضر پایا گیا ۔ سی ایک او نے سکول کے ہیڈ ماسٹر کو ان خاطی اہلکاروں سے وضاحت طلب کرکے ان سے سرکاری خزانہ کو ہوئے نقصان کو وصولنے کی ہدایت دی۔ دریں اثنا ، استانی للتا دیوی اور درجہ چہارم ملازم محمد لطیف کو معطل کرکے ادارے میںفوری طور سے حاضر رہنے کی ہدایت دی گئی۔افسر نے دورے کے دوران ہائی سکول النباس ،گرلز ایم ایس النباس ،پی ایس ہونگ ازون اکھڑال کا دورہ کیا اور اداروں میں کار کردگی قابل اطمینان پائی۔ انہوںنے طلاب کے خوشحال مستقبل کیلئے باقاعدگی اور معیاری تعلیم کی جانب توجہ دینے کی ہدایت دی۔ دورے کے دوران ایچ ایس ایس اُکھڑال کے طلاب کا ایک وفد بھی سی ای او سے ملاقی ہوا اور انہیں ٹرانسپورٹ سہولیات دستیاب نہ ہونے سے آگا ہ کیا ، جسکی وجہ سے پوگل، مالی گا، سینا بھٹی، پرستان،مگر کوٹ، رام سو وغیرہ کے طلاب کو کافی دشوارویں کا سامنا کرناپڑ رہا ہے۔ سی ای او نے یہ معاملہ انچارج پولیس اسٹیشن اُکھڑال کے ساتھ اُٹھا کر حل کیا۔
 

کے وی کے کی جانب سے تربیتی پروگرام کا اہتمام 

ریاسی / / سکاسٹ جموں کے کرشی وگیان کیندر (KVK) ریاسیکی جانب سے بدھ کے روزتلوارا میں ’’ آرگنک اگریکلچر میں اینٹر پرینور شپ ڈیولپمنٹ‘‘ پر یک روزہ تربیتی پروگرام کا اہتمام کیا گیا ۔پروگرام میں ضلع کے کسانوں کی ایک بھاری تعداد نے شرکت کی،کے وی کے کے سربراہ ڈاکٹر بنسی لعل نے کسانوں کے ساتھ تبادلہ خیال کیا اور انہیں اپنی آمدنی میں اضافہ کرنے کے لئے سائنسی آرگنک فصلوں کے کاشت  پر زور دیا ۔انہوں نے آرگنک زرعی تکنیکوں ،مختلف آرگنک کھاد ،پنچگاوا وغیرہ  کا استعمال کرنے پر زور دیا ۔انہوں نے مزید کہا کہ مختلف بیماریوں جیسے کہ کیڑے مکوڑوں اور فالتو گھاس کو فصلوں کی ہیرا پھیری ، بوائی کے وقت، اور کم قیمتی مقامی کھادوں کے استعمال سے بدل دیا جا سکتا ہے۔انہوں نے خریف   (بقیہ صفحہ10پر۔پروگرامٌ) جانکاری دی۔کسانوں کو سائنسی طریقوں سے نرسریاں تیار کرنے کی بھی جا نکاری دی گئی۔ریسورس پرسن نے کرسی وکاس یوجنا کو بھی اُجاگر کیا اور کسانوں کو آرگنک سبزیوں کے مارکیٹنگ منیجمنٹ پر رہنمائی بھی کی۔