مزید خبرں

کشتواڑ میںتیرہ برسوں سے روپوش سابق جنگجوگرفتار

کشتواڑ//کشتواڑ پولیس نے گذشتہ تیرہ برسوں سے روپوش ایک سابق جنگجو کو گرفتار کرنے کا دعویٰ کیا ہے۔ ایک مصدقہ اطلاع  ملنے پر پولیس نے پولیس اسٹیشن اتھولی کی ایک ٹیم نے انسپکٹر سوہن سنگھ کی سربراہی میں کئی مشتبہ مقامات پر چھاپے مارے اور شالیمار کشتواڑ علاقے سے گذشتہ تیرہ برسوں سے روپوش ایک سابق جنگجو کو گرفتار کیا۔گرفتار شدہ کی شناخت نعیم احمد ولد بشیر احمد ساکن کشتواڑ کے بطور ہوئی ہے۔گرفتار شد ہ گان سے بڑ ے پیمانے کا پوچھ تاچھ شروع کیا گیا ہے۔ معا ملہ کی نسبت سے کیس درج کر کے مزید تحقیقات کا آغاز کیا گیا ہے
 
 

رام بن میں ڈرون ، اڑنے والی اشیاء کے استعمال پر پابندی 

رام بن//ضلعی مجسٹریٹ رام بن مسرت الاسلام نے ضلع میں ڈرون ، اڑنے والی اشیاء اور دیگر اڑنے والے کھلونوں کے استعمال پر پابندی عائد کردی ہے۔ڈی ایم کے جاری کردہ ایک حکم کے مطابق پابندی عائد کرنے کا حکم معاشرے میں لگاتار چھوٹے ڈرون کیمروں کے معاشرتی اور ثقافتی اجتماعات میں تصاویر اور ویڈیو عکس بندی اور ملک دشمن عناصر کے ذریعہ اس کے استعمال کے خطرے کے بعد کیا گیا ہے۔حکم کے مطابق اس اقدام سے اہم تنصیبات اور انتہائی آبادی والے علاقوں کے قریب فضائی خالی جگہوں کو محفوظ بنانے کے لئے موجودہ صورتحال میں کسی قسم کے الجھن سے بچنے میں مدد ملے گی۔حکم نامہ میںکہاگیا ہے’’ضلع میں کام کرنے والے کسی بھی ڈرون کا اے سی آر / ایس ڈی ایم کے ساتھ اندراج ہونا ضروری ہے ۔اس ڈرون اور اس کے آپریٹر کا مالک فرد یا املاک کو ہونے والے تمام نقصانات ، یا ڈرون کی غلط کاروائیوں یا خرابی کی وجہ سے ذمہ دار ہوگا‘‘۔ڈرون آپریٹرز کو ہدایت کی گئی ہے کہ وہ حکم نامے میں شامل تمام رہنما خطوط پر عمل کریں۔
 

  لڑکے اور لڑکی کی لاشیں درخت سے لٹکتی پائی گئیں

ریاسی//زاہد ملک//ضلع ریاسی کے تحصیل بھوماگ کے ہروٹکوٹ علاقہ میں١یک 26سالہ لڑکے اور19 لڑکی کی لاشیںایک درخت کے ساتھ لٹکی پائی گئیں۔دونوں لور درابی بھوماگ کے رہنے والے تھے۔بتایا جاتا ہے کہ دونوں لڑکا اور لڑکی گھر سے غائب تھے ۔اس کے بعد دونوں کی لاشیں ایک ہی درخت سے لٹکتی پائی گئیں۔پولیس نے تحقیقات شروع کر دی ہے۔
 

ٹرانسفر پالیسی میں غیر منصفانہ رویہ اختیار 

اساتذہ کے ساتھ ناانصافی ناقابل برداشت، سبھی کو اس زمرے میں لایا جائے :ٹیچرس فورم 

اشتیاق ملک
ڈوڈہ // ڈوڈہ میں ٹیچروں کے تبادلہ کی عارضی لسٹ تیار کرنے کے خلاف اساتذہ کی بیان بازی کا سلسلہ جاری ہے۔جموں و کشمیر ٹیچرس فورم نے ٹرانسفر پالیسی لاگو کرنے میں غیر منصفانہ رویہ اختیار کرنے کا الزام عائد کرتے ہوئے متعلقہ حکام کو تنقید کا نشانہ بنایا ہے۔صوبائی نائب صدر اسحاق رشید ملک و ضلع صدر ڈوڈہ چوہدری محمد یاسین نے دیگر اساتذہ کی موجودگی میں میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ سابق چیف ایجوکیشن آفیسر ڈوڈہ کی جانب سے ٹرانسفر پالیسی کے تحت مرتب فہرست سے ٹیچر طبقہ ناخوش ہے۔صوبائی نائب صدر نے کہا کہ پانچ سو کے قریب ایسے اساتذہ نے اپنے تبادلہ کے لئے درخواستیں جمع کیں تھیں جو پچھلے کئی برسوں سے اپنے گھروں سے دور ڈیوٹی دے رہے ہیں لیکن متعلقہ حکام نے صرف 80اساتذہ کو عارضی لسٹ میں شامل کیا ہے ان میں بھی بیشتر اپنے منظور نظر لوگوں کو شامل کیا گیا ہے۔ضلع صدر چوہدری محمد یاسین نے افسوس کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ ٹیچر طبقہ کو ہراساں کیا جارہا ہے۔انہوں نے کہا کہ اساتذہ کے ساتھ اس قسم کا سلوک برداشت نہیں کیا جائے گا۔ٹیچر فورم نے محکمہ تعلیم کے انتظامی سیکرٹری و ناظم تعلیم جموں سے مداخلت کی اپیل کرتے ہوئے اساتذہ کے ساتھ انصاف کرنے و ٹرانسفر پالیسی میں شفافیت لانے و ہر ٹیچر کو اس زمرے میں شامل کرنے کا مطالبہ کیا ہے۔
 

بجلی کے 33 کے وی ترسیلی نظام میں بار بار خرابی

سرکاری و نجی اداروں میں کام کاج متاثر، عوام بھی محکمہ کی کارکردگی سے ناخوش 

اشتیاق ملک
ڈوڈہ//ڈوڈہ ضلع میں بجلی کے 33 کے وی ترسیلی نظام میں بار بار خرابی آنے کے باعث درجنوں دیہات گھپ اندھیرے میں رہ رہے ہیں جبکہ دن کے اوقات میں بجلی بند رہنے سے سرکاری و نجی اداروں کا کام کاج بھی متاثر ہو رہا ہے۔کشمیر عظمیٰ سے بات کرتے ہوئے ڈوڈہ، بھدرواہ، ٹھاٹھری،بونجواہ،کاہرہ، گندوہ بھلیسہ سے آئے عوامی وفود نے کہا کہ جہاں ضلع میں پہلے ہی ناقص بجلی نظام کی وجہ سے مقامی آبادی کو شدید مشکلات کا سامنا کرنا پڑتا ہے وہیں پچھلے کئی دنوں سے متواتر 33 کے وی میں خرابی آرہی ہے جس کے نتیجے میں درجنوں دیہات بجلی سے محروم رہتے ہیں۔وفد میں شامل سابق سرپنچ لیاقت علی شیخ نے کہا کہ دہائیوں سے 33 کے وی ترسیلی نظام میں خرابی آتی ہے لیکن ستم ظریفی یہ ہے کہ محکمہ آج تک اس کی بہتر طریقے سے مرمت کرنے میں ناکام ثابت ہوا ہے۔انہوں نے کہا کہ 33کے وی میں بارشوں،آندھی و برفباری سے ہی نہیں بلکہ خوشگوار موسم میں بھی فالٹ ہوتا ہے۔وفد میں شامل شبیر احمد نامی ایک نجی کاروباری نے کہا کہ وہ ماہانہ طور پر کمرشل کرایا ادا کرتے ہیں لیکن 33 کے وی میں مسلسل خرابی کے باعث ان کا کاروبار بھی متاثر ہو رہا ہے۔انہوں نے کہا کہ پچھلے تین دنوں سے متواتر دن کو بجلی بند رہتی ہے۔عوام نے صوبائی و ضلع انتظامیہ سے 33 کے وی کے ترسیلی نظام کو بہتر بنانے کیلئے موثر اقدامات کرنے کا مطالبہ کیا ہے۔
 
 

رام بن میں تیل ٹینکر چناب برد،ڈرائیور لاپتہ

 ایم ایم پرویز
رام بن//جموں سرینگر قومی شاہراہ پر پیر اور منگل کی درمیانی شب جموں سرینگر قومی شاہراہ پر آنے والے کیفٹیریا موڑ سے پہلے مہاڑ پل کے قریب دریائے چناب میں ایک تیل ٹینکر گرنے کے بعد ڈرائیور لاپتہ ہوگیا۔پولیس ذرائع نے بتایا کہ تیل کا ایک ٹینکرزیر رجسٹریشن نمبر JK02BG-1773 لیہ مٹی کا تیل لے کر جارہا تھا کہ مہر پل کے قریب اس کے ڈرائیور کے قابوسے باہر چلا گیا۔حادثے کے فوراًبعد رام بن پولیس اسٹیشن کے اہلکار اور مقامی کیو آر ٹی رضاکار امدادی کارروائی کے لئے حادثے کی جگہ پہنچ گئے۔ انہوں نے کہا حادثے کے مقام پر کچھ بھی نہیں ملا۔پولیس ذرائع نے بتایا کہ اس حادثے میںگاڑی کا ڈرائیور جگدیش کمار (52) ولد چمن لال سکنہ درگا نگر سیکٹر نمبر 2 بن تالاب جموں لاپتہ ہوگیا۔یہ خیال کیا جارہا ہے کہ ہوسکتا ہے کہ وہ دریائے چناب کے پانی کے تیز دھاروں میں گاڑی کے ساتھ بہہ گیا ہو۔اس رپورٹ کے اندراج تک گاڑی اور گمشدہ ڈرائیور کا سراغ لگانے کیلئے ریسکیو آپریشن جاری ہے۔اس سے قبل پیر کے روز سرینگر جانے والے ایک ٹرک ڈگی پولی کے قریب چناب برد ہوئی تاہم پولیس نے گاڑی کے ڈرائیور کو بچا لیا۔
 

سانبہ میں لاڈلی بیٹی سکیم کے 244 نئے کیسوں کی منطوری

سانبہ//ڈپٹی کمشنرسانبہ انوردھا گپتا نے لاڈلی بیٹی اسکیم کے تحت 244 نئے کیسوں کی منظوری دی۔ لاڈلی بیٹی سکیم ایک مثبت اور قابل ذکر کوشش ہے کہ جنسی تناسب میں عدم توازن کو دور کرنے اور مالی اعانت فراہم کر کے پیدائش سے لے کر جوانی تک لڑکی کے بچے کے لئے مثبت مزاج پیدا کیا جائے۔ڈی سی سانبہ نے بچی کے مستقبل کے حصول کے مطلوبہ مقصد کے حصول کے لئے تمام اسٹیک ہولڈرز کی جانب سے ٹھوس کوششیں کرنے پر زور دیا۔ انہوں نے مزید کہا کہ اسکیم پر عمل درآمد کے عمل میں کسی مستحق فائدہ اٹھانے والے کو نہیں چھوڑا جانا چاہئے۔ انہوں نے کیسوں کی رونق سے بچنے کے لئے ہر ماہ لاڈلی بیٹی اسکیم کے تحت نئے معاملات چلانے کا فیصلہ کیا۔سکیم کے تحت ، درخواست دہندگان کے ذریعہ اسکیم میں طے شدہ معیارات کے تحت ، ایک بچی کی پیدائش کے لئے حکومت ہر ماہ 1000 روپے دیتی ہے۔
 
  
 

ڈوڈہ سے کورونا وائرس کے 21نئے معاملات 

۔26 مریض صحتیاب، 148438 فراد نے ٹیکے لگوائے 

اشتیاق ملک
ڈوڈہ //ڈوڈہ ضلع سے منگل کے روز کورونا وائرس کے 21نئے مثبت معاملات سامنے آئے ہیں اور 26مریض صحتیاب ہوئے ہیں۔اطلاعات کے مطابق ڈوڈہ، بھدرواہ، ٹھاٹھری ،گندوہ و عسر میں منگل کو ہوئی کوڈ جانچ کے دوران اکیس افراد کی ٹیسٹ رپورٹ مثبت آئی ہے جنہیں ہوم قرنطینہ میں رکھا گیا ہے اور اسطرح سے ضلع میں فعال کیسوں کی تعداد 207و شفایاب ہوئے مریضوں کی مجموعی تعداد 6608 پہنچ گئی ہے۔کورونا وائرس سے ضلع میں اب تک 119اموات ہوئیں ہیں اور 148438 افراد کو ٹیکے لگائے گئے ہیں۔

 

کووڈ ایس او پیر کی خلاف ورزی پر33ہزار کا جرمانہ

رام بن میں 3407 ٹیکے لگائے گئے ، 1496 نمونے جمع

رام بن//ضلع رام بن میں کووڈ پروٹوکول کے نفاذ کے لئے مہم کو جاری رکھتے ہوئے انفورسمنٹ ٹیموں نے چہرے کے ماسک پہنے بغیر گھومنے اور جسمانی فاصلہ برقرار نہ رکھنے پر متعدد خلاف ورزی کرنے والوں پر جرمانہ عائد کردیا۔نفاذ کرنے والی ٹیموں نے اپنے اپنے دائرہ اختیار میں معائنہ کے دوران 33ہزار200 روپے جرمانہ وصول کیا ۔انفورسمنٹ افسران نے لوگوں سے اپیل کی کہ وہ چہرے کے ماسک پہنیں اور جسمانی فاصلہ برقرار رکھیں اس کے علاوہ وہ اپنے قریبی سی وی سی میں کوویڈ ویکسی نیشن ڈوز لیں۔ ضلع امیونائزیشن آفیسرڈاکٹر سریش نے بتایا کہ منگل کے روز ضلع رام بن میں 3407 افراد کو پہلا اور دوسرا کوویڈ ویکسین کی خوراکیں فراہم کی گئیں۔چیف میڈیکل آفیسر ڈاکٹر محمد فرید بھٹ کی طرف سے جاری کردہ روزانہ بلیٹن کے مطابق محکمہ صحت نے 1496 نمونے اکٹھے کئے جن میں 355 آر ٹی-پی سی آر اور 1141 آر اے ٹی کے علاوہ ضلع میں وقفہ ٹیکہ لگانے والے مراکز میں 3407 افراد کو کوڈ ویکسین دی گئی۔
 

ریاسی میں 7 نئے کورونا معاملات

ریاسی//زاہد ملک//ریاسی ضلع میں گزشتہ 24گھنٹوں کے دوران 7 نئے مثبت معاملات سامنے آئے ہیں اس دوران 19 کروناوائرس کے مریض صحت یاب ہوکر اپنے گھروں کو واپس لوٹے ہیں۔ البتہ اس بیماری سے آج ضلع میں کوئی بھی موت نہیں ہوئی ہے۔ضلع میں ابھی ایکٹیو کیسز 307ہیں۔