قربانیاں تحریکی ورثہ:مزاحمتی خیمہ

 سرینگر//حریت (گ)، حریت (ع)،ہائی کورٹ بار ایسوسی ایشن،تحریک مزاحمت ،نیشنل فرنٹ،لبریشن فرنٹ ( آر ) اور سالویشن مومنٹ اننت ناگ معرکہ میں جاں بحق ہوئے جنگجوئوں کو خراج عقیدت پیش کیا ہے۔حریت (گ)چیئرمین سید علی گیلانی نے جھڑپ میںجاں بحق ہوئے الطاف احمد ڈار اور عمر رشید وانی کو خراج عقیدت ادا کرتے ہوئے اُن کی قربانیوں کو تحریکی ورثہ قرار دیا اور ان قربانیوں کا قرض چکانے کے لیے کشمیری قوم پچھلے 71برسوں سے بھارت کیخلاف برسرِ جدوجہد ہیں۔ حریت رہنما نے فوج اور پولیس کی جانب سے شہری آبادی کو راست فائرنگ، پیلٹ اور ٹئیرگیس شلنگ کا نشانہ بنانے کی کارروائی کو بزدلانہ حرکت قرار دیتے ہوئے اس کی مذمت کی ہے۔ گیلانی نے ایک بار پھر اس حقیقت کا اعادہ کرتے ہوئے کہا کہ ہمارے جوانوں نے بھارت کے خلاف ردّعمل کے طور پر مسلح جدوجہد شروع کی ہے اور اپنی اٹھتی جوانیوں کا نذرانہ پیش کرتے ہوئے تحریک آزادی کو اپنے گرم گرم خون سے آبیاری کررہے ہیں۔ حریت (ع) نے خراج عقیدت ادا کرتے ہوئے کہا ہے کہ اس قوم کو محکومیت کے شکنجے سے آزاد کرانے کیلئے اپنی جانیں قربان کرنے والوں کے ایثار اور قربانی کو فراموش نہیں کیا جاسکتا اور ان کی قربانیاں ہر لحاظ سے تحریک آزادی کشمیر کیلئے اثاثے کی حیثیت رکھتی ہیں۔بیان میں کہا گیا کہ حکومت ہندوستان کی جانب سے ظلم و جبر سے عبارت پالیسیاں اور یہاں کی نوجوان نسل کو طاقت کے بل پر پشت بہ دیوار کرنے کا عمل کشمیرکی نوجوان نسل کو عسکریت کا راستہ اختیار کرنے پر مجبور کررہی ہیںاورحکمرانوں نے جس طرح تمام مسلمہ جمہوری اور انسانی اصولوںکو بالائے طاق رکھ کر یہاں کے عوام کو ظلم و جبر کا نشانہ بنانے کی معاندانہ روش اختیار کی ہے وہ ہر لحاظ سے انتہائی تشویشناک اور قابل مذمت ہے۔بیان میں کہا گیا کہ مسئلہ کشمیر کے حل کو التوا میں رکھنے کی پالیسی نہ صرف کشمیر میں خونین واقعات کو جنم دینے کا باعث بن رہی ہے بلکہ اس طرح کے عمل سے اس پورے خطے کا امن و استحکام دائو پر لگا ہوا ہے اور وقت آگیا ہے کہ اس خطے کے محفوظ مستقبل کی خاطر اس مسئلہ کو یہاں کے عوام کی خواہشات کے مطابق حل کرنے کیلئے بامعنی اقدامات کئے جائیں۔ہائی کورٹ بار ایسو سی ایشن نے جھڑپ میں جاں بحق ہوئے جنگجوئوں کو خراج عقیدت ادا کرتے ہوئے پولیس اور فورسز کے ہاتھوں عام شہریوں پر طاقت کے استعمال کی مذمت کی ہے۔تحریک مزاحمت کے چیئرمین بلال احمد صدیقی نے خراج عقیدت ادا کرتے ہوئے کہا کہ ’ہمارے نوجوان ایک ہٹ دھرم اور طاقتور حریف کے مقابل کھڑے ہوکر بے سر وسامان مزاحمت کی ایک عظیم داستان رقم کر رہے ہیں۔دریں اثناء بلال احمد صدیقی نے مسلم لیگ رہنماء  فیروز احمد خان پر پی ایس اے کے اطلاق کی مذمت کرتے ہوئے کہا کہ اس سے انتظامیہ کی سیاسی ہار واضح ہوجاتی ہے۔نیشنل فرنٹ نے خراج عقیدت ادا کرتے ہوئے کہا ہے کہ یہی جوان رواں جد و جہد آزادی کا اصل ورثہ ہیں۔ پارٹی ترجمان نے کہا ہے کہ جو اپنی زندگیاں نچھاور کرکے تحریک آزادی کی آبیاری کررہے ہیں،وہ ہمارے اصل ہیرو ہیں اور ہم اُن کے مقروض ہیں۔لبریشن فرنٹ ( آر ) کے سرپرست اعلیٰ بیرسٹر عبدالمجید ترمبو اور ایڈوکیٹ ایوب راٹھور نے اپنے مشترکہ بیان میں خراج عقیدت ادا کرتے ہوئے کہا کہ سامان حرب و ضرب کے فقدان کے باوجود ان جوانوں کے جذبہ استقامت کے اظہار نے اس بات کو ثابت کیا کہ ایک بڑی قوت کا مقابلہ کرتے ہوئے وہ اپنے جذبہ آزادی کا بھرپور مظاہرہ کررہے ہیں۔سالویشن مومنٹ چیئرمین ظفر اکبر بٹ نے خراج عقیدت ادا کرتے ہوئے کہا کہ آزادی کی خاطر دی جانے والی قربانیاں رائیگان نہیں جائیں گی اور عوام اپنی سیاسی جدوجہد مسئلہ کشمیر کے منصفانہ حل تک جاری رکھیں گے۔