شاہد الاسلام’ پیرول‘ پر رہا، رات پولیس سٹیشن میں گزار کر گھر پہنچ گئے

سرینگر//حریت (ع) کے ترجمان اور مزاحمتی لیڈر شاہد الاسلام کو ’حراستی پے رول ‘ پر رہا کردیا گیا جبکہ جمعرات کو وہ اپنے گھر پہنچ گیا ۔موصوف کو رات بھر پولیس تھانہ راج باغ میں مقید رکھا گیا تھا ۔ حریت کانفرنس (ع) کے ترجمان شاہد الاسلام، جنہیں این آئی اے کی خصوصی عدالت نے حال ہی میں ’حراستی پیرول ‘فراہم کیاتھا، جمعرات کو سرینگر میں واقع اپنے گھر پہنچ گئے۔شاہد کو رات بھر پولیس تھانہ راج باغ میں مقید رکھا گیا تھا جہاں سے جمعرات کی صبح اْنہیں گھر پہنچایا گیا۔’حراستی پیرول‘ میں موجود شرائط کے مطابق شاہد الاسلام کوشام کے وقت پھر راجباغ پولیس ا سٹیشن لایا جائے گا۔مبینہ فنڈنگ کیس میں گرفتار شاہد الاسلام جولائی2017سے دلی کی تہار جیل میں مقید ہیں۔شاہد کو گذشتہ سوموار ، اْن کی اہلیہ کی بیماری کے بعد حراستی پیرول فراہم کیا گیا۔شاہد کی اہلیہ،نزہت شاہ ، کو دل کا دورہ پڑا تھا جس کے بعداْنہیں اسپتال پہنچایا گیا۔شاہد کی اہلیہ اور دو بچیاں انسانی بنیادوں پراْن کی رہائی کا مطالبہ کررہی تھیں۔یاد رہے کہ سابق خاتون وزیر اعلیٰ محبوبہ مفتی نے انسانی بنیادوں پر شاہد کو رہا کرنے کی وکا لت کی تھی جبکہ یہ معاملہ انہوں نے مرکزی داخلہ راج ناتھ سنگھ سے اٹھایا تھا ۔