لداخ سے ارونا چل پردیش تک 180چوکیاں چینی سرحدکیساتھ ہر چوکی پر انٹیلی جنس افسران تعینات ہونگے

عظمیٰ نیوز سروس

ماگو (اروناچل پردیش)// لداخ سے اروناچل پردیش تک ہندوستان-چین سرحد کے ساتھ انڈو تبتین بارڈر پولیس (ITBP) کی سرحدی چوکیوں پر نگرانی اور معلومات اکٹھا کرنے کے لیے انٹیلی جنس افسران کی اضافی ٹیمیں تعینات کرے گی۔ اعلی ذرائع نے بتایا کہ مرکزی حکومت نے اس سیٹ اپ کے قیام کی تجویز کو منظوری دے دی ہے جسے بارڈر انٹیلی جنس پوسٹ (بی آئی پی) کے نام سے جانا جائے گا۔یہ اقدام سرحد پر بڑھتی ہوئی چینی سرگرمیوں اور چین کی پیپلز لبریشن آرمی کی جانب سے ہونے والی خلاف ورزیوں کے پیش نظر اہمیت کا حامل ہے۔لداخ میں ہندوستانی فوج اور پی ایل اے کے درمیان جون 2020 سے تعطل جاری ہے۔ ہر ایک بی آئی پی کی نگرانی انٹیلی جنس بیورو کے چار سے پانچ اہلکار کریں گے اور آئی ٹی بی پی کے اہلکار ان کی حفاظت کریں گے۔وہ اہلکار جو BIPs میں تعینات ہوں گے وہ سرحد کے پار ہونے والی سرگرمیوں پر نظر رکھیں گے اور اعلی حکام اور حکومت کے ساتھ اپ ڈیٹس کا اشتراک کریں گے۔ماگو اروناچل پردیش کے توانگ ضلع کے چونا سیکٹر میں چین کی سرحد کے قریب پہلا گائوں ہے۔گائوں میں صرف 2020 میں ایک آل ٹیرین موٹر ایبل سڑک بنائی گئی تھی۔پوری ہندوستان-چین سرحد کے ساتھ ساتھ ITBP کی تقریباً 180 سرحدی چوکیاں (BOPs) ہیں اور حال ہی میں مزید 45 کے قیام کی منظوری دی گئی ہے۔