مزید خبرں

۔  9سالہ لڑکی دریا میں بہہ گئی 

عشرت حسین بٹ 
منڈی //گزشتہ روز منڈی تحصیل میں پیش آئے ایک حادثے کے دوران ایک 9سالہ لڑکی دریا میں بہہ گئی تاہم پولیس اور فوج کی جانب سے اس کی تلاش کیلئے مہم شروع کر دی گئی ۔پولیس نے بتایا کہ منڈی تحصیل کے بیدار دریا پر پانی لینے کیلئے گئی ہوئی ایک لڑکی حادثاتی طور پر دریا میں بہہ گئی ۔اس کی شناخت عاشیہ بانو دختر محمد شریف عمر 9برس کے طورپر ہوئی ہے ۔انہوں نے بتایا کہ حادثے کی خبر موصول ہو تے ہی اس سلسلہ میں ایک تلاشی مہم شروع کی گئی ۔فوج مقامی لوگوں اور پولیس کی جانب سے مشترکہ طورپر شروع کردہ تلاشی مہم آخری خبر موصول ہونے تک جاری تھی۔
 

حد متارکہ پر پُر اسرار آگ نمودار 

جاوید اقبال 
مینڈھر //مینڈھر سب ڈویژن کے سرحدی علاقوں میں لگی آگ کی وجہ سے درجنوں سبز درخت جل کر راکھ ہو گئے ہیں ۔مقامی ذرائع نے بتایا کہ گزشتہ روز گوہلد کے سرحدی علاقوں میں پاکستانی زیر انتظام جموں وکشمیر کی جانب سے آگ لگا دی گئی جس کی وجہ سے ایک وسیع جنگلات اس کی لپیٹ میں آگیا اور درجنوں سبز درخت اور پودے اس آگ کی زد میں آکر راکھ بن گئے ہیں ۔انہوں نے بتایاکہ کئی علاقوں میں جنگلی جانوراور پرندے بھی اپنے جان بچانے کیلئے آبادی والے علاقوں کا رخ کررہے ہیں جبکہ آخری اطلاعات موصول ہونے تک آگ نے ایک بڑے علاقہ کو اپنی لپیٹ میں لے لیا تھا ۔
 
  

نئے زیڈ ای او نے چارج سنبھالا 

پرویز خان 
منجا کوٹ //زون منجا کوٹ میں نئے تعینات کردہ زونل ایجوکیشن آفیسر نے اپنا چارج سنبھالا ۔اس دوران محکمہ کے ملازمین نے نئے تعینات زونل ایجوکیشن آفیسر کا شاندار استقبال کیا ۔غور طلب ہے کہ منجا کوٹ زون میں سابقہ زونل ایجوکیشن آفیسر کی سبکدوشی کے بعد گزشتہ کئی عرصہ سے زونل ایجوکیشن آفیسر کی کرسی خالی پڑی ہوئی تھی تاہم انتظامیہ کی جانب سے ادرش کماری کو نیا زونل ایجوکیشن آفیسر تعینات کر دیا گیا ہے ۔اس دوران ٹیچر ایسوسی ایشن منجا کوٹ نے موصوفہ کا مذکور ہ دفتر میں والہانہ استقبال کیا ۔
 
  
 

کووڈ متاثر ین کے اہل خانہ کی مالی امداد کاعمل شروع 

حسین محتشم
پونچھ// ڈپٹی کمشنر پونچھ اندر جیت نے ایس ایس پی ونود کمار کے ہمراہ اپنے دفتر کے کانفرس ہال میں سکھشم سکیم جو کہ جموں و کشمیر حکومت کی ایک نئی اسکیم ہے ،کے تحت کووڈمتاثرہ خاندانوں میں افراد کو براہ راست بینک ٹرانسفر (ڈی بی ٹی) کے ذریعہ ایک ہزار روپے کی خصوصی ماہانہ پنشن کا خط جاری کیا۔اس میں شرط رکھی گئی ہے کہ متاثرہ فردکسی دوسری صورت میں کوئی پنشن وصول نہیں کررہے ہو۔ واضح رہے کہ منصوبے کا مقصد ان خاندانوں کی رہائش کو یقینی بنانا ہے جو کورونا وائرس کی وجہ سے اپنا واحد روٹی کا ذریعہ کھو چکے ہیں۔اس سکیم کے تحت ان بچوں کو خصوصی سکالرشپ فراہم کی جا رہی ہے جو اپنے والدین ،بہن بھائیوں ، سرپرستوں کو COVID-19 میں کھو چکے ہیں۔ خصوصی سکالرشپ سالانہ 12 ہزار اور اعلی تعلیم حاصل کرنے والے بچوں کو زیادہ رقم فراہم کی جارہی ہے ۔ ڈپٹی کمشنر نے سکیم کے تحت کویڈ متاثرین کے لواحقین کو انیس سکالرشپ اور پنشن منظوری کے 16 خطوط دیئے۔ ڈپٹی کمشنر نے مستفید افراد سے بات چیت کرتے ہوئے کہا کہ ضلع انتظامیہ ان مشکل حالات میں ہمیشہ ان کے ساتھ ہے اور مشکلات کے اس وقت میں ان کو مکمل تعاون کی یقین دہانی کرائی ہے۔