فوج کے خلاف متنازع تبصرہ ‘ 3 کشمیری طالبات کے خلاف کیس درج

بریلی// بریلی میں پولیس نے فوج کے خلاف قابل اعتراض تبصرہ کرنے والی تین کشمیری طالبات کے خلاف رپورٹ درج کی ہے ۔پولیس کے ترجمان نے بتایا کہ انڈین ویٹرنری ریسرچ انسٹی ٹیوٹ (آئی وی آر آئی ) میں پڑھنے والی تین کشمیری طالبات کے خلاف مبینہ طور پر فوج کے خلاف متنازعہ تبصرہ کرنے کے الزام میں عزت نگر پولیس نے جمعہ کو دیر شام رپورٹ درج کیاہے ۔ انہوں نے دعویٰ کیاکہ ڈاکٹر افق، ڈاکٹر سامعہ ارشاد، اور ڈاکٹر حمیرا فیاض نے سوشل میڈیا پر فوج کے خلاف قابل اعتراض تبصرہ کیا تھا۔ معاملہ خفیہ شاخ کے ذریعے آئی وی آر آئی انتظامیہ تک پہنچا تو تحقیقات میں طالبات کو قصوروارپایا گیا۔ انتظامیہ نے ایک طالبہ کا نام کاٹتے ہوئے باقی پر تادیبی کارروائی کی۔ کشمیری طالبات پر دفعہ 505 (1) کے تحت رپورٹ درج کی گئی ہے ۔ تفتیش کے بعد کارروائی ہوگی۔ ڈائرکٹر ڈاکٹر آر کے سنگھ نے بتایا کہ دو طالبات ڈاکٹر افق اور ڈاکٹر سامعہ ارشاد کی فیلو شپ اور اسکالر شپ روک دی گئی ہے ، انہیں صرف انسٹی ٹیوٹ میں پڑھنے کی چھوٹ دی گئی ہے ۔اور تنبیہ کی گئی کہ ہے کہ مستقبل میں ایسا کوئی پوسٹ کرنے پر انہیں نکال دیا جائے گا۔ دسمبر 2018 سے انسٹی ٹیوٹ نہیں آ رہی ماسٹر آف ویٹرنري سائنس کی تیسری طالبہ ڈاکٹر حمیرا کا نام کاٹ دیا گیا ہے ۔