ضلع انتظامیہ کی عالی کدل آتشزدگان میںامداد تقسیم

سرینگر// ڈپٹی کمشنر سرینگر محمد اعجاز اسد کی ہدایت پر ایڈیشنل ڈپٹی کمشنر (اے ڈی سی) سری نگر ڈاکٹر سید حنیف بلخی نے جمعہ کو شہر خاص میں رہباب صاحب کے مزار کے قریب واقع عالی کدل علاقے کا دورہ کیا۔ انہوں نے تباہ کن آتشزدگی کے واقعے کی وجہ سے ہونے والے نقصانات کا جائزہ لیا۔اے ڈی سی نے تحصیلدار جنوبی اور دیگر متعلقہ افسران کے ہمراہ آتشزدگی کے متاثرین سے ملاقات کی جن کے رہائشی مکانات 20 جنوری کو بڑے پیمانے پر آتشزدگی کے واقعے میں مکمل طور پر تباہ ہو گئے تھے۔ اس کے علاوہ ایک 56 سالہ خاتون بھی اس ناخوشگوار واقعے میں لقمہ اجل بن گئی تھی۔اس موقع پر اے ڈی سی نے آتشزدگی کے متاثرین سے ملاقات کی جنہیں قریبی کمیونٹی سہولت مرکز میں عارضی پناہ گاہ فراہم کی گئی ہے۔آتشزدگی متاثرین سے بات چیت کے دوران اے ڈی سی نے ضلع انتظامیہ سرینگر کی جانب سے ان کے ساتھ ہمدردی کا اظہار کیا۔ انہوں نے سوگوار خاندان سے بھی تعزیت کا اظہار کیا جنہوں نے آتشزدگی کے افسوسناک واقعہ میں اپنے خاندان کے ایک رکن کو کھو دیا۔ انہوں نے یقین دلایا کہ ان کی فوری بحالی کیلئے ضلع انتظامیہ کی جانب سے ہر ممکن تعاون فراہم کیا جائے گا۔اے ڈی سی کو بتایا گیا کہ آگ لگنے سے 11 خاندانوں پر مشتمل متعدد رہائشی مکانات جل کر خاکستر ہو گئے، اس کے علاوہ 4 افراد شدید زخمی ہوئے۔اس موقع پر اے ڈی سی نے ایس ڈی آر ایف کے تحت متوفی خواتین کے لواحقین کو 4 لاکھ روپے کی ایکس گریشیا ریلیف سونپی جبکہ 65 کمبل، 52 گدے، 52 بیڈ شیٹ اور 13 کچن سیٹ کی صورت میں ضروری امداد کے علاوہ ریڈ کراس کی جانب سے 11 خاندانوں کو 55000 روپے آگ متاثرین کو عبوری امداد کے طور پر فراہم کیے گئے۔ 4 زخمیوں کو 20000 روپے کی ایکس گریشیا بھی دی گئی۔SDRF کے تحت مزید ڈھانچہ وار مالی امداد بھی متاثرہ خاندانوں کو ڈسٹرکٹ ریڈ کراس فنڈ کے تحت الگ سے دی جا رہی ہے۔دریں اثنا، ضلع انتظامیہ نے عوام سے اپیل کی کہ وہ ایسے واقعات سے بچنے کے لیے الیکٹرک/الیکٹرانک سامان، ایل پی جی سلنڈر اور گرم اور کھانا پکانے کے لیے استعمال ہونے والے دیگر آلات کو سنبھالتے وقت تمام احتیاطی تدابیر پر عمل کریں۔