عمرہ کی ادائیگی کا مرحلہ وار آغاز | قریب ایک لاکھ 10ہزار کو زیارت کرنے کی اجازت

ریاض//سعودی حکومت نے کورونا وائرس کی وجہ سے عمرہ اور زیارت پر عائد کی گئی پابندی ختم کردی  ہے اورآج سے مسجد الحرام میں عمرہ کی ادائیگی کا مرحلہ وار آغاز ہوگیا ہے۔سعودی عرب نے اس سے پہلے مارچ میں کورونا وائرس کے معاملات سامنے آنے کے بعد غیر ملکی اور گھریلو مسلمانوں کیلئے سفر حج اور عمرہ کی اجازت ملتوی کردی تھی۔اب سعودی حکومت نے قریب ساڑھے 6ماہ بعد مرحلہ وار عمرہ کی ادائیگی کی اجازت دی ہے جو تین مرحلوں میں ہوگی۔سعودی وزارت حج کے مطابق ایس او پیز کے تحت پہلا مرحلہ 4 اکتوبر یعنی آج سے شروع ہوگا جس میں 6 ہزار سعودی شہری اور وہاں مقیم غیر ملکی عمرہ کی سعادت حاصل کر سکیں گے۔ پہلے مرحلے میں 4 اکتوبر سے صرف تیس فیصد مسافروں کے ساتھ عمرہ شروع ہوگا۔انہوں نے بتایا کہ 18 اکتوبر سے شروع ہونے والے دوسرے مرحلے میں 75 فیصد یعنی 15 ہزار معتمرین کو یومیہ عمرے کی ادائیگی کی اجازت دی جائے گی۔تیسرے مرحلے میں یکم نومبر سے مقامی اور غیر ملکی عازمین عمرہ میں شامل ہوں گے ۔ بیرون ملک سے روزانہ 20 ہزار زائرین عمرے کی سعادت کیلئے آسکیں گے جب کہ60 ہزار لوگوں کو مسجد الحرام میں نماز ادا کرنے کی اجازت ہوگی۔انہوں نے بتایا کہ 1,08,000 سے زیادہ غیر ملکی اور ملکی عازمین کو عمرہ کی اجازت دی گئی ہے ۔ اپنے سفر کے دوران مسافر سوشل ڈسٹنسنگ اور دیگر احتیاطی طریقہ کار کی پیروی کریں گے ۔