طاقت کا استعمال مذموم پالیسی:مشترکہ قیادت

سرینگر //مشترکہ مزاحمتی قیادت سید علی شاہ گیلانی، میرواعظ عمر فاروق کو مسلسل خانہ نظر بند اور محمد یاسین ملک کو گرفتار کرکے تھانے میں مقید رکھنے اور شہر سرینگر میں کرفیو اور بندشوں سے عیدگاہ کے جلسہ خراج عقیدت کو طاقت کے بل پر ناکام بنانے کی مذمت کی ہے۔ انہوںنے کہا کہ بڑے دکھ اور افسوس کا مقام ہے کہ ریاستی حکومت اپنے جابرانہ ، آمرانہ اور عوام کش پالیسیوں کے سبب مسلسل8 سال سے کشمیریوں کے 21مئی کے دن کے موقعہ پر طاقت کا استعمال کرکے پر امن عوامی سرگرمیوں پر قدغن لگانے کی مذموم پالیسی پر گامزن ہے جو عالمی برادری اور انسانی حقوق کی مسلمہ بین الاقوامی تنظیموںاورانصاف و جمہوریت پر یقین رکھنے والے ممالک کیلئے چشم کشا اور ایک لمحہ فکریہ ہے ۔محمد شفیع خان ، محمد اسلم شیخ، ایڈوکیٹ یاسر دلال وغیرہ کی قیادت میں کارکنوں کی ایک بڑی تعداد نے عالی مسجد عیدگاہ سے مزار شہداء تک ایک جلوس نکالنے کی کوشش کی جسے فورسز اور پولیس نے بزور طاقت ناکام بنا دیا ۔