قیامِ امن کیلئے ہندوپاک بات چیت لازمی:حکیم یاسین

 سرینگر//پی ڈی ایف چیئرمین اور ممبر اسمبلی خانصاحب حکیم محمد یاسین نے اُمید ظاہر کی ہے کہ ہندو پاک کے درمیان صلح اور قیام امن کیلئے نئے سرے سے ٹریک ٹو ڈپلومیسی جیسے اعتماد سازی کے اقدامات سے ہی برِ صغیر میں امن کا سورج طلوع ہوسکتا ہے۔ اُنہوں نے اُمید ظاہر کی  کہ عالمی سطح پر قیامِ امن کیلئے تیزی سے اُبھررہی طلب و خواہش کے مثبت اثرات ہندوستان اور پاکستان کے سیاسی اُفق پر بھی نمودار ہونگے۔حکیم یاسین رعیارخانصاحب میں ایک عوامی اجتماع سے خطاب کررہے تھے۔انہوںنے ہندو پاک کی سیاسی و فوجی قیادت پر زور دیا کہ وہ مسئلے کشمیر کے بارے میں اپنے سخت رویہ میں لچک پیداکرکے اپنے تمام حل طلب معاملات کو افہام و تفہیم اور گُفت و شنید کے ذریعے حل کریں۔انہوںنے کہا کہ دو ہمسایہ ممالک کے درمیانہ رسہ کشی اور دشمنی کا خمیازہ براہ راست ریاست کے لوگوں کو بھگتنا پڑ رہا ہے حالانکہ یہاں کے لوگ قیام امن کیلئے دہائیوں سے تڑپ رہے ہیں۔