شام کے مفتی اعظم کی وزیر اعلیٰ سے ملاقات

سرینگر//سیریا کے مفتی اعظم عزت مأب ڈاکٹر احمد بدرا دین محمد ادیب حسون نے وزیر اعلیٰ محبوبہ مفتی کے ساتھ ملاقات کی۔میٹنگ کے دوران دونوں رہنماؤں نے مسلم عماء کو درپیش مختلف معاملات پر تبادلہ خیال کیا اور دونوں نے مسلم سماج سے تشدد کے خاتمہ کی ضرورت پر زور دیا۔انہوں نے نئی پود میں امن، روا داری، برداشت اور باہمی یگانگت کی اقدار پیدا کرنے کی اہمیت کو بھی اُجاگر کیا۔انہوں نے تعلیم، سماجی نظام، تواریخ اور مسلم عماء کی بہبودی سے جڑے امور پر تبادلہ خیال کیا اور کہا کہ اسلام کے پیغام کو عام کرنے کے لئے ایک موثر بین اعتقادی طریقہ کار اختیار کیا جانا چاہئے۔محبوبہ مفتی نے مفتی اعظم کو ریاستی حکومت کی طرف سے تعلیم اور خواتین کو با اختیار بنانے سمیت دیگر کئی سماجی و ترقیاتی اقدامات کے بارے میں جانکاری دی۔وزیر اعلیٰ نے مفتی اعظم اور اُن کے ساتھ آئے وفد کو ایک مرتبہ پھر ریاست کا دورہ کرنے کی دعوت دی تا کہ وہ علماء، مقامی مذہبی سکالروں اور تعلیم دانوں کے ساتھ وسیع تبادلہ خیال کرسکیں۔مفتی اعظم نے وزیر اعلیٰ نے کہا کہ انہیں اس ملاقات سے مسرت ہوئی اور مختلف موضوعات پر اُن کی رائے جانی۔ مفتی اعظم نے وزیر اعلیٰ کو مسلم دُنیا کے لئے رول ماڈل قرار دیتے ہوئے کہا کہ سیریا کی خواتین وزیر اعلیٰ کی شخصیت سے ترغیب حاصل کریں گی۔ انہوں نے محبوبہ مفتی کو سیریا کا دورہ کرنے کی بھی دعوت دی۔سیریا کے مفتی اعظم کا یہ دورہ انڈین کونسل آف کلچرل ریلیشنز نئی دہلی کے اشتراک سے ہورہا ہے۔ بھارت میں سیریا کے سفیر ڈاکٹر ریاد عباس، سیریا ایمبسی میں صلاحکار نازن ناسری اور سیرین ایمبسی کے کئی دیگر افسروں کے علاوہ آئی سی سی آر کے ریجنل ڈائریکٹر بلونت ٹھاکر بھی مفتی اعظم کے ہمراہ تھے۔