عمدہ تعلیم تک رسائی معیشی ترقی کی کلید: منوج سنہا

 سرینگر // لیفٹیننٹ گورنر منوج سنہا نے بدھ کو 8 کستوربہ گاندھی بالیکا اسکولوں اور 7 گرلز ہاسٹل سمیت متعدد تعلیمی منصوبوں کا افتتاح کیا جبکہ 344 نئی آئی سی ٹی لیبارٹریوں اور سمگرا شیکشا کے تحت 9 اضلاع کے مختلف اسکولوں میں 36750 کروڑ روپے کے 217  سی ائے ایل مراکز کا فتتاح کیا۔اس موقع پر خطاب کرتے ہوئے ، لیفٹیننٹ گورنر نے مشاہدہ کیا کہ نئے ’’کے جی بی وی‘‘ اور گرلز ہاسٹل تعلیمی طور پر پسماندہ بلاکوں کے ان رہائشی اسکولوں میں داخلے میں اضافہ کریں گے اور صنفی مساوات میں فرق کو ختم کرنے میں معاون ثابت ہوں گے۔ان کا کہنا تھا جموں و کشمیر کے کے طلبا کے لئے نئی انفارمیشن کمیونیکیشن ٹیکنالوجی لیبارٹریوں اور کمپیوٹر ایڈیڈ لرننگ مراکز کی پیش کش کرتے ہوئے ، لیفٹیننٹ گورنر نے کہا کہ ان لیبارٹریوں کو تدریسی سیکھنے کے عمل میں استعمال کیا جائے گا اور طلبا کو جدید ٹکنالوجی اور ڈیجیٹل دنیا تک رسائی حاصل ہوگی۔  لیفٹیننٹ گورنر نے مزید کہا کہ معیاری تعلیم تک ہمہ گیر رسائی فراہم کرنا معاشی نمو کی کلید ہے۔انہوں نے کہا کہان اصولوں پر عمل کرتے ہوئے ، جموں و کشمیر حکومت وزیر اعظم کے’’ نالج معیشت اور نالج پاور ‘‘کے نظریہ کی طرف نئی پیشرفت کررہی ہے۔ لیفٹیننٹ گورنر نے کہا اس بات کو یقینی بنانا ہماری اجتماعی ذمہ داری ہے کہ ہر بچے کی تعلیم کو ملک کے روشن مستقبل کا ذمہ دار شہری بنانے کے لئے ان تک رسائی حاصل ہو۔لیفٹیننٹ گورنر نے طلبہ سے ورچوئل موڈ کے ذریعے بات چیت کی اور ان کی نئی تعلیمی سہولیات پر انہیں مبارکباد پیش کی۔