شاہراہ پرخونی نالہ کے نزدیک دلدوز حادثہ4مسافر لقمہ ٔ اجل

 
بانہال// جموں سرینگر شاہراہ پر خونی نالہ کے نزدیک پیش آئے ایک المناک حادثے میں 2خواتین سمیت 4افراد لقمہ اجل جبکہ مزید 4شدید طور پر زخمی ہوئے۔  یہ حادثہ پنتھیال اور خونی نالہ پل کے درمیان پیش آیا اور گاڑی اونچائی سے لڑھک کر نیچے نالہ بشلڑی  میں جا گری۔بدھ کی صبح جموں سے وادی کی طرف7 بیرون مسافروں کو لیکر مہندرا لوڈ کرئیر نمبر JK-02AP/4588خونی نالہ کے نزدیک شاہراہ سے لڑھک کر500 فٹ گہرے نالہ بشلڑی کے کنارے جا گری اور تین افراد موقع پر ہی ہلاک ہوگئے جبکہ ایک دوسالہ زخمی بچہ رام بن ہسپتال میں زخموں کی تاب نہ لاکر دم توڑ بیٹھا ۔  چھتیس گڑھ سے تعلق رکھنے والے 7 مرد و خواتین مسافروں اور ڈرائیور سمیت کل8 مسافر اس گاڑی میں سوار تھے اور مزدوری کی غرض سے یہ کنبے کشمیر میں اینٹ کے کسی بٹھے پر کام کرنے کیلئے جا رہے تھے ۔بچاو کارروائیوں کے موقع پر موجود ایس ایچ او رامسو روف احمد خان نے کشمیر عظمیٰ کو بتایا کہ بدھ کی صبح ساڑھے پانچ بجے پیش آئے اس سڑک حادثے کی خبر ملتے ہی رام بن پولیس ، یو ٹی ڈی آر ایف ، فوج اور سول کیو ار ٹی رام بن کے رضاکاروں نے بچاو کارروائیوں کا آغاز کیا اور اس گہری کھائی سے سخت مشقت کے بعد پہلے 5  زخمیوں کو نکال کر رام بن ہسپتال منتقل کیا  ۔ خان  نے کہا کہ  پانچ زخمیوں میں سے2 سالہ آرین ساہو نے ضلع ہسپتال رام بن میں دم توڑا جبکہ ڈرائیور اور دو خواتین نے موقع پر ہی دم توڑا تھا ۔ انہوں نے کہا کہ بعد میں بچاو ٹیموں نے تین لاشوں کو کئی گھنٹوں کی سخت محنت اور جان ہتھیلی پر رکھکر اوپر لایا۔ مرنے والوں کی شناخت 31 سالہ ڈرائیور سنیل سنگھ ساکن رکھبورن جموں ، 2  بچہ سالہ آرین ساہو ، 43سالہ سنترا دیوی اور 42 سالہ دوج بھائی ساکنان سہارن گڑھ ریاست چھتیس گڑھ کے بطور ہوئی ہے۔