صومالیہ: کار بم دھماکے میں 11 افراد ہلاک، متعدد زخمی

موغادیشو//  صومالیہ میں کار بم دھماکے کے نتیجے میں 11 افراد ہلاک جبکہ متعدد زخمی ہوگئے۔ تفصیلات کے مطابق یہ بم دھماکا ملکی دارالحکومت موغادیشو میں کیا گیا، جس کے باعث گیارہ افراد ہلاک اور کئی زخمی ہوگئے۔ خبر رساں ادارے کا کہنا ہے کہ حملے کی ذمہ داری صومالیہ میں شدت پسند تنظیم الشباب نے قبول کرلی، دھماکے سے قریبی عمارتیں بھی متاثر ہوئی ہیں۔ پولیس کے مطابق دھماکا موغادیشو کی مشہور اور مصروف ترین شاہراہ پر کیا گیا، شدت پسند نے کار کو ایک دیوار کے ساتھ پارک کی جو 20 منٹ بعد تباہ ہوگئی۔ دوسری جانب ایک مسلح شخص نے صومالیہ کی ریاست پونٹلینڈ کی بندرگاہ بوصاصو کے مینیجر پال انتھونی فورموسا کو فائرنگ کرکے قتل کردیا، بعد ازاں سیکیورٹی فورسز نے بروقت کارروائی کرتے ہوئے حملہ آور کو موقع پر ہی ہلاک کردیا۔ خیال رہے کہ اس حملے کی بھی ذمہ داری الشباب نے قبول کی۔ بعد ازاں اپنے جاری بیان میں الشباب کا کہنا تھا کہ یہ حملہ منافع خور کمپنیوں کو نشانہ بنانے کے وسیع آپریشن کا حصہ ہے جو صومالیہ کے وسائل کو لوٹتے ہیں۔ امریکی فوج نے گذشتہ سال اکتوبر میں صومالیہ کے مرکز میں واقع علاقہ ہرارڈیر میں موجود عسکریت پسندوں کے ٹھکانوں پر کیے جانے والے فضائی حملے کے باعث ساٹھ جنگجوں ہلاک ہوئے تھے۔