قدرتی حسن سے مالامال چک لائوسہ ماور میں بنیادی سہولیات کا فقدان پل کی عدم دستیابی ،7دہائیو ں سے عوامی آ واز بے اثر، کوئی پُرسان حال نہیں

اشرف چراغ

 

کپوارہ//آج کے ترقی یافتہ دور میں ضلع کپوارہ کے کچھ علاقے ایسے ہیں جہا ں تعمیر و ترقی نے دہائیو ں سے دم تو ڑ دیا ہے ۔علاقہ ماور میں بھی ایسا ہی ایک گائو ںچک لائوسہ ہے جہا ں تعمیر وترقی نہ ہونے کے برابر ہے لیکن اس گائو ں کو قدرت نے اپنے حسن نے نوازا ہے۔ َتحصیل صدر مقام قلم آباد ماور سے چند کلو میٹر کے فاصلے پر چک لائوسہ کی چھو ٹی سی بستی جنگلات کے دامن میں واقع ہے ۔ چک لائوسہ کو قدرت نے اپنے بے پناہ حسن سے نوازا ہے اور بل کھاتی نالہ ماوری اس گائو ں کے حسن میں چار چاند لگا دیتی ہے ۔مقامی لوگو ں کا کہنا ہے کہ علاقہ ماور کے آس پاس کے لوگ اس گائو ں میں سیر کو آتے تھے لیکن ایسے خوبصورت گائو ں کے ساتھ آج کے ترقی یافتہ دور میں بنیادی سہولیات سے محروم ہے ۔چک لائوسہ میں کوئی طبی سہولیات میسر ہے اور نہ ہی یہا ں کوئی راشن گھاٹ ہے جس کے نتیجے میں اس علاقہ کے لوگ یہا ں سے پیدل جاکر لائوسہ میں قائم راشن گھاٹ سے راشن حاصل کرتے ہیں ۔

 

ایک مقامی شہری جاوید احمد نے بتایا کہ سب سے بڑا مسئلہ اس گائو ں کا پل کا معاملہ ہے کیونکہ نالہ ماور ی پر گزشتہ 7دہائیو ں میں بھی انتظامیہ ایک پختہ پل کی تعمیر نہ کر سکا ۔ان کا کہنا ہے کہ لوگو ن نے اس نالہ پر کئی بار خود لکڑی کا پل بنایا لیکن کئی بار نالہ ماور میں سیلاب کی وجہ سے اس پل کو اپنے ساتھ بہا لیا ۔مقامی لوگو ں کا کہنا ہے کہ پل کی عدم دستیابی کی وجہ سے ایک بہت بڑے خطرے کی نشاندہی ہوتی ہے کیونکہ جب بھی نالہ ماورمیں پانی کے بہائو میں تیزی آتی ہے تو اس پل پر سفر کرنا موت کو دعوت دینی ہے ۔مقامی لوگو ں کا کہنا ہے کہ صورتحال کا اندازہاس بات سے لگایا جاسکتا ہے کہ 4روز قبل علاقہ میں شوکت احمد پیر اور گوہر احمد پیر کا دو منزلہ مشترکہ رہائشی مکان آگ کی شعلو ں کے نذر ہو گیا لیکن پل کی عدم دستیابی کی وجہ سے فائر برگیڈئر لائوسہ تک ہی پہنچ گئی اور رہائشی مکان کو نہ بچا سکی جس کے نتیجے میں پیر برادران کا رہائشی مکان پوری طرح تباہ ہوگیا ۔مقامی لوگو ں کا کہنا ہے کہ موسلا دار بار شیں ہوتی ہیں تو نالہ ماور کے پانی کی سطح میں اس قدر اضافہ ہوتا ہے کہ لوگ خوف کی وجہ سے اپنے ہی گھرو ں میں قیام کرتے ہیں کیونکہ نالہ اور پر لکڑی کا بنایاگیا پل عارضی پل ہے ۔مقامی لوگو ں نے گور نر انتظامیہ سے مطالبہ کیا ہے کہ چک لائوسہ کے مقام پر نالہ ماور پر ایک پختہ پل بنانے کے لئے اقدامات اٹھائیں جائیں جو یہا ں کے لوگو ں کی دیرینہ مانگ بھی ہے ۔ڈی ڈی سی ماور خورشید احمد کا کہنا ہے کہ انہو ں نے اس سال نالہ ماور پر چک لائوسہ کے مقام پر ایک بڑا اور پختہ پل بنانے کے لئے ایک پروجیکٹ تیار کر کے سرکار کو بھیجا ہے اور امید ہے کہ سرکار بہت جلد اس کی تعمیر کے لئے منظوری دیں گے ۔انہو ں نے کہا کہ چک لائوسہ کا یہ بڑا مسئلہ عنقریب حل کیا جائے گا ۔