شہر خاص کے متعدد علاقوں میںڈرینیج نظام نقصان دہ

سرینگر // شہر خاص کے متعدد علاقوں میں کئی برس قبل گندے پانی کی نکاسی کیلئے تعمیر کئے گئے ڈرینیج سسٹم ناکارہ ہونے کے سبب نکاسی ٔ آب کا معقول بندوبست نہیں ہے جس کے نتیجے میں گندہ پانی نہ صرف گلی کوچوں کو خستہ حال بنا رہا ہے وہیں مکانوں کی بنیادوں میں جذب ہو کر نقصان دہ ثابت ہو رہا ہے ۔مکینوں کاالزام ہے کہ انتظامیہ او ر متعلقہ محکمہ نے انہیں نظر انداز کر کے حالات کے رحم وکرم پر چھوڑ دیا ہے ۔نالہ مار سے منسلک مختلف علاقے، جن میں راجوری کدل ، کائو ڈارہ ، نرورہ ، کھی ون ، علمگری بازار ، مکر پورہ ، ڈلی پورہ ، مرجان پورہ ،رتھ پورہ ،وانگن پورہ ، وانٹہ پورہ ،ڈانگر پورہ ،سازگری پورہ ، خوشحال محلہ ، پتھ پورہ سے آئے ایک وفد نے کشمیر عظمیٰ کو بتایا کہ مذکورہ علاقوں کو متعلقہ محکمہ نے مکمل طور پر نظر انداز کیا ہوا ہے ۔ وفد نے کہاکہ پچھلے ایک عشرے سے مذکورہ علاقوں کو درپیش مسائل کی طرف متعلقہ محکمہ نے کوئی دھیان نہیں دیا جس کے نتیجے نکاسی ٔ آب کیلئے بنائی گئی نالیاں اور ڈرنیچ اب لوگوں کیلئے نقصان دہ ثابت ہو رہی ہے ۔وفد نے کہاکہ خستہ ڈرنیچ سسٹم او ر بوسیدہ نالیوں کے نتیجے میںگندہ پانی  اب لوگوں کے مکانوں کی بنیادوں میں سرائیت کررہا ہے جس سے مکانوں کے ڈھہ جانے اور خدانخواستہ جان لیوا حادثے ہونے کا خطرہ لاحق ہے ۔ وفد نے کہاکہ نالیوںسے نکلنے والا پانی گلی و کوچوں پر بہتا ہے جس سے وہ دھنس کر کھنڈرات میں تبدیل ہو رہے ہیں ۔ وفد کاکہنا ہے کہ مذکورہ علاقوں کے گلی کوچوں میں عرصہ دراز سے نہ ہی نئے ٹائل لگائے گئے اور نہ ہی ناکارہ ڈرنیج سسٹم اور نالیوں کو ٹھیک گیا گیا ۔ وفد نے کہاکہ آج تک جتنی بھی حکومتیں برسراقتدار آئیں، انہوں نے منظور نظر علاقوں اور محلوں میں تعمیری کام کرایا اور یہ علاقے نظر انداز کئے گئے ۔وفد نے کہاکہ محلہ ڈلی پورہ میں15سال قبل تعمیر شدہ کمیونٹی ہال بھی اس وجہ سے خستہ حالی کا منظر پیش کر رہا ہے کیونکہ نالیوں سے گندہ پانی اوور فلو ہو کر اُس کی دیواروں میں سرائیت کررہا ہے جس سے دیواریں گرنے کا خطرہ لاحق ہے ۔وفد نے سرینگر مونسپل کورپوریشن کے حکام سے مطالبہ کیا ہے کہ مذکورہ علاقوں کی جانب دھیان دے کر لوگوں کی مشکلات کا ازلہ کیا جائے تاکہ مکینوں کو راحت مل سکے۔ کشمیر عظمیٰ نے لوگوں کے مطالبات جب ایس ایم سی کے کمشنر پیر زادہ حفیظ اللہ کے سامنے رکھے تو انہوں نے کہا کہ وہ ٹیم کو مذکورہ علاقوں میں روانہ کر یں گے اور جہاں کہیں بھی مشکلات ہو نگی، انہیں دور کیا جائے گا۔