سینٹرل یونیورسٹی آف جموں کاسالانہ جلسہ تقسیم اسناد 18 مارچ کو

جموں ، 16مارچ (یو ا ین آئی) سینٹرل یونیورسٹی آف جموں کا پہلا جلسہ تقسیم اسناد 18 مارچ اتوار کے روز جموں یونیورسٹی کے جنرل زورآور سنگھ آڈیٹوریم میں منعقد ہورہا ہے۔ اس میں تبت کے روحانی پیشوا اور نوبل انعام یافتہ دلائی لامہ مہمان خصوصی کی حیثیت سے شرکت اور خطاب کریں گے۔ یہ تفصیلات یونیورسٹی کے وائس چانسلر پروفیسر اشوک ایما نے جمعہ کو یہاں ایک نیوز کانفرنس میں نامہ نگاروں کو فراہم کیں۔ انہوں نے کہا کہ جلسہ تقسیم اسناد میں جموں کی دو مشہور شخصیات ڈاکٹر جتیندر سنگھ (وزیر اعظم دفتر میں وزیر مملکت) اور جنرل نرمل چندر وج (سابق فوجی سربراہ)کو اعزازی ڈگریاں دی جائیں گی۔ پروفیسر اشوک ایما نے کہا کہ خطہ میں امن اور استحکام کی ضرورت ہے اور اسی کے پیش نظر دلائی لامہ کو دعوت دی گئی ہے۔ انہوں نے کہا ’سینٹرل یونیورسٹی آف جموں کا پہلا جلسہ تقسیم اسناد 18 مارچ کو ہورہا ہے۔ اس میں روحانی پیشوا دلائی لامہ مہمان خصوصی کی حیثیت سے شرکت کریں گے۔ وہ امن کے نوبل انعام یافتہ ہیں۔ ہمارے خطہ میں اس وقت امن اور استحکام کی بڑی ضرورت ہے، یہی وجہ ہے کہ دلائی لامہ کو مہمان خصوصی کی حیثیت سے بلانے کا فیصلہ کیا گیا‘۔ وائس چانسلر نے کہا کہ جلسہ تقسیم اسناد میں 14 پی ایچ ڈی ڈگریاں اور 20 ایم فل ڈگریاں تفویض کی جائیں گی۔ انہوں نے کہا ’ جلسہ تقسیم اسناد میں 14 پی ایچ ڈی ڈگریاں، 20 ایم فل ڈگریاں، 43 گولڈ میڈل اور کل ملاکر 900 ڈگریاں عطا کی جائیں گی‘۔ پروفیسر اشوک ایما نے کہا کہ تمام پروگراموں کے کلاسزکو عنقریب یونیورسٹی کی اپنی عمارتوں میں منتقل کیا جائے گا۔ انہوں نے کہا ’ہمیں نئے اکیڈمکس بلاک بنانے کے لئے 157 کروڑ روپے ملے ہیں۔ ہم اس سال اپنے سبھی کلاسز کو کیمپس میں اپنی عمارتوں میں منتقل کریں گے۔ ہمارے پاس بھارت بھر سے طالب علم زیر تعلیم ہیں۔ ہم کوشش کریں گے کہ جلسہ تقسیم اسناد کا انعقاد ہر سال ہو‘۔ یو این آئی