لاشوں کو گنگا میں بہانے پر روک لگانے کے لئے عرضی دائر

نئی دہلی//یو این آئی// ملک کے مختلف ریاستوں میں گنگا ندی میں بہتی لاشیوں کو نکالنے اور مرنے والوں کی مناسب اوراحترام کے ساتھ آخری رسومات کرنے کے لئے اسٹینڈرڈ آپریٹنگ پروسیجر(ایس او پی) طے کرنے کی گائڈلائنس جاری کرنے کی مانگ پر ایک عرضی سپریم کورٹ میں دائر کی گئی ہے ۔یوتھ بار ایسوسی ایشن آف انڈیا کی طرف سے وکیل منجو جیٹلی کے ذریعہ دائر کی گئی مفاد عامہ کی عرضی میں اترپردیش اور بہار میں گنگا ندی میں بہتی ملی لاشوں کا حوالہ دیکر مانگ کی گئی ہے کہ کوروناوائرس کے مرنے والوں کو مناسب اور احترام کے ساتھ آخری رسومات ادا کرنے کے لئے ایس او پی طے کرنے کی گائڈ لائنس جاری کی جائیں۔عرضی گزار نے مختلف ریاستوں کے چیف سکریٹریوں اور متعلقہ ضلع مجسٹریٹوں کو یہ یقینی بنانے کی ہدایت دینے کی درخواست کی کہ ہے کسی بھی ندی میں لاش نہ پھینکی جائے اور ایسا کرنے کے قصورواروں کے خلاف سخت کارروائی کی جائے ۔ عرضی گزار کا کہنا ہے کہ مرنے والے حقوق کی حفاظت کرنا بھی حکومت کا فرض ہے جس میں احترام کے ساتھ آخری رسومات ادا کرنے کا حق بھی شامل ہے ۔