لاش کی حوالگی پر پلوامہ میں تشدد بھڑک اُٹھا

پلوامہ // قصبہ میں منگل کی شام اس وقت تشدد بھڑک اٹھا جب بامنو میں ریاسی کے ایک جاں بحق جنگجو کی ماں اور چیچرا بھائی لاش لینے کیلئے پولیس لائنز پہنچ گئے۔اس موقعہ پر انہیں بتایا گیا کہ بامنو میں انکا بیٹا نہیں بلکہ ایک غیر ملکی جنگجو مارا گیا ہے اور لاش ریاسی کے جنگجو کی نہیں ہے۔اس کے بعد مذکورہ جنگجو کے والدین اور انکے گنو پورہ امام صاحب کے کچھ رشتہ دار قصبے میں آئے اور انہوں نے مقامی لوگوں سے لاش کی حوالگی کے بارے میں تعاون حاصل کیا۔اس موقعہ پر قصبے میں مساجد کے لاوڈ اسپیکروں سے اعلان کیا گیا اور کافی تعداد میں لوگ سڑکوں پر نکل آئے اور انہوں نے جلوس نکال کر نعرے بازی کی۔اس موقعہ پر پولیس نے مظاہرین کو منتشر کرنے کیلئے شلنگ کی اور ہائی فائرنگ کا سہارا لیا۔پولیس نے بتایا ہے کہ مذکورہ جنگجو کی لاش کو اسکے رشتہ داروں کے حوالے کرنے کا فیصلہ کیا گیا ہے۔