لورن ٹنگمرگ سڑک کی تعمیر دو برسوں سے تعطل کا شکار | فنڈز نہ ہونے کی وجہ سے کام بند پڑا ہے :تحصیلدار

منڈی//خطہ پیر پنچال کو وادی کشمیر سے جوڑنے والی لورن ٹنگمرگ سڑک پر تعمیری کام گزشتہ دو برسوں سے بند پڑا ہوا ہے اگر چہ محکمہ گریف کی جانب سے ابھی تک اس سڑک کی تعمیر محض 9 کلو میٹر کی گئی ہے مگر حکام کے مطابق تعمیری کام کیلئے رقومات نہ ہونے کی وجہ سے تعمیری کام رکا پڑا ہوا ہے۔واضح رہے کہ لورن ٹنگمرگ سڑک کی تعمیر کا کام سال 2015 میں اس وقت کے ریاستی وزیر اعلیٰ مرحوم مفتی محمد سعید نے شروع کروایا تھا اور اس سڑک کی تعمیر کو مکمل کرنے کا ہدف 2برس رکھا گیا تھا تاہم اس کے باوجود 7سال گزر جانے کے باوجود بھی اس سڑک کی تعمیر محض نو کلو میٹر تک ہی ہو سکی ہے۔ذرائع کے مطابق پہلے تو اس سڑک کی تعمیر محکمہ گریف کے پاس تھی جنہوں نے بعد ازاں اس پروجیکٹ کی تعمیر کو چھوڑ دیا تھا ۔رابطہ کرنے پر تحصیلدار منڈی شہزاد لطیف خان نے کشمیر عظمی کوبتایا کہ اس سے قبل محکمہ گریف اس سڑک کی تعمیر کروارہا تھا اب جبکہ اس سڑک کی تعمیر بی اے ڈی پی سکیم کے تحت ہونا ہے ۔ان کا کہنا تھا ابھی تک سرکاری کی جانب سے سڑک کی دوبارہ تعمیر کیلئے رقوامات واگزار نہیں کی گئی ہیں جونہی سرکار کی جانب سے رقومات واگزار کی جائیں گی تو سڑک کی تعمیر کا کام دوبارہ شروع کیا جائے گا۔