صحافی عوامی مفادات کے محافظ

سرینگر//نیشنل کانفرنس نے موجودہ گورنر انتظامیہ کی طرف سے صحافیوں کے تئیں روا رکھے گئے رویہ کی پُرزور الفاظ میں مذمت کرتے ہوئے کہا ہے کہ جمہوری نظام کیلئے پریس کی آزادی انتہائی اہم ہوتی ہے۔ پارٹی کے جنرل سکریٹری علی محمد ساگر نے نوائے صبح کمپلیکس میں مختلف اضلاع سے آئے ہوئے پارٹی عہدیداروں اور کارکنوں سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ وادی کے صحافی گمنام ہیرو ہیں، جنہوں نے انتہائی کشیدہ ماحول کے باوجود لوگوں کو پل پل کی صورتحال سے متعلق آگاہ رکھا۔ انہوں نے کہاکہ صحافیوں پر لوگوں کے مفادات کی حفاظت کرنے کی بہت بڑی ذمہ داری ہوتی ہے۔ بے باک ذرائع ابلاغ کیلئے آزادصحافت کیلئے ماحول مہیا رکھنا نیشنل کانفرنس کا بنیادی اصول رہا ہے۔ساگرنے کہاکہ مرحوم شیخ محمد عبداللہ نے ہمیشہ ریاست میں آزادصحافت کی ضرورت پر زور دیا اور نیشنل کانفرنس نے ہمیشہ پریس کی آزادی کو یقینی بنائے رکھا۔انہوں نے کہا کہ 26جنوری کی تقریب میں صحافیوں کو اپنے فرائض انجام دینے سے روکنے کی کارروائی سے موجودہ گورنر انتظامیہ کی آزادی صحافت کے تئیں غیر سنجیدگی بخوبی نظر آتی ہے۔ علی محمد ساگر نے کہا کہ جمہوریت کے چوتھے ستون کے ناطے ذرائع ابلاغ کو ایک ادارے کی طرح بھر پور احترام دیا جانا چاہئے۔ انہوں نے کہا کہ گذشتہ دنوں بھی سیکورٹی فورسز کی طرف سے ذرائع ابلاغ پر براہ راست پیلٹ گن کا استعمال کرکے کئی صحافیوں کو مضروب کیا گیا، جس کی جتنی بھی مذمت کی جائے کم ہے۔ علی محمد ساگرنے کہا کہ پی ڈی پی اور بھاجپا حکومت کے قیام سے لیکر آج تک صحافیوں کیخلاف اس قسم کے واقعات میں دن بہ دن اضافہ ہوتا جارہاہے جو باعث تشویش ہے۔