لفٹ سکیم نیلی ڈاب 12برسوں کے بعد بھی مکمل نہ ہو سکی

مینڈھر //سب ڈویژن مینڈھر کی نیلی ڈاب لفٹ واٹر سپلائی سکیم گزشتہ 12برسوں سے مقامی لوگوں کو پینے کا صاف پانی فراہم نہیں کر سکی جس کی وجہ سے لوگوں کو پینے کا صاف پانی کئی کلو میٹر کی مسافت طے کر کے لانا پڑرہا ہے ۔مقامی لوگوںنے محکمہ جل شکتی کو تنقید کا نشانہ بناتے ہوئے کہاکہ بارہ برس قبل لفٹ واٹر سپلائی سکیم کی تعمیر کا عمل شروع کیا گیا تھا لیکن ابھی تک واٹر سپلائی سکیم کا ایک حصہ بھی مکمل نہیں ہو سکا ہے جبکہ کسی بھی زمرے کے ٹینک تعمیر نہیں کئے جاسکے ہیں ۔انہوں نے بتایا کہ محکمہ نے کروڑوں روپے خرچ کرنے کے بعد ایک پائپ لائن ایک پرانے واٹر سپلائی ٹینک تک پہنچائی تھی جبکہ اس کو شروع کرنے کیساتھ ہی مشینری کی موٹر خراب ہو گئی جس کی وجہ سے عوام کی مشکل جوں کی توں ہی رہی ۔انہوں نے الزام عائد کرتے ہوئے کہاکہ محکمہ کے میکینکل شعبہ کی لاپرواہی کی وجہ سے مشینری کئی عرصہ تک کھلے عام پڑی رہی جبکہ لوگوں کی جانب سے شور مچانے کے بعد اس کو نصب کیا گیا لیکن غیر معیاری مشینری ہونے کی وجہ سے نصب کرنے کیساتھ ہی موٹر خراب ہو گئی ہے ۔انہوں نے کہا کہ میکینکل شعبہ کی غیر سنجیدگی کی وجہ سے مینڈھر سب ڈویژن میں 70فیصد واٹر سپلائی سکیمیں اس وقت مکمل طورپر ناکارہ ہوگئی ہیں ۔انہوں نے مانگ کرتے ہوئے کہاکہ نیلی ڈاب واٹر سپلائی سکیم کی تعمیر کیلئے محکمہ کو ہدایت جاری کی جائیں تاکہ لوگوں کو پانی فراہم ہو سکے ۔