مزاحمتی ومذہبی جماعتوں کا نورباغ کے غمزدہ خاندان سے اظہار یکجہتی

 سرینگر//لبریشن فرنٹ چیئرمین محمد یاسین ملک نے نور باغ ہلاکت کو سفاکانہ قتل قرار دیتے ہوئے کہا ہے کہ الیکشن اور اس میں ایک دوسرے کے ساتھ مقابلہ آرائیاں کرنے والے ہندنواز سیاستدان اور ان کی جماعتیںعوام پرڈھائے جارہے مصائب کے اصل ذمہ دار ہیں،اسلئے عوام کو ان انتخابات سے دور رہنا چاہئے۔یاسین ملک نور باغ میںایک تعزیتی مجلس سے خطاب کررہے تھے۔ انہوں نے محمد سلیم ملک کے لواحقین کے ساتھ یکجہتی کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ نور باغ کا رہنے والا ہر شخص یہ جانتا ہے کہ محمد سلیم ملک کو بھارتی فورسز نے جان بوجھ کرقتل کیااور اسے قتل کردینے کے بعد اس جرم کو چھپانے اور عوام کو گمراہ کرنے کیلئے معرکہ آرائی کا نام دیا ۔انہوں نے کہا کہ کشمیر میں کوئی ایسا دن نہیں گزرتا ،جب معصوموں کا لہو نہ بہایا جاتا ہو ۔انہوں نے مزید کہا کہ ایک طرف تو حکمران جمہوریت اور بلدیات و پنچایت انتخابات کے نام پر عوام کو بااختیار بنانے کی باتیں بناتے پھرتے ہیں اور دوسری جانب کشمیر میں معصوموں کوقتل کرنے کا سلسلہ، CASOاور کریک ڈائون کے نام پر لوگوں کی مار پیٹ اور تذلیل جاری ہے جبکہ گھروں کی توڑ پھوڑ اور بچوں کی گرفتاریوں کاچلن اور گرفتار شدگان پر پی ایس اے کا نفاذ کرکے انہیں بیرون کشمیر جیلوں میں منتقل کرنے کا عمل بھی جاری ہے ۔فرنٹ چیئرمین نے کہا کہ اسمبلی انتخابات ہوں یا پارلیمانی یا پھر بلدیات و پنچایتی الیکشن، اپنے مقدس مشن کے مفاد میں ان انتخابات کا مکمل بائیکاٹ کیا جائے۔ محمد سلیم ملک کے غمزدہ لواحقین کے ساتھ یکجہتی کا اظہار کرتے ہوئے ملک نے کہا کہ معصوم کشمیریوںکا خون بہانے کابے دریغ سلسلہ جاری ہے جسے کبھی فراموش نہیں کیا جائے گا۔ یاسین ملک کے ہمراہ شیخ عبدالرشید،محمد صدیق شاہ، بشیر احمد کشمیری اور غلام محمد ڈار تھے۔تحریک مزاحمت کے چیئرمین بلال احمد صدیقی اور اسلامک پولٹیکل پارٹی کے چیئرمین محمد یوسف نقاش نے ریاض احمد، محمد رفیق، اعجاز احمد، مظفر احمد اور سجاد احمد کے ہمراہ نور باغ جاکر محمد سلیم ملک کے لواحقین کے ساتھ اظہار یکجہتی کا اظہار کیا۔انہوں نے تعزیتی مجلس سے خطاب کرتے ہوئے محمد سلیم کی ہلاکت کو فورسز کے ہاتھوں کشمیری عوام کے قتل عام کی تازہ کڑی قرار دیتے ہوئے کہا کہ افسپا جیسے قانون کے سایہ تلے فورسز نے جموں کشمیر میں مظالم ڈھانے کاایک نہ تھمنے والا سلسلہ دراز کر رکھاہے۔بلال احمد صدیقی نے کہا کہ ان قربانیوں کی ہر قیمت اور ہر صورت میں حفاظت کی جائے گی۔عوامی مجلس عمل کے سربراہمیرواعظ محمد عمر فاروق کی ہدایت پر تنظیم کے ایک وفدنے غمزدہ خاندان سے تعزیت پرسی کی۔وفدمیں مشتاق احمدصوفی، پیر غلام نبی، محمد یوسف بٹ، محمد صدیق ہزاراور تنظیم کے حلقہ صفاکدل کے صدر غلام حسن خان اور رکن غلام قادر شامل تھے۔اس موقعہ پروفد نے محمد سلیم ملک کے والد اور دوسرے لواحقین تک میرواعظ کا تعزیتی پیغام پہنچایا ۔دریں اثناء عوامی مجلس عمل نے کشمیر کے شمال و جنوب میں CASO کی آڑ میں انتخابات کو بنیاد بنا کر حریت پسند قائدین اور کارکنوں کی پکڑ دھکڑ اور انہیں پابند سلاسل کرنے کی مذمت کرتے ہوئے کہا کہ ریاستی حکمرانوں کے اس طرح کے آمرانہ حربوں کا مقصد یہاں کے حریت پسند عوام کے جذبہ آزادی کو کچلنے اور نوجوانوں کو طاقت کے بل پر پشت بہ دیوار کرکے بھارتی عزائم کی تکمیل کیلئے راہ ہموار کرنا ہے ۔ بیان میں جنوبی کشمیرمیں ایک عسکریت پسند سمیر احمد بٹ کے آبائی مکان کو فورسز کی جانب سے نذر آتش کئے جانے کی مذمت کرتے ہوئے اسے  انتقام گیری کا بدترین مظاہرہ قرار دیا گیا ۔سالویشن مومنٹ وفود نے نورباغ سرینگر اور نہامہ میں غمزدہ کنبوں سے تعزیت پرستی کی۔غازی جاوید،مفتی مدثر قادری نے نورباغ جبکہ مولانا رفیق،گوہر حسین اور جاوید احمد پر مشتمل وفد نے نہامہ میں لواحقین سے تعزیت پرستی کی۔ پارٹی ترجمان نے وادی میں تازہ گرفتاریوں پر شدید ردعمل کا اظہار کرتے ہوئے اُن کی غیر مشروط رہائی کا مطالبہ کیا۔دریں اثناء سالویشن مومنٹ چیئرمین ظفر اکبر بٹ نے کئی اسپتالوں میں زیر علاج زخمیوں کی عیادت کی۔ انہوں نے نوجوانوں کی جلد صحتیابی کے لئے دعاکی اور ان کے اہل خانہ سے یکجہتی کا اظہار کیا۔