صوبائی کمشنرکا جگتی ٹاؤن شپ کا دورہ کیا ، مکینوں کی شکایات کو سنا

جموں //ڈویژنل کمشنر جموں ڈاکٹر راگھو لنگر نے بدھ کے روز جگتی ٹاؤن شپ کا وسیع دورہ کیا اور سب ڈسٹرکٹ ہسپتال ،ہائرسکول میں سہولیات کا معائنہ کیا ، اور رہائشیوں کی شکایات سنیں۔ڈویژنل کمشنر کے ساتھ ریلیف کمشنر ٹی کے بھٹ، ڈائریکٹر سوشل ویلفیئر جموں سمیتا سیٹھی، اے سی آر جموںوجے شرما ،جل شکتی ، جے پی ڈی سی ایل ، پی ڈبلیو ڈی (آر اینڈ بی) ، ایف سی ایس اور سی اے ، صحت اور دیگر متعلقہ افسران کے سینئر عہدیداران بھی تھے۔ڈویژنل کمشنر نے ٹاؤن شپ کے سب ڈسٹرکٹ ہسپتال میں مریضوں کی دیکھ بھال کی سہولیات کا معائنہ کیا۔ اس نے تمام سیکشنوں کا چکر لگایا اور ڈیوٹی پر موجود ڈاکٹروں سے ہسپتال میں دستیاب سہولیات اور میڈیکل انفراسٹرکچر ، آلات کے بارے میں دریافت کیا۔ہسپتال انتظامیہ نے ڈیو کام کو عملے کی تعداد بشمول ڈاکٹرز ، پیرا میڈیکس کے علاوہ ٹاؤن شپ میں رہنے والے رہائشیوں کو تشخیصی اور علاج معالجے کی سہولیات سے آگاہ کیا۔ ڈیو کام نے ان مریضوں کے ریکارڈ کے بارے میں بھی دریافت کیا جو ہسپتال میں علاج کے لیے آئے ہیں۔ انہوں نے ہسپتال میں اپنایا گیا مریض ریفرل میکانزم بھی مانگا۔عملے ، عمارت اور طبی انفراسٹرکچر کی طاقت پر اطمینان کا اظہار کرتے ہوئے ، ڈیو کام نے صحت کی سہولت پر ڈاکٹروں اور عملے کی خدمات کو مؤثر طریقے سے استعمال کرنے پر زور دیا۔ انہوں نے متعلقہ افراد کو ہدایت کی کہ آپریشن تھیٹر کو فعال بنایا جائے کیونکہ وہاں کافی عملہ دستیاب ہے۔انہوںنے ٹاؤن شپ کے مختلف بلاکس کا چکر لگایا اور سہولیات کا معائنہ کیا۔ انہوں نے ریلیف کمشنر کو عمارت کی مرمت اور تزئین و آرائش کے کاموں کو باقاعدہ اور بروقت انجام دینے کی ہدایت کی۔ٹاؤن شپ میں ڈپو میں راشن کے اسٹاک اور سپلائی پوزیشن کا معائنہ کرتے ہوئے ڈپٹی ڈائریکٹرامور صارفین نے ڈیو کام کو راشن کی دستیابی سے آگاہ کیا۔ مقامی لوگوں نے راشن کوٹہ بڑھانے کا مطالبہ کیا۔صوبائی کمشنرنے امور صارفین حکام کوہدایت دی کی کہ فی فیملی کوٹہ پر نظر ثانی کے امکانات کو تلاش کیا جائے۔انہوںنے ٹاؤن شپ میں قائم گورنمنٹ ہائر سیکنڈری سکول کا دورہ کیا اور وہاں دستیاب انفراسٹرکچر اور وہاں کی ترقی کا معائنہ کیا۔ اس نے سکول کے مختلف حصوں کا چکر لگایا جس میں کمپیوٹر لیب ، سائنس لیبارٹری ، سمارٹ کلاس روم ، پلے گراؤنڈ وغیرہ شامل ہیں۔انہوںنے متعلقہ حکام کو سکول کی باقاعدہ صفائی ستھرائی کے علاوہ درختوں کی جھاڑیوں کی کٹائی وغیرہ کی ہدایت دی۔صوبائی کمشنر نے سپورٹس گراؤنڈ کا دورہ کیا اور متعلقہ افسران کو گراؤنڈ میں سہولیات کی ترقی کی ہدایت دی تاکہ مقامی نوجوان فوائد حاصل کر سکیں۔بعد میںانہوںنے کمیونٹی ہال میں عوامی شکایات کے ازالے کا کیمپ لگایا اور رہائشیوں کے مسائل سنے۔رہائشیوں نے اپنی شکایات پیش کیں اور خصوصی بھرتی پیکیج ، معاوضہ کی رقم میں اضافہ ، بہتر سڑکیں ، پانی ، بجلی ، صحت کا بنیادی ڈھانچہ ، آیوشمان بھارت/ جے کے-صحت اسکیم کے تحت غیر ایس ای سی سی خاندانوں کو شامل کرنے کا مسئلہ ، دکانوں کی تقسیم وغیرہ کا مطالبہ کیا۔صوبائی کمشنرنے لوگوں سے بات چیت کرتے ہوئے انہیں یقین دلایا کہ ان کے پیش کردہ تمام حقیقی مسائل اور مطالبات کو ان کے جلد ازالے کے لیے احتیاط سے دیکھا جائے گا۔انہوں نے متعلقہ محکموں کو پانی ، بجلی اور سڑکوں سے متعلق مسائل کے حل کے لیے موقع پر ہدایات جاری کیں۔اس موقع پر خطاب کرتے ہوئے ڈی آئی وی کام نے کہا کہ یو ٹی حکومت مساوی اور جامع ترقی کے ایجنڈے پر کام کر رہی ہے تاکہ جموں و کشمیر میں ترقی کے نئے دور کو فروغ دیا جا سکے۔ انہوں نے مزید کہا کہ سماج کے ہر طبقے اور ہر طبقہ کی فلاح و بہبود کے علاوہ جموں و کشمیر کے لوگوں کے حقوق کا تحفظ یو ٹی حکومت کی اولین ترجیح ہے۔