لیفٹیننٹ گورنر کا بجلی کی سپلائی پوزیشن کا جائز

سرینگر//لیفٹیننٹ گورنر منوج سنہا نے بجلی کی فراہمی کی پوزیشن میں بہتری اور بلا تعطل فراہمی کیلئے محکمہ پاور ڈیولپمنٹ کو ہدایت دی کہ وہ سخت اور جدید اقدامات متعارف کرائے تا کہ لوگوں کی بجلی کی ضروریات کو پورا کرنے میں مختلف چیلنجوں کا مقابلہ کیا جا سکے ۔  لیفٹیننٹ گورنر نے محکمہ بجلی کو ہدایت دی کہ وہ بجلی کی ترسیل اور تقسیم کے نظام کو ہموار کرنے کیلئے عملی طور پر اپنائے جانے والے نقطہ نظر کو اپنائے ، اس کے علاوہ کوالٹی کنٹرول سسٹم کو نافذ کرے اور صارفین کو بجلی کے مختلف وسائل کے اچھے مرکب کے ساتھ معیاری بجلی کی فراہمی کیلئے طویل مدتی حکمت عملی طے کرے ۔ لیفٹیننٹ گورنر نے اے ٹی اینڈ سی نقصانات کو کم سے کم کرنے کیلئے مخصوص ہدایات دیں ۔ لیفٹیننٹ گورنر نے عہدیداروں کو ہدایت دی کہ اے ٹی اینڈ سی نقصانات کو کم سے کم کرنے کیلئے پیش قدمی اقدامات کریں ۔ فیڈروں کی مؤثر گشت پر زور دیتے ہوئے لیفٹیننٹ گورنر نے فیڈر کے نقصانات کے ذمہ دار عہدیداروں کے خلاف سخت کارروائی کرنے کی ہدایت دی ۔ انہوں نے فیڈر کے نقصانات کے ضمن میں افسران کی سالانہ کارکردگی کی رپورٹوں میں وزن میں پچاس فیصد وزن کے معیار کو طے کرنے کی ہدایت دی ۔ لیفٹیننٹ گورنر نے بجلی کی کھپت پر حقیقی وقت کی نگرانی ، محصولات کی وصولی میں اضافہ ، بلنگ کی استعداد کار میں بہتری ،بجلی کی کٹوتیوں میں کمی اور کم وولٹیج کے مسئلے پر توجہ دینے پر زور دیا ۔ لیفٹیننٹ گورنر نے پی ڈی ڈی کارکنوں کو ہدایت دی کہ قابل افرادی قوت کو تعینات کریں اور اعلیٰ بجلی کی کھپت والے شہروں اور قصبوں کیلئے ایک جامع منصوبہ مرتب کریں ۔ بجلی کے انفراسٹرکچر کو ان کی پوری صلاحیت تک استعمال کو یقینی بنانے کیلئے اقدامات کرنے والے تدابیر اختیار کریں ۔ لیفٹیننٹ گورنر نے دور دراز علاقوں میں بجلی کے رابطے کو مستحکم کرنے پر زور دیا۔ لیفٹیننٹ گورنر نے محکمہ فیلڈ افسران کی استعداد کار کو بہتر بنانے کے لئے اِختراعی اِقدامات اُٹھانے کی تجویز پیش کی اور انہوں نے فیلڈ عملے کو ان کی بہتر کارکردگی پر حوصلہ افزائی کرنے کے لئے کہا۔اُنہوں نے مزید کہا کہ اس سے نہ صرف زمینی سطح  پرکام کے معیار میں اضافہ ہوگا بلکہ محصولات کی پیداوار کو بہتر بنانے میں بھی مدد ملے گی۔اُنہوںنے مستقبل کے لئے پیشگی اِنتظامات کرنے پر خصوصی زور دیتے ہوئے محکمہ سے کہا کہ وہ سردیوں کے لئے پہلے سے تیا ر ہوجائیں اور 20 ؍ جولائی سے اَپنی تیاریوں کا آغاز کریں۔پرنسپل سیکرٹری پاور ڈیولپمنٹ ڈیپارٹمنٹ روہت کنسل نے میٹنگ کو جموںوکشمیر میں بجلی کی مجموعی صورتحال اور بجلی کی صلاحیت کے بارے میں جانکاری دی۔انہوں نے کہا کہ پانپور میں 6 میگاواٹ سولر پاور پلانٹ کا قیام عمل میں ہے ۔ اس کے علاوہ محکمہ بارہمولہ میں 10.5 میگاواٹ کے ہیرٹیج پاور پروجیکٹ ‘موہرا کو بھی بحال کرنے کا منصوبہ بنا رہا ہے۔