فی میل ملٹی پر پزملازمین کا احتجاج جاری

پونچھ//ایف ایم پی ایچ ڈبلیو ویلفیئر ایسی ایشن پونچھ کے بینر تلے محکمہ صحت میں مستقل بنیادوں پرتعینات ملٹی پرپز ورکرس نے اپنی مانگوں کو لیکر احتجاج 51ویں روزبھی جاری رکھا۔اس دوران چیف میڈیکل افسر پونچھ کے دفتر کے باہر ان ملازمین نے ایک بار پھر دھرنا پر بیٹھ کر محکمہ کے اعلیٰ افسران پر ناانصافی کا الزام لگایااوران کے خلاف نعرے بازی کی۔ان کاکہناتھاکہ عرصہ دراز سے ان کی واجب الاداتنخواہوں کی واگزاری نہیں ہورہی۔انہوں نے کہا کہ وہ مستقل ملازمین ہیں لیکن ہر بار انہیں اپنی تنخواہیں حاصل کرنے کے لئے احتجاج کا راستہ اختیار کرنا پڑتا ہے۔انہوں نے ایف ایم پی ایچ ڈبلیوکوایل ایچ وی کے طورپر ڈی پی سی کے دوران ترقی دینے،ڈی پی سی میٹنگ جوپانچ سال سے منعقدنہیں کی گئی ، منعقدکرنے، محکمہ صحت کے دیگرورکنگ کیٹاگریزملازمین کی طرز پرورکروں کے کام کاتعین کرنے، ایف ایم پی ایچ ڈبلیوکی اسامیوں کواینالوجی آف فارماسسٹ لیب ٹیک،ایکسرے ٹیک، ڈینٹل ٹیک وغیرہ کے طورپراپ گریڈ کرنے اورنئے پرائمری ہیلتھ سنٹروں کووجودمیں لانے اور ورکروں کی سینارٹی لسٹ محکمہ کی ویب سائٹ پرشائع کرنے کا مطالبہ کیا۔انہوں نے کہا کہ پچھلے کئی ماہ سے وہ تنخواہوں سے محروم ہیں جس وجہ سے ان کے معمولات زندگی بالکل متاثر ہو کر رہ گئے ہیں۔انہوں نے کہا کہ تنخواہیں نہ ملنے سے ان کے گھروں کا سارا نظام درہم برہم ہوگیاہے۔انہوں نے ریاستی گورنر سے مداخلت کی اپیل کرتے ہوئے کہا کہ وہ محکمہ صحت کے ایم پی ڈبلیو ملازموں کی بقایا جات واگزار کریں۔