مخلوط حکومت ہر محاذ پر ناکام

 بٹوت// نیشنل کانفرس صوبہ جموںکے نائب صدر وسابقہ ممبر اسمبلی حلقہ رام بن ڈاکٹر چمن لعل بھگت نے وزیراعلیٰ محبوبہ مفتی کی سربراہی والی موجودہ ریاستی مخلوط حکومت کی کارکردگی کو ناکام وناقص قرار دیتے ہوے کہا کہ بی جے پی ۔ پی ڈی پی اتحاد پر مشتمل حکومت ریاستی عوام کو درپیش روز مرہ مسائل ومشکلات سے نجات دلانے میںپوری طرح سے ناکام ثابت ہوئی ہے اس سلسلے میںاسمبلی حلقہ رام بن کے قصبہ عسر اور رام گڑ میں منعقد ہ عوامی میٹنگوں میں قصبہ جات کے عوام کو درپیش مسائل و مشکلات کی تفصلات سے آگاہی حاصل کرنے کے بعد وہاںموجود ذرائع ابلاغ کے نمائیندوں سے بات کرتے ہوے ڈاکٹربھگت نے بتایا کہ دور دراز پہاڑی پسماندہ علاقہ جات پر مشتمل ضلع ڈوڈہ کی تحصیل وسب ڈویژن عسر کو حکومت نے تعمیر و ترقی اوربنیادی سہولتوں کی فراہمی کے نام پر بُری طرح سے نظر اندازکر رکھا ٰہے اُنہوں نے کہا کہ تحصیل عسر کے واحد پرایمری ہیلتھ سنٹر گورنمنٹ ہسپتال عسر میں ڈاکٹروںکی تقربیاً ساری اسامیاں خالی پڑی ہوئی ہیں ہسپتال میں نیم طبی عملے کی سخت قلت ہے۔ علاقے میں سابقہ کئی سالوں سے زیر تعمیر سڑکوں کا کام آدھا ادھورہ پڑا ہواہے۔بیشتر گورنمنٹ سکولوں میںمنظور شدہ اساتذہ کی اسامیاںبڑے پیمانے پر خالی پڑی ہونے کی وجہ سے سکولوں میںزیرتعلیم طلبہ کی پڑھائی بُری طرح متاثر ہو رہی ہیلوگوں کی بڑی تعدادآج کے ترقیافتہ جدید دور میں بھی بجلی اور پینے کے صاف پا نی جیسی بنیادی سہولیات سے محروم زندگی جینے پر مجبور ہیں۔ لہذا ان حالات سے پریشان و مایوس عسر وگرد نواح کی عوام موجودہ ریاستی مخلوط حکومت سے نجات کے متمنی ہیں اس موقعہ پرڈاکٹر چمن لعل کے ہمراہ نیشنل کانفرنس ضلع رام بن کے سکریڑی عارف میر اورپارٹی کے ضلع یوتھ صدر رام بن محمدفاروق غازی بھی موجود تھے۔