ضلع ہسپتال پونچھ کی حالت ناگفتہ بہ

منڈی//ریاستی سرکار کی طرف سے آئے روزبہترطبی سہولیات فراہم کرنے کے اعلانات کئے جاتے ہیںتاہم حقیقت یہ ہے کہ دور درازعلاقوں کے ہسپتالوں کی حالت ناگفتہ بہ بنی ہوئی ہے اور اس جانب کوئی توجہ نہیں دی جارہی ۔ ضلع ہسپتال پونچھ حکومت کے ان اعلانات کی قلعی کھول دیتاہے ۔ ضلع پونچھ کاہسپتال جہاں پر پورے ضلع سے مریض اپنے امراض کے علاج و معالجہ کیلئے آتے ہیںلیکن ستم ظریفی یہ ہے کہ ہسپتال میں مریضوں کو غیر معیاری بستروں پر لٹایاجاتاہے جس سے نہ صرف مریض بلکہ تیمارداروں کو بھی مشکلات کاسامناہے اور وہ بھی بیماریوں میں مبتلا ہورہے ہیں ۔ہسپتال میں مریضوں کے لئے جتنے بھی وارڈ ہیں، ان میں مریضوں کو سونے کے لیے غیر معیاری بستر کا اہتمام ہے۔مریضوں نے بتایاکہ ہسپتال میں نہایت ہی بوسیدہ قسم کے بستر دیکھنے کو مل رہے ہیں۔ہسپتال میں ایسے حالات کا سامناہے کہ مریض ٹھیک ہونے کے بجائے مزید بیماریوں میں ملوث ہوجاتے ہیں ۔اس حوالے سے بات کرتے ہوئے جاوید احمد گرستہ نامی تیماردار نے بتایاکہ دو روز قبل ان کی اہلیہ کو زچگی ہوئی جس دوران ان کا آپریشن ہوا اور انہیں ہسپتال میں ہی مقیم رہنا پڑا لیکن جو بیڈاسے آرام کیلئے دیاگیااس پر بچھا میٹرس نہایت ہی بوسیدہ تھا اور اس پر مختلف قسم کے چھوٹے اور بڑے کیڑے مکوڑے بھی پائے گئے ۔ انہوں نے کہا کہ باقی مریضوں کا بھی یہی حال تھا اور انہوں نے کئی دفعہ ہسپتال انتظامیہ سے اس حوالے سے شکایت بھی کی مگر انہوں نے اس بات کو ان سنی کردیا۔ جاوید نے مزید کہا کہ ہسپتال میں جو سہولیات مریضوں کے لئے ہونی چاہئیں وہ بالکل بھی دستیاب نہیں اور نہ ہی صفائی ستھرائی کا کوئی انتظام ہے ۔ انہوں نے کہاکہ مریض تو مریض اس کے ساتھ آنے والے تیماردار بھی بیمار پڑ جاتے ہیں ۔