شاہراہ کی کٹائی سے رتن باس کی گوجر بستی کو خطرہ لاحق زمین کھسکنے سے کئی رہائشی مکانوں میں دراڑیں پڑ گئی

محمد تسکین

بانہال // جموں سرینگر فورلین شاہراہ کی تعمیر کے دوران حفاظتی دیواریں نہ لگانے کیوجہ سے رتن باس بانہال کی گوجر بستی کو خطرہ لاحق ہوگیا ہے اور زمین کے کھسکنے کی وجہ سے کئی رہائشی مکانوں میں دراڑیں پڑ گئی ہیں۔ ڈر اور خوف کے مارے گوجر بستی رتن باس کے مرد و خواتین نے برستی بارش میں گھروں سے باہر آکر جموں سرینگر قومی شاہراہ پر احتجاجی مظاہرے کئے اور انہوں نے انتظامیہ اور نیشنل ہائے آتھارٹی آف انڈیا اور اس کی تعمیراتی کمپنیوں کے خلاف نعرے لگائے۔رتن باس کے لوگوں کا کہنا ہے کہ وہ پچھلے دو سالوں سے شاہراہ کے پچھلی طرف رتن باس کی گوجر بستی کو بچانے کیلئے حفاظتی دیواروں کا مطالبہ کرتے آرہے ہیں لیکن ان کی کوئی سنوائی نہیں کی گئی ہے اور اب بارشوں کی وجہ سے پوری بستی نیچے سڑک کی طرف نکل رہی ہے اور بستی کے بیشتر مکانوں میں دراڑیں پڑ گئی ہیں۔