قومی برقی تحفظ ہفتہ

 ہمارامقصد صفر حادثات کے نظام کو یقینی بنانا ہے:روہت کنسل

سری نگر//پرنسپل سیکرٹری پاور ڈیولپمنٹ ڈیپارٹمنٹ روہت کنسل نے کہاہے کہ محکمہ کا مقصد صفر حادثات کے نظام کو یقینی بنانا ہے۔ اُنہوں نے اِن خیالات کا اظہار  قومی برقی تحفظ ہفتہ منانے کے دوران منعقدہ ایک تقریب سے خطاب کرنے کے دورا ن کیا۔اُنہوں نے یہ بھی کہا کہ محکمہ اِس برس مختلف حفاظتی آلات کے لئے قریباً پانچ کرو ڑ روپے خرچ کر رہا ہے ۔ اُنہوں نے اس بات کا بھی انکشاف کیا کہ رواں سال فیلڈ لیول پر 12,000 ملازمین کا اِنشورنس کیا گیا ہے۔ واضح رہے کہ ملک بھر میں 26 جون سے 2 جولائی تک کا ہفتہ الیکٹریکل سیفٹی وِیک کے طور پر منایا جارہا ہے اور اِس سلسلے میں متعدد تقریبات ، سیفٹی ورکشاپوں اور موک ڈرل کا اِنعقاد کیا جارہا ہے ۔جموں وکشمیر میں بھی پی ڈی ڈی کے مختلف ڈویژنوں اور دفاتر میں ہفتہ منایا جارہا ہے اور عملہ اور اَفسران کو حفاظتی وعدوں کا اِنتظام کیا جارہا ہے ۔جموں میں اِس کی قیادت کارپوریشنوں ، جے پی ڈی سی ایل اور جے کے پی ٹی سی ایل کے منیجنگ ڈائریکٹران گرمیت سنگھ اور نصیب سنگھ نے کی۔روہت کنسل نے سری نگر میں الیکٹرک ڈویژن راج باغ میں منعقدہ تقریب سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ حفاظت یک وقتی یا جزو قتی معاملہ نہیں ہوسکتا ہے اور ایس او پیز کے مستقل چوکسی اور عمل در آمد ضروری ہے ۔ اُنہوں نے ہرسطح کی حفاظت خواہ وہ ذاتی تحفظ ہو یا نظام تنہائی اور دیگر حفاظتی سامان کو یقینی بنانے پر زور دیا۔اُنہوں نے مزید عملے کو خصوصا فیلڈ سٹاف سے نظام کی حفاظت کے اِقدامات کو اپیل کرنے کی تاکید کی۔ انہوں نے انہیں ہدایت دی کہ وہ ایس او پیز کے مطابق کام کر کے فیڈر منیجروں کے ساتھ رابطہ کریں تاکہ ان کے مابین کسی قسم کی غلط فہمی پیدا نہ ہو۔ انہوں نے کہا کہ اگر تمام پروٹوکول ایس او پیز کو وفاداری کے ساتھ نافذ کیا گیا تو حادثات کے امکانات ختم ہوجائیں گے۔روہت کنسل نے مزید زور دے کر کہا کہ فیڈر منیجروں اور دیگر عملہ حفاظت کے لئے جواب دہ ہے اور وہ اس بات کو یقینی بنائے کہ مرمت سے متعلق کسی بھی کام کو لینے سے پہلے ہر سطح پر مناسب مواصلت کی جائے تاکہ شٹ ڈاؤن کو یقینی بنایا جاسکے۔ انہیں ذاتی حفاظت کے گیئر جیسے سیفٹی بیلٹ ، ہینڈ دستانے ، ہیلمیٹ ، ربڑ کے تلووں اور عکاس جیکٹس کے جوتے کی حوصلہ افزائی اور اس کو یقینی بنانا چاہئے۔ انہوں نے متنبہ کیا کہ حادثات میں صفر رواداری ہوگی۔اِس موقعہ پر منیجنگ ڈائریکٹر کے پی ڈی سی ایل بشارت قیوم نے انکشاف کیا کہ کارپوریشن نے فیلڈ عملے کے تحفظ کے لئے حفاظتی سازوسامان حاصل کیا ہے اور اس میں ایچ ٹی لائنوں پر الگ تھلگ کی تنصیب اور دیگر نظامی اقدامات شامل ہیں۔ انہوں نے فیلڈ سٹاف کو ہدایت دی کہ سیفٹی گیئر اور دیگر اقدامات کے استعمال میں کسی قسم کی ہچکچاہٹ محسوس نہیں ہونی چاہئے کیونکہ انسانی جانیں کسی بھی چیز سے قیمتی ہیں۔بعد میں پرنسپل سیکرٹری نے الیکٹرک سب ڈویژن راج باغ کے فیلڈ سٹاف میں سیفٹی گیئر جیسے ہینڈ دستانے ، جیکٹس وغیرہ تقسیم کیں ۔ اُنہوںن ے اِن سب کی حوصلہ افزائی کی کہ وہ ان کی حفاظت کے لئے تقسیم شدہ مواد سے بھرپور فائدہ اُٹھائیں۔بعد ازاں پرنسپل سیکرٹری نے الیکٹرک سب ڈویڑن ، راج باغ کے فیلڈ اسٹاف میں سیفٹی گیئر جیسے ہینڈ دستانے ، جیکٹس وغیرہ تقسیم کیں۔ انہوں نے ان سب کی حوصلہ افزائی کی کہ وہ ان کی حفاظت اور حفاظت کے لئے تقسیم شدہ مواد سے بھر پور فائدہ اٹھائیں۔