عید الضحیٰ کے موقعہ پر قربانی| بڑے جانور ذبح کرنے پر پابندی

سرینگر //جموں کشمیر انتظامیہ نے عید الاضحی کے موقعہ پر گائے، بیل، اونٹ اور دیگر جانوروں کو ذبح کرنے پر پابند عائد کر کے خلاف ورزی کرنے کیخلاف کارروائی کرنے کا انتباہ دیا ہے۔ڈائریکٹر پلاننگ انیمل اینڈ شیپ ہسبنڈری و فشریز ڈیپارٹمنٹ کی طرف سے جموں و کشمیر صوبوں کے صوبائی کمشنروں اور انسپکٹر جنرل پولیس  کے نام مکتوب روانہ کیا ہے جس میں کہا گیا ہے ’’ انیمل ویلفیئر بورڈ آف انڈیا کی جانب سے25جون کو اس ضمن میں ایک خط موصول ہوا ہے‘‘۔صوبائی کمشنر اور آئی جی پی کے نام مکتوب میں مزید کہا گیا ہے’’اس حوالے سے بڑی تعداد میں قربانی کے جانور ممکنہ طور پر یونین ٹریٹری جموں کشمیر میں بکرا عید کے موقعہ پر 21اور 22جولائی کوذبح کئے جارہے ہیں،انیمل ویلفیئر بورڈ آف انڈیا نے اس کے پیش نظر جانوروں کی حفاظت کے حوالے سے تمام ضروری اقدامات اٹھانے کی تلقین کی ہے تاکہ انیمل ویلفیئر قانون پر عملدر آمد کیا جاسکے، جس میں جانوروں کو ایک جگہ سے دوسری جگہ لیجانے کے علاوہ عید کے موقعہ پر جانوروں کو ذبح کرنے کی ممانعت شامل ہے۔متذکرہ بالا صورتحال کے پیش نظر مجھے اس بات کی ہدایت کی گئی ہے کہ میں آپ سے درخواست کروں کہ  انیمل ویلفیئر قوانین کی پاسداری کو یقینی بنانے کیلئے سبھی اقدامات کو بروئے کار لا کر جانوروں کو غیر قانونی طور پر ذبح کرنے پر فوری روک لگائی جائے اور انیمل ویلفیئر قانون توڑنے والوں کیخلاف سخت کارروائی عمل میں لائی جائے۔